உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Afghanistan Earthquake: کرکٹر راشد خان نے زلزلہ میں اپنا سب کچھ گنوا چکی معصوم کی تصویر کی شیئر، لوگوں سے کی خاص اپیل

    Afghanistan Earthquake: کرکٹر راشد خان نے زلزلہ میں اپنا سب کچھ گنوا چکی معصوم کی تصویر کی شیئر، لوگوں سے کی خاص اپیل (Rashid khan twitter)

    Afghanistan Earthquake: کرکٹر راشد خان نے زلزلہ میں اپنا سب کچھ گنوا چکی معصوم کی تصویر کی شیئر، لوگوں سے کی خاص اپیل (Rashid khan twitter)

    Afghanistan Earthquake: افغانستان میں ایک روز پہلے آنے والے زلزلے سے بھاری نقصان ہوا ہے۔ ایک ہزار سے زیادہ لوگ جان کی بازی ہار چکے ہیں اور 1500 سے زیادہ شدید زخمی ہیں۔

    • Share this:
      نئی دہلی : افغانستان میں ایک روز پہلے آنے والے زلزلے سے بھاری نقصان ہوا ہے۔ ایک ہزار سے زیادہ لوگ جان کی بازی ہار چکے ہیں اور 1500 سے زیادہ شدید زخمی ہیں۔ ریکٹر اسکیل پر 6.1 کی شدت کے اس زلزلے کے باعث افغانستان میں 3 ہزار سے زائد کچے اور پکے مکانات منہدم ہو گئے ہیں۔ زلزلے نے پہلے سے ہی مشکلات سے دوچار افغانستان کے لوگوں کی پریشانیوں میں مزید اضافہ کر دیا ہے۔ اس مشکل وقت میں دنیا بھر کے ممالک افغانستان کی مدد کے لئے آگے آئے ہیں۔ افغانستان کے تجربہ کار کرکٹر راشد خان نے بھی مشکل کی اس گھڑی میں افغان عوام کی مدد کے لئے ہاتھ بڑھایا ہے۔

       

      یہ بھی پڑھئے: افغانستان میں تباہ کن زلزلہ میں 1000 لوگوں کی موت، 1500 زخمی


      راشد خان نے ٹویٹر پر اس زلزلے میں اپنا سب کچھ کھو دینے والی معصوم بچی کی تصویر شیئر کی ہے۔ اس تصویر کو شیئر کرتے ہوئے انہوں نے لکھا: یہ معصوم فرشتہ اپنے خاندان کا واحد زندہ رکن ہے۔ مقامی لوگوں کو زلزلے کے بعد اس لڑکی کے خاندان کا کوئی دوسرا فرد نہیں ملا۔ زلزلے کے باعث کئی مکانات منہدم ہوگئے ہیں اور دور دراز علاقوں میں لوگ اب بھی ملبے تلے دبے ہوئے ہیں۔ ایسے میں میں آپ سب سے اپیل کرتا ہوں کہ لوگوں کی زیادہ سے زیادہ مدد کریں۔



      علاوہ ازیں راشد خان خود بھی متاثرین کے لئے چندہ اکٹھا کر رہے ہیں۔ اس حوالے سے انہوں نے ایک ویڈیو پیغام بھی جاری کیا ہے ۔



       

      یہ بھی پڑھئے: پاکستان،شدید اقتصادی بحران میں-چین دے گا2.3بلین ڈالر کا لون


      قابل ذکر ہے کہ افغانستان میں بدھ کو آنے والا زلزلہ دو دہائیوں میں سب سے زیادہ طاقتور اور تباہ کن تھا ۔ پڑوسی ملک پاکستان کے محکمہ موسمیات کے مطابق زلزلے کا مرکز صوبہ پکتیکا میں تھا، جو خوست شہر سے تقریباً 50 کلومیٹر جنوب مغرب میں تھا۔ طالبان فوج کے ترجمان نے کہا کہ کمزور ٹیلی فون نیٹ ورک راحت اور بچاؤ کے کاموں کو متاثر کر رہے ہیں، جس کی وجہ مرنے والوں کی تعداد بڑھ سکتی ہے ۔

      وہیں ٹولو نیوز کی ایک رپورٹ کے مطابق طالبان حکومت نے زلزلے سے متاثرہ افراد کی مدد کیلئے ایک ارب افغانی روپے (تقریبا 87.53 کروڑ روپے) جاری کئے ہیں۔ وہیں ہندوستان کے وزیر اعظم نریندر مودی نے بھی ٹویٹ کر کے تعزیت کا اظہار کیا ہے اور افغانستان کو انسانی امداد کی پیشکش کی ہے۔ نیز دیگر ممالک جیسے پاکستان، جاپان اور جنوبی کوریا وغیرہ نے بھی مدد کا وعدہ کیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: