انکم ٹیکس چھوٹ کی حد میں راحت کا امکان ، عبوری بجٹ میں ہوسکتا ہے اعلان

سی این بی سی ٹی وی 18 کے مطابق مرکزی حکومت پانچ لاکھ روپے تک کمائی کرنے والے لوگوں کو انکم ٹیکس کے دائرے سے باہر رکھنے پر غور کررہی ہے ۔

Jan 16, 2019 06:32 PM IST | Updated on: Jan 16, 2019 06:32 PM IST
انکم ٹیکس چھوٹ کی حد میں راحت کا امکان ، عبوری بجٹ میں ہوسکتا ہے اعلان

علامتی تصویر

انتخابی سال میں حکومت نوکری پیشہ افراد کو انکم ٹیکس میں بڑی راحت دے سکتی ہے ۔ سی این بی سی ٹی وی 18 کے مطابق مرکزی حکومت پانچ لاکھ روپے تک کمائی کرنے والے لوگوں کو انکم ٹیکس کے دائرے سے باہر رکھنے پر غور کررہی ہے ۔ یکم فروری کو پیش ہونے جارہے مودی حکومت کے عبوری بجٹ میں اس کا اعلان ہوسکتا ہے ۔

موجودہ ٹیکس سلیب میں فی الحال 2.5 لاکھ روپے تک کی سالانہ انکم ٹیکس فری ہے جبکہ 2.5 سے پانچ لاکھ روپے کی انکم پر پانچ فیصد کی شرح سے ٹیکس لگتا ہے ۔ اس کے بعد پانچ سے 10 لاکھ روپے تک کی انکم پر 20 فیصد اور 10 لاکھ سے زیادہ کی انکم پر 30 فیصد کی شرح سے ٹیکس ادا کرنا ہوتا ہے ۔

Loading...

ذرائع کے مطابق اس مرتبہ کارپوریٹ ٹیکس میں تبدیلی کا کوئی امکان نہیں ہے ۔ فی الحال کارپوریٹ ٹیکس ایکم فیصد ہے ۔ حکومت چھوٹے ٹیکس دہندگان کو رعایت اور راحت بلاواسطہ نہیں بلکہ سیدھے طور پر دینے کا ارادہ بنارہی ہے ۔ اس کیلئے حکومت کئی الگ الگ متبادلوں پر بھی غور کررہی ہے ۔ متبادل کے تحت اسٹینڈرڈ ڈیڈکشن کی حد بڑھ سکتی ہے ۔ ابھی 40000 روپے کا سالانہ اسٹینڈرڈ ڈیڈکشن ملتا ہے ۔ پہلے سلیب میں ٹیکس کی شرح میں کمی کا بھی متبادل ہے ۔ ذرائع کے مطابق پانچ فیصد ، 20 فیصد اور 30 فیصد کے درمیان ایک نئی شرح بھی آسکتی ہے ۔

Loading...