اتحادی حکومت گرنے پر بی جے پی کرناٹک میں حکومت بنانے کی کوشش کرے گی : یدیورپا

کرناٹک ایوان اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر اور ریاستی بی جے پی کے صدر بی ایس یدیورپا نے پیر کے دن کہا کہ اگر یہاں جنتا دل( سیکولر)۔ کانگریس اتحاد کی حکومت خود ہی گر جائے تو ان کی پارٹی ریاست میں حکومت بنانے پر غور و خوض کرے گی۔

Dec 31, 2018 08:20 PM IST | Updated on: Dec 31, 2018 08:20 PM IST
اتحادی حکومت گرنے پر بی جے پی کرناٹک میں حکومت بنانے کی کوشش کرے گی : یدیورپا

اتحادی حکومت گرنے پر بی جے پی کرناٹک میں حکومت بنانے کی کوشش کرے گی : یدیورپا

کرناٹک ایوان اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر اور ریاستی بی جے پی کے صدر بی ایس یدیورپا نے پیر کے دن کہا کہ اگر یہاں جنتا دل( سیکولر)۔ کانگریس اتحاد کی حکومت خود ہی گر جائے تو ان کی پارٹی ریاست میں حکومت بنانے پر غور و خوض کرے گی۔ مسٹر یدیورپا نے پریس کانفرنس میں کہاکہ اتحادی باہم جھگڑ رہے ہیں،جو حکومت گرنے کا اہم سبب بنے گا۔

بی جے پی کے سات ماہ پرانی اتحادی حکومت گرانے کے الزامات کو خارج کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وہ برسر اقتدار پارٹی کے اراکین کو توڑنے کی کوشش میں شامل نہیں ہے۔ مسٹر سدارمیا جھوٹے الزامات عائدکر رہے ہیں کہ بی جے پی ایک ایک رکن اسمبلی کو بی جے پی میں شامل ہونے کے لیے 25 سے 30 کروڑ روپیے لالچ دے رہی ہے۔

رابطہ کار کمیٹی کے صدر سدارمیا کی تنقید کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت میں شامل اراکین میں پھیلی بے چینی کو ختم کرنے کے بجائے مسٹر سدارمیا بی جے پی پر الزام لگا رہے ہیں۔ جس طرح سے اتحا د کے شراکت دار وں میں باہمی لڑائی ہے، اسے دیکھتے ہوئے ایسا لگ رہا ہے کہ یہ حکومت جنوری میں ہونے والی مشترکہ اسمبلی اجلاس کے وقت ہی گر جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ جہاں تک بی جے پی کا سوال ہے تو وہ صرف آپس میں بیٹھ کر آئندہ لوک سبھاالیکشن کی منصوبہ بندی اور زیادہ سے زیادہ لوک سبھا سیٹیں جیتنے کے لائحہ عمل پر کام کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ اتحاد کے شراکت دار وں اور کابینہ میں شامل افراد میں کافی بے چینی ہے۔ مسٹر سدارمیا کے بی جے پی پر خرید و فروخت کے الزامات کا جواب دیتے ہوئے کہا اگر ایسا ہے تو انھیں ثبوت دینا چاہیے۔

Loading...

ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے اس بات کو سرے سے خارج کر دیا کہ دہلی میں ان کی ملاقات کانگریس سے ناراض رکن اسمبلی رمیش جراکھی ہولی سے ہوئی تھی۔ انہوں نے کہا کہ دہلی میں وہ وزیر اعظم نریندر مودی، وزیرریل پیوش گوئل اور دوسرے لوگوں سے کچھ زیر التویٰ منصوبوں پر گفتگوکرنے کے لیے ملاقات کی تھی۔

وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمارا سوامی کے سنگا پور میں نئے سال کا جشن منانے پر انہوں وزیر اعلیٰ کو ہدف تنقید بنایا۔ انہوں نے کہا کہ بہتر ہوتا کہ وزیر اعلیٰ اس وقت ریاست کے خشک سالی سے دوچارعلاقوں کے ترقیاتی کاموں کا جائزہ لیتے۔ دیہی علاقوں کے عوام کو سوکھے سے زیادہ نقصان ہوا ہے اور وہاں پینے کا پانی بھی دستیاب نہیں ہے، وہیں کسان اپنے مویشیوں کو بے حد کم قیمت میں فروخت کر رہے ہیں۔ مسٹر یدیو رپا نے ریاستی حکومت سے گزارش کی ہے کہ وہ پانی اور چارے کی کمی کو دور کرنے کے لیے مناسب اقدام کریں۔

Loading...