உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Asia Cup 2022: بابر اعظم کے گیند باز نہیں دکھا سکے دم، فائنل سے قبل سری لنکا نے پاکستان کو روندا

    ایشیا کپ فائنل سے قبل پاکستان کو بڑا جھٹکا، سری لنکا نے پاکستان کو روندا

    ایشیا کپ فائنل سے قبل پاکستان کو بڑا جھٹکا، سری لنکا نے پاکستان کو روندا

    ایشیا کپ 2022 (2022 Asia Cup) کے فائنل مقابلے سے قبل سپر-4 کے آخری مقابلے میں سری لنکا نے ٹاس جیت کر پاکستان کو بلے بازی کی دعوت دی تھی، لیکن پاکستانی ٹیم 20 اوور بھی نہیں کھیل سکی اور 20ویں اوور کی پہلی گیند پر آل آوٹ ہوگئی۔ پاکستان نے سری لنکا کو 122 رنوں کا ہدف دیا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      دبئی: گیند بازوں کی شاندار کارکردگی کے بعد پتھم نسانکا کی نصف سنچری کی بدولت سری لنکا نے پاکستان کو ایشیا کپ 2022 (2022 Asia Cup) کے سپر-4 کے چھٹے اور آخری میچ میں 5 وکٹ سے شکست دے دی۔ دبئی انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلے گئے مقابلے میں سری لنکا نے پاکستان کی طرف سے رکھے گئے 122 رنوں کے ہدف کا پیچھا کرتے ہوئے 17 اوور میں 5 وکٹ گنواکر جیت کے لئے ضروری 123 رن بنالئے۔ اس طرح سے پاکستانی ٹیم کو فائنل سے قبل بڑا جھٹکا لگا ہے۔ اس سے قبل سری لنکا نے ٹاس جیتا اور پاکستان کو بلے بازی کی دعوت دی تھی۔ پاکستانی ٹیم 20 اوور بھی پورا نہیں کھیل سکی اور 20 ویں اوور کی پہلی گیند پر 121 رن بناکر آل آوٹ ہوگئی۔

      پاکستان نے 19.1 اوور میں 121 رن بنائے

      اس سے قبل سری لنکا کے خلاف ٹاس ہراکر پہلے بلے بازی کرنے اتری پاکستان نے 19.1 اوور میں 121 رن بنائے۔ کپتان بابر اعظم نے سب سے زیادہ 30 رن بنائے۔ دبئی انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم میں جاری اس مقابلے میں سری لنکا کی طرف سے وانندو ہسرنگا نے سب سے زیادہ 3 وکٹ حاصل کئے اور پاکستان کے بلے بازوں کو ٹکنے نہیں دیا۔ حالانکہ یہ مقابلہ فائنل کی ڈریس ریہرسل ہے کیونکہ اتوار کو یہی دونوں ٹیم خطابی مقابلے میں کھیلیں گی۔

      ہسرنگا نے حاصل کئے 3 وکٹ

      ہسرنگا نے 21 رن دے کر تین وکٹ حاصل کئے۔ آف اسپنروں مہیش تیکشن (21 رن پر دو وکٹ) اور دھننجے ڈی سلوا (18 رن ایک وکٹ) اور ڈیبیو کر رہے تیز گیند باز پرمود مدوسان (21 رن پر دو وکٹ) نے ان کا اچھا ساتھ نبھایا، جس سے پاکستان کی ٹیم 19.1 اوور میں سمٹ گئی۔ پاکستان کے بلے بازوں کو پاور پلے کے بعد رن بنانے کے لئے جدوجہد کرنی پڑی۔

      قابل ذکر ہے کہ سری لنکا اور پاکستان پہلے ہی فائنل میں پہنچ چکی ہیں۔ اس میچ کی ہار جیت سے دونوں ٹیموں کو کوئی فائدہ اور نقصان نہیں ہوگا، لیکن ہارنے والی ٹیم پر نفسیاتی دباو ضرور بنے گا۔ دنشکا شناکا کی کپتانی والی سری لنکا اور بابر اعظم کی قیادت والی پاکستانی ٹیمیں آج دبئی انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم میں مقابلے میں جیت حاصل کرکے اپنی مخالف ٹیم پر نفسیاتی دباو بنانا چاہتی ہیں۔ کیونکہ دونوں ٹیمیں 11 ستمبر کو خطابی مقابلے میں مد مقابل ہوں گی۔ دونوں ٹیموں نے خطاب کی مضبوط دعویدار مانی جا رہی ہندوستانی ٹیم کو سپر-4 مقابلے میں شکست دے کر اسے ایشیا کپ سے باہر کردیا۔

      اس سے قبل پاکستان کو محمد رضوان کی شکل میں پہلا جھٹکا لگا۔ وہ 14 گیندوں پر 14 رن بناکر پویلین لوٹ گئے ہیں۔ محمد رضوان کے آوٹ ہونے کے بعد بلے بازی کرنے فخر زماں بھی 18 گیندوں پر 13 رن بناکر پویلین لوٹ گئے ہیں۔ قدم جمانے کے بعد بابر اعظم بھی پویلین لوٹ گئے ہیں۔ بابر اعظم نے 30 رن بنائے۔ جبکہ خوش دل شاہ محض 4 رن بناکر پویلین لوٹ گئے ہیں۔ افتتخار احمد 13 اور آصف علی صفر پر پویلین لوٹ گئے۔ پاکستان کی طرف سے بابر اعظم نے سب سے زیادہ 30 اور محمد نواز نے 26 رن بنائے۔



      پاکستان کے حوصلے بلند

      پاکستان کرکٹ ٹیم کے حوصلے اس وقت بلند ہیں۔ بابر اعظم کی ٹیم نے گزشتہ میچ میں افغانستان پر دلچسپ جیت درج کرکے فائنل میں انٹری کی ہے۔ اس سے قبل اس نے سپرفور کے اپنے پہلے میچ میں ہندوستان کی مضبوط ٹیم کو شکست دے کر اسے ایشیا کپ سے باہر کردیا ہے۔ پاکستانی ٹیم اس مقابلے میں جیت حاصل کرکے فائنل میں بلند حوصلے کے ساتھ اترنا چاہتی ہے۔

      پاکستان کی پلیئنگ الیون میں 2 تبدیلی

      پاکستان نے پلیئنگ الیون میں 2 تبدیلیاں کی ہیں۔ شاداب خان اور نسیم شاہ باہر رکھا گیا ہے جبکہ عثمان قادر اور حسن علی کو موقع دیا گیا ہے۔ بابر اعظم نے امید ظاہر کی کہ شاداب خان فائنل مقابلے تک فٹ ہوجائیں گے۔

      سری لنکا کی پلیئنگ الیون

      پتھم نسنکا، کسل مینڈس (وکٹ کیپر)، دھننجے ڈی سلوا، دھنشکا گناتلکا، بھانوکا راج پکشے، داسن شناکا (کپتان)، وانندو ہسرنگا، چمیکا کرونا رتنے، پرمود مدھوشن، مہیش تیکشنا، دلشان مدھوشنکا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: