نائب صدرنے رکھی کرتاپورکاریڈورکی بنیاد، کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان کے آرمی چیف کو دی سخت وارننگ

تقریب میں پنجاب کے وزیراعلیٰ اورمرکزی وزیرنتن گڈکری بھی موجود تھے۔ کیپٹن امریندرسنگھ نے قمرباجوا کومتنبہ کرتے ہوئے کہا کہ "میں قمرباجوا سے کہنا چاہتا ہوں کہ وہ مت بھولیں میں بھی ایک فوجی ہوں"۔

Nov 26, 2018 04:36 PM IST | Updated on: Nov 26, 2018 04:39 PM IST
نائب صدرنے رکھی کرتاپورکاریڈورکی بنیاد، کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان کے آرمی چیف کو دی سخت وارننگ

پنجاب کے وزیراعلیٰ کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان کے آرمی چیف کو متنبہ کیا۔

نائب صدر وینکیا نائیڈو نے پیرکوڈیرا بابا نانک- کرتارپورصاحب کاریڈورکی بنیاد رکھی۔ اس دوران پنجاب کے وزیراعلیٰ کیپٹن امریندرسنگھ اورمرکزی وزیرٹرانسپورٹ نتن گڈکری بھی موجود رہے۔ پروگرام میں پنجاب کے وزیراعلی کیپٹن امریندرسنگھ نے ایک بارپھرپاکستانی فوج کے سربراہ قمرباجوا کو سخت وارننگ دی۔

کیپٹن امریندرسنگھ نے کہا کہ "میں قمرباجوا سے کہنا چاہتا ہوں کہ وہ مت بھولیں میں بھی ایک فوجی ہوں"۔ امریندرسنگھ نے کہا کہ پاکستان کے فوجی سربراہ قمرباجوا ابھی مجھ سے کافی جونیئرہیں، میں پرویزمشرف سے بھی سینئرہوں۔ ہرفوجی کومعلوم ہے کہ دوسرا فوجی کیا سوچ رہا ہے۔

Loading...

پنجاب کے وزیراعلیٰ امریندرسنگھ نے کہا کہ ہم ہمیشہ اپنے ملک کا تحفظ کرنا چاہتے ہیں، لیکن تمہیں یہ کس نے سکھایا ہے کہ عام لوگوں کو ماردو۔ لوگ امرتسرمیں کیرتن کررہے تھے اوروہاں گرینیڈ ماردیا گیا" انہوں نے پنجاب کے امرتسرمیں ہوئے نرنکاری سماگم میں گرینیڈ حملے کی طرف اشارہ کیا۔ واضح رہے کہ کل بھی امریندرسنگھ نے کہا تھا کہ ایک طرف سرحد پرپاکستانی فوجی روزانہ ہندوستانی نوجوانوں کے ساتھ غلط برتاو کرتے ہیں اورپھرانہوں نے پنجاب کے نرنکاری بھون میں حملے کا بھی ذکرکیا تھا۔

کیپٹن امریندرسنگھ نے کہا کہ "بطورسکھ میں چاہتا ہوں کہ میں کرتارپورصاحب جاوں، لیکن میں وزیراعلیٰ بھی ہوں، یہی وجہ ہے کہ میں نہیں جانا چاہتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ میں پاکستان آرمی چیف کو بتادوں کہ ہم بھی پنجابی ہیں۔ آپ کویہاں آکرماحول خراب کرنے کی اجازت نہیں دیں گے"۔  

کیپٹن امریندرسنگھ نے کاریڈورکے لئے وزیراعظم نریندرمودی اورپاکستان کے وزیراعظم عمران خان کا شکریہ بھی ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ میں وزیراعظم نریندرمودی اورپاکستان کے وزیراعظم عمران خان کو اس کے لئے شکریہ ادا کرتا ہوں۔ آج سکھوں کی پرانے مطالبات کو پورا کیا جارہا ہے۔ کرتارپورکاریڈور پرہم گرو نانک دیو کے نام پرایک بڑا گیٹ بنانا چاہتی ہے، ہم اس کا نام کرتارپورکے ذریعہ رکھیں گے'۔

سکھویندرسنگھ رندھاوا نے پتھرپرچسپا کیا کالا ٹیپ

اس سے قبل ڈیرا بابا نانک - کرتارپورصاحب کاریڈورکی سنگ بنیاد پروگرام میں ڈراما بھی دیکھنے کو ملا۔ پنجاب حکومت کے وزیرسکھوندرسنگھ رندھاوا نے اپنے، وزیراعلی امریندرسنگھ اوردیگروزرا کے نام پرکالا ٹیپ لگا دیا۔ انہوں نے سنگ بنیاد پرپرکاش سنگھ بادل اورسکھبیربادل کے نام لکھے جانے پراعتراض ظاہرکرتے ہوئے ایسا کیا۔

کب تک بن جائے گا کاریڈور؟

مرکزی وزیرنتن گڈکری نے بتایا جوکام 70 سال سے رکا ہوا تھا، وہ اب مجھے کرنے کا موقع مل رہا ہے۔ ہم کرتارپورکاریڈورکوچارلین کے تحت بنائیں گے۔ اس کام کو چارسے ساڑھے چارماہ میں پورا کرلیا جائے گا۔ گڈکری نے کہا کہ اس کاریڈورکے بننے سے پنجاب کے ٹورازم (سیاحت) کو کافی فروغ ملے گا۔ پنجاب کی حکومت ہمارے کام میں مسلسل تعاون کررہی ہے۔ ہم بھی اسے تعاون دیتے رہیں گے۔

پاکستان 28 نومبرکو رکھے گا کاریڈور کی بنیاد

واضح رہے کہ پہلے پاکستان نے کرتارپورکاریڈوربنانے کا اعلان کیا اورپھرہندوستانی حکومت نے بھی کرتارپورکاریڈوربنانے کااعلان کیا۔ آج اس کا سنگ بنیاد بھی رکھ دیا گیا۔ پاکستان 28 نومبرکواس کاریڈور کی بنیاد رکھے گا۔ پاکستان نے اس پروگرام کے لئے ہندوستان کو بھی دعوت نامہ بھیجا ہے۔

Loading...