ملک نے مودی کو منتخب کیا ہے ، ہمیں ان کی حمایت کرنی چاہئے : شاہ رخ

نئی دہلی : بالی ووڈ کپ سپر اسٹار شاہ رخ خان کا کہنا ہے کہ ان کا کسی سیاسی پارٹی سے کوئی تنازع نہیں ہے اور وہ سمجھتے ہیں کہ ملک نے اگر مودی کو ہندوستان کا وزیر اعظم منتخب کیا ہے ، تو ہم سب کو ان کی حمایت کرنی چاہئے۔

Apr 17, 2016 12:22 AM IST | Updated on: Apr 17, 2016 12:22 AM IST
ملک نے مودی کو منتخب کیا ہے ، ہمیں ان کی حمایت کرنی چاہئے : شاہ رخ

نئی دہلی : بالی ووڈ کپ سپر اسٹار شاہ رخ خان کا کہنا ہے کہ ان کا کسی سیاسی پارٹی سے کوئی تنازع نہیں ہے اور وہ سمجھتے ہیں کہ ملک نے اگر مودی کو ہندوستان کا وزیر اعظم منتخب کیا ہے ، تو ہم سب کو ان کی حمایت کرنی چاہئے۔

خیال رہے کہ شاہ رخ نے گزشتہ سال نومبر میں ایک پروگرام میں کہا تھا کہ مذہبی عدم برداشت سے زیادہ برا کچھ بھی نہیں ہے اور یہ ہندوستان کو آدم کے زمانے میں لے جائے گا۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کے کئی لیڈروں نے ان کے بیان کی تنقید کی تھی اور کہا تھا کہ ان کا بیان کانگریس کی حمایت میں ہے۔

شاہ رخ نے مزید کہا کہ وہ تمام سیاسی جماعتوں کو اپنا دوست مانتے ہیں۔ شاہ رخ نے ایک نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں کہا کہ میں واضح طور پر کہنا چاہتا ہوں کہ جب ہم اپنے ملک کا لیڈر کا منتخب کرتے ہیں ، خواہ وہ جو بھی ہوں، ہمیں ان کی حمایت کرنی چاہئے اور ملک کو آگے لے جانا چاہئے۔ ہمیں منفی نہیں ہونا چاہئے۔

پروگرام کے میزبان کی طرف سے یہ پوچھے جانے پر کہ یہ تاثر ہے کہ کانگریس میں ان کے دوست ہیں ، جو مودی سے نمٹنا چاہتے ہیں، شاہ رخ نے کہا کہ میں یہ کس طرح سوچ سکتا ہوں کہ میں کسی سے نپٹ سکتا ہوں۔ آپ مجھے برسوں سے جانتے ہیں، میں غیر سیاسی ہوں، تاہم ہر جگہ میرے دوست ہیں۔

Loading...

شاہ رخ نے یہ بھی واضح کیا کہ 'عدم برداشت پر ان کے بیان کو غلط انداز میں لیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ میں نے نوجوانوں کو صرف علاقائی، مذہب، ذات اور رنگ کے مسائل پر روادار رہنے کا مشورہ دیا تھا۔ میرے والد ایک مجاہد آزادی تھے۔ مجھے ملک نے سب کچھ دیا ہے، میں شکایت کرنے والوں میں سب سے آخری ہوں گا۔

Loading...