وزیر اعلی نتیش کمار پر بدعنوانی کا الزام لگانے والے پر سپریم کورٹ نے لگایا ایک لاکھ روپے کا جرمانہ

سپریم کورٹ نے بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار پر بدعنوانی کا الزام لگانے والی عرضی کو عدالت کا وقت ضائع کرنے والی عرضی بتاتے ہوئے عرضی گذار پر ایک لاکھ روپے کا جرمانہ برقرار رکھا

Jul 05, 2017 05:08 PM IST | Updated on: Jul 05, 2017 05:08 PM IST
وزیر اعلی نتیش کمار پر بدعنوانی کا الزام لگانے والے پر سپریم کورٹ نے لگایا ایک لاکھ روپے کا جرمانہ

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار پر بدعنوانی کا الزام لگانے والی عرضی کو عدالت کا وقت ضائع کرنے والی عرضی بتاتے ہوئے عرضی گذار پر ایک لاکھ روپے کا جرمانہ برقرار رکھا۔

عدالت نے عرضی گذار متھلیش کمار کی نظرثانی کی عرضی کو مسترد کرتے ہوئے ایک ہفتے کے اندر جرمانہ ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔ دراصل متھلیش نے گذشتہ سال سپیلر گھپلہ میں بدعنوانی کا الزام لگاتے ہوئے سی بی آئی سے انکوائری کا مطالبہ کرنے سے متعلق عرضی دائر کی تھی۔

عدالت نے عرضی مسترد کرنے کے ساتھ ساتھ عرضی گذار کو بلاوجہ عدالت کا قیمتی وقت برباد کرنے کے لئے ایک لاکھ روپے کا جرمانہ بھی عائد کیا تھا۔ خیال رہے کہ اس سے قبل پیر کو بھی ایک دیگر معاملے میں عدالت عظمی نے کرناٹک کی منی اسمبلی کو شفٹ کرنے سے متعلق عرضی داخل کرنے والے عرضی گذار کے خلاف پچیس لاکھ روپے کا جرمانہ عائد کیا تھا۔

Loading...

Loading...