حکام کی سختی کے بعد سنگیت سوم نے روکی یاترا ، انتظامیہ کو 15 دنوں کا دیا الٹی میٹم

کیرانہ : کیرانہ میں نربھیا یاتر پر بضد بی جے پی ممبر اسمبلی سنگیت سوم نے آخر کار انتظامیہ کی سختی کے بعد اپنے یاترا کو روک دی ہے۔

Jun 17, 2016 03:00 PM IST | Updated on: Jun 17, 2016 03:01 PM IST
حکام کی سختی کے بعد سنگیت سوم نے روکی یاترا ، انتظامیہ کو 15 دنوں کا دیا الٹی میٹم

کیرانہ : کیرانہ میں نربھیا یاتر پر بضد بی جے پی ممبر اسمبلی سنگیت سوم نے آخر کار انتظامیہ کی سختی کے بعد اپنے یاترا کو روک دی ہے۔ حکام نے انہیں دفعہ 144 نافذ ہونے کا نوٹس دکھایا ، جس کے بعد سوم کو اپنی یاترا روکنی پڑی ۔ سنگیت سوم نے کہا کہ ہم انتظامیہ کو 15 دن کا الٹی میٹم دے رہے ہیں، اگر اس درمیان نقل مکانی نہیں رکی ، تو بی جے پی کارکنوں کو سینئر افسر کیرانہ تو کیا، کہیں جانے سے نہیں روک پائیں گے۔

ساتھ ہی ساتھ سنگیت سوم نے کہا کہ ریاستی صدر سوامی پرساد موریہ کے کہنے پر وہ یاترا روک رہے ہیں ۔ سوم نے کہا کہ موریہ نے ان سے فون بات کی اور انہیں یاترا روکنے کیلئے کہا ۔ سنگیت نے اب بھلے یہ بات کہی ، لیکن کیرانہ سے ممبر پارلیمنٹ اور ہندوؤں کی فرضی نقل مکانی کے معاملہ کو ہوا دینے والے حکم سنگھ پہلے ہی سوم کو کیرانہ جانے سے منع کرچکے تھے ۔ حکم سنگھ کا کہنا تھا کہ سوم کے کیرانہ جانے سے حالات خراب ہوں گے ۔

ادھر کیرانہ کا دورہ کرنے والی بی جے پی کی ٹیم بھی آج گورنر سے مل کر اپنی رپورٹ سونپ سکتی ہے۔ بی جے پی کی ٹیم گورنر رام نائک سے دوپہر تقریبا 3 بجے ملاقات کرنے والی ہے۔

ذرائع کے مطابق بی جے پی کی ٹیم کی رپورٹ میں فرضی نقل مکانی کے لئے بالواسطہ طور سے مسلم بدمعاشوں پر نشانہ سادھا گیا ہے۔ رپورٹ میں کسی کا نام لئے بغیر کہا گیا ہے کہ کیرانہ میں سیاسی دہشت گردی ہے۔ ادھر جے ڈی یو، آر جے ڈی، لیفٹ اور این سی پی کی ٹیم نے بھی کیرانہ کے پاس کاندھلہ علاقہ کا دورہ کیا ، جہاں سے نقل مکانی کا دعوی کیا گیا ہے۔ اس ٹیم میں کے سی تیاگی ، محمد سلیم، منوج جھا، ڈی راجہ اور ڈی پی ترپاٹھی شامل تھے۔ پانچ جماعتوں کی ٹیم نے دورے کے بعد کہا کہ کاندھلہ کے بارے میں بی جے پی کے الزامات غلط ہیں۔

Loading...

ایس پی لیڈر اعظم خان نے کہا کہ اب تو تمام کنبوں کے بیانات آ چکے ہیں۔ لوگوں نے کہہ دیا ہے کہ ہم مستقبل بنانے کے لئے وہاں سے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کیوں ملک کو خراب کرنے پر بضد ہوئے ہو ... چلو بھر پانی لائیں کیا؟

Loading...