واہ رے یوپی پولیس ! راہل گاندھی کے گھریلو نوکر والے فارم کو کر دیا ویریفائی

غازی آباد : اترپردیش پولیس کتنی محتاط اور چوکنا ہے اور کس طرح کام کرتی ہے اس کی مثال غازی آباد میں دیکھنے کو ملی۔

May 26, 2016 07:53 PM IST | Updated on: May 26, 2016 07:54 PM IST
واہ رے یوپی پولیس ! راہل گاندھی کے گھریلو نوکر والے فارم کو کر دیا ویریفائی

غازی آباد : اترپردیش پولیس کتنی محتاط اور چوکنا ہے اور کس طرح کام کرتی ہے اس کی مثال غازی آباد میں دیکھنے کو ملی۔ یوپی پولیس کی سخت لاپروائی اس وقت سامنے آئی ، جب پولیس نے ایک فلیٹ کے نوکر کے ایسے فارم کی تصدیق کر دی، جس میں نوکر کی تصویر کی جگہ کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی کی تصویر لگی ہوئی تھی۔

اتنا ہی نہیں نوکر کا نام بھی راہل گاندھی ہی ہے اور اس کے والد کا نام آنجہانی راجیو گاندھی لکھا ہوا ہے۔ ایڈریس کے خانہ میں بھی 12 تغلق لین نئی دہلی لکھا ہوا ہے۔ اس کے باوجود پولیس نے اس فارم کو بغیر کسی جانچ کے ویریفائی کردیا۔

خیال رہے کہ راہل گاندھی کوئی عام آدمی نہیں ہیں۔ وہ ملک کی سب سے قدیم سیاسی پارٹی کے نائب صدر ہیں، اس کے باوجود اگر یوپی پولیس انہیں نہیں پہچانتی ہے اور ان کی تصویر اور نام والے گھریلو نوکر کے فارم کی توثیق کر دیتی ہے ، تو اس بات سے اس کی سنجیدگی اور طریقہ کار کا اندازہ بخوبی لگایا جا سکتا ہے۔

یہ معاملہ اس وقت سامنے آیا ، جب اندراپورم کی ایک سوسائٹی کے دفتر میں گھریلو نوکر کے لئے فارم کی جانچ کی جارہی تھی ۔ اسی دوران ایک فارم ملا ، جس میں راہل گاندھی کی تصویر، نام اور پتہ لکھا ہوا تھا۔ سوسائٹی عملے کو جیسے ہی یہ فارم ملا، ان میں افراتفری مچ گئی ۔ اس فارم پر باضابطہ اندراپورم تھانے کی توثیقی مہر لگی ہوئی تھی۔ اس کے بعد اس کی شکایت ایس ایس پی، ایس پی اور اندراپورم تھانے کے انچارج سے بھی کی گئی۔

Loading...

دوسری طرف جس فلیٹ کی طرف سے یہ درخواست دی گئی تھی ، اس کے مالک کا کہنا ہے کہ ان کے یہاں پہلے سے ہی دو نوکر ہیں اور انہوں نے اس طرح کی کوئی درخواست نہیں دی تھی ۔

ادھر معاملہ کی سنجیدگی کے پیش نظر اب پولیس کی بھی جانچ کی بات کر رہی ہے، لیکن اس معاملے کے بعد پولیس سوالیہ نشان لگنا لازمی ہیں۔ جس طرح سے آئے دن گھروں میں ڈکیتی، چوری اور لوٹ کی واردات ہو رہی ہیں ، اسے دیکھتے ہوئے سوسائٹی ویریفکیشن تو کرا رہی ہے، لیکن پولیس اس کی کس طرح توثیق کرتی ہے، وہ اس معاملہ سے پوری طرح بے نقاب ہو گیا ہے۔

Loading...