امرتسر ٹرین حادثہ: "توتو، میں میں کا وقت نہیں، جانچ رپورٹ کا کریں انتظار": کیپٹن امریندرسنگھ

وزیراعلیٰ نے اسپتال پہنچ کرحادثے میں زخمیوں کی خیریت دریافت کرنے کے بعد ضلع انتظامیہ، سینئرافسروں، کابینی وزرا اور کانگریس ممبران اسمبلی کے ساتھ میٹنگ کی۔

Oct 20, 2018 10:07 PM IST | Updated on: Oct 20, 2018 10:09 PM IST
امرتسر ٹرین حادثہ:

پنجاب کے وزیراعلیٰ امریندر سنگھ نے امرتسر ٹرین حادثہ پر الزام اورجوابی الزام سے بچنے کی اپیل کی ہے۔

راون دہن کے دوران ہوئے ٹرین حادثے کے بعد ہفتہ دوپہر پنجاب کے وزیراعلیٰ کیپٹن امریندر سنگھ دہلی سے امرتسرپہنچے۔ اسپتال پہنچ کرحادثے میں زخمی لوگوں کی خیریت دریافت کرنے کے بعد انہوں نے ضلع انتظامیہ، سینئرافسروں، کابینی وزرا اور کانگریس ممبران اسمبلی کے ساتھ میٹنگ کی۔

کیپٹن امریندر سنگھ نے اس کے بعد نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ یہ حادثہ بہت ہی دردناک ہے۔ حادثہ کی مجسٹریٹ جانچ کے احکامات دیئے گئے ہیں اورچار ہفتوں کے اندر اس کی رپورٹ آجائے گی۔

Loading...

امریندرسنگھ نے کہا کہ متاثرہ فیملی کے ساتھ  ہماری ہمدردی ہے۔ یہ الزام اورجوابی الزام کا وقت نہیں ہے، یہ ایک حادثہ ہےاوراس پر ہمیں دکھ ہے۔ جانچ رپورٹ آنے کے بعد پتہ چل جائے گا کہ قصوروار ہے؟ تب تک ہم کسی کو قصورنہیں دے سکتے ہیں۔ یہ توتومیں میں کا وقت نہیں ہے۔ ہمیں اس بحران سے مناسب طریقہ اپناکرنمٹنا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ مجھے اسرائیل جانا تھا، جب یہ اطلاع ملی تو میں ایئرپورٹ پرتھا۔ راحتی کاموں کی نگرانی کے لئے یہاں ریاستی حکومت کے تین وزرا رہیں۔ اس حادثہ سے پورا ملک مایوس ہے۔

یہ بھی پڑھیں:    امرتسر ریل حادثہ: تین دن کا سرکاری سوگ، حادثے کی مجسٹریٹ انکوائری کا حکم

اس حادثہ کے بعد ریاستی حکومت  نے ہلاک ہونے والے لوگوں کے اہل خانہ کے لئے 5-5 لاکھ روپئے اورمرکزی حکومت نے دو دو لاکھ روپئے کا اعلان کیا ہے۔ اس کے علاوہ زخمیوں کو مفت علاج کا حکم جاری کیا گیا ہے۔ ریلوے نے اس روٹ کی 37 ٹرینوں کومنسوخ کردیا ہے اور 16 ٹرینوں کے روٹ میں تبدیلی آئی ہے۔ ریلوے نے حادثے کا ذمہ ضلع انتظامیہ اور آرگنائزرکمیٹی کے سرپھوڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ انہیں اس انعقاد کی اطلاع نہیں دی گئی تھی۔ حادثے پروزیراعظم نریندر مودی، صدر جمہوریہ رام ناتھ کووند سمیت ملک کے تقریباً تمام لیڈروں نے افسوس کا اظہار کیا ہے۔ وزیرمملکت برائے ریل منوج سنہا جمعہ کی رات ہی جائے واردات پرپہنچ گئے تھے۔

یہ بھی پڑھیں:     امرتسر ٹرین حادثہ: پنجاب میں 60 لوگوں کی موت، بورڈ چیئرمین بولے ۔ ریلوے نہیں کرے گا حادثے کی جانچ

واضح رہے کہ امرتسرکے قریب جمعہ کی شام راون دہن دیکھنے کے لئے ریل کی پٹری پرکھڑے لوگوں کی ٹرین کی چپیٹ میں آنے سے تقریباً 60 لوگوں کی موت ہوگئی جبکہ 72 دیگرزخمی ہوگئے۔ ٹرین جالندھر سے امرتسر آرہی تھی تبھی جوڑا پھاٹک پریہ حادثہ ہوا۔

یہ بھی پڑھیں:     امرتسرٹرین حادثہ: 50 لوگوں کی موت، مرکزی اورریاستی حکومت نے کیا معاوضے کا اعلان، پنجاب میں سرکاری سوگ کا اعلان

یہ بھی پڑھیں:      امرتسرٹرین حادثہ: وزیرریل نے ختم کیا امریکہ دورہ، وزیراعلیٰ امریندرسنگھ نہیں جائیں گے اسرائیل

Loading...