ہوم » نیوز » اسپورٹس

آئی پی ایل نیلامی سے کردیا گیا تھا باہر، اب ہندوستان کو عالمی کپ دلائےگا یہ آل راؤنڈر

گزشتہ سال دسمبر میں ہوئی آئی پی ایل نیلامی کے لئے 971 کھلاڑیوں نے اپنا رجسٹریشن کرایا تھا، جس میں ایک نام ارتھو انکولیکر کا بھی تھا۔ مگر انہیں تکنیکی وجہ سے نیلامی کے لئے شارٹ لسٹ نہیں کیا گیا تھا۔

  • Share this:
آئی پی ایل نیلامی سے کردیا گیا تھا باہر، اب ہندوستان کو عالمی کپ دلائےگا یہ آل راؤنڈر
فرسٹ کلاس کرکٹ کا تجربہ نہ ہونے کے سبب ارتھو انکولیکرکو آئی پی ایل نیلامی کےلئے شارٹ لسٹ نہیں کیا گیا تھا۔ فائل فوٹو

ہندوستانی ٹیم پانچویں بار انڈر 19 عالمی کپ جیتنے سےصرف ایک قدم دور ہے۔ اتوارکو ہندوستانی ٹیم بنگلہ دیش کےخلاف خطابی مقابلےکےلئے میدان پر اترےگی اور ٹیم کی کوشش ایک بارپھر عالمی چمپئن بننےکی ہوگی۔ ہندوستان کی جونیئر ٹیم کےلئے یہ میچ کیریئرکا ٹرننگ پوائٹ ہونے والا ہے، کیونکہ یہ جیت منزل تک پہنچنےکےلئےان کی راہ طےکرے گی۔ ٹیم کے اہم کھلاڑی ارتھو انکولیکرکےلئے یہ یادگار میچ ہونے والا ہے۔ کیونکہ انہیں معلوم ہےکہ اس میچ کے بعد وہ 'بڑے' کھلاڑی بن جائیں گے۔ مطلب اس کے بعد انہیں ایک نئی پہچان مل جائےگی، پھر کبھی انہیں آئی پی ایل نیلامی سے باہر نہیں کیا جائےگا۔


ارتھو انکولیکر نے آسٹریلیا کے خلاف کوارٹر فائنل میں بلے اور گیند دونوں سے کمال کیا تھا۔ فائل فوٹو
ارتھو انکولیکر نے آسٹریلیا کے خلاف کوارٹر فائنل میں بلے اور گیند دونوں سے کمال کیا تھا۔ فائل فوٹو


دراصل گزشتہ سال دسمبر میں ہوئی آئی پی ایل نیلامی کےلئے971 کھلاڑیوں نے اپنا رجسٹریشن کرایا تھا، جس میں ایک نام ارتھو انکولیکرکا بھی تھا۔ انہیں امید تھی کہ نیلامی کے بعد وہ اپنی ماں کو نوکری چھوڑنےکےلئےکہہ سکتے ہیں، جو بس میں کنڈکٹر ہیں۔ مگر اس نوجوان آل راؤنڈرکا خواب اس وقت ٹوٹ گیا، جب تکنیی وجوہات سے انہیں نیلامی کےلئے شارٹ لسٹ نہیں کیا گیا اور وہ تکنیکی وجہ تھی۔ ان کا لسٹ اے کرکٹ نہ کھیل پانا۔


اگلے چیلنج کے لئے خود کوتیارکیا

19 سال کے ارتھو انکولیکر کے پاس کوئی متبادل نہیں تھا،مگر ان کے پاس زندگی کو بدلنےکےلئے ایک موقع تھا۔ جو انڈر 19 عالمی کپ ہے۔ حالانکہ ارتھو انکولیکر نے چوٹ کے سبب اس ٹورنامنٹ میں اپنی مہم کا آغاز دیر سےکیا اور کوارٹرفائنل میں آسٹریلیا کے خلاف نصف سنچری لگانےکے ساتھ ہی کفایتی گیند بازی کرکےاپنا لوہا منوالیا۔ اب ان کی نظر اتوارکو ہونے والے فائنل مقابلے پرہے۔

ارتھو انکولیکر کی ماں بس میں کنڈکٹر ہیں۔ فائل فوٹو
ارتھو انکولیکر کی ماں بس میں کنڈکٹر ہیں۔ فائل فوٹو


خطاب جیتنے سے اعتماد میں ہوگا اضافہ

ہندوستان ٹائمس سےبات کرتے ہوئے ارتھو کی ماں ویدہی نےکہا کہ یہ میچ ان کے بیٹے کی زندگی کا ٹرننگ پوائنٹ ہوسکتا ہے۔ اگر ہندوستان میچ جیت جاتا ہے تو ان کے بیٹےکو مستقبل میں کئی مواقع ملیں گے۔ ساتھ ہی بڑا فائنل میچ جیتنے سے خود اعتمادی پیدا ہوگی۔ انہوں نے بتایا کہ آئی پی ایل نیلامی کےلئے نہ منتخب کئے جانے سے ارتھو انکولیکر تھوڑا مایوس تھا، لیکن آئی پی ایل ہرسال آتا ہے اور انڈر 19 عالمی کپ کھیلنےکا موقع آپ کو زندگی میں صرف ایک بارملتا ہے۔ ارتھو کافی کم عمر میں اپنے والد سے محروم ہوگئے تھے۔ ان کی ماں کا کہنا ہےکہ ارتھو انکولیکر کے پاس فائنل کے طور پر اپنے والد کے خواب کو پورا کرنےکا موقع ہے۔

ارتھو انکولیکر نےکم عمری میں ہی اپنے والد کو کھو دیا تھا۔ فائل فوٹو
ارتھو انکولیکر نےکم عمری میں ہی اپنے والد کو کھو دیا تھا۔ فائل فوٹو


ماں کو آرام دینا چاہتے تھے ارتھو انکولیکر

نوجوان آل راؤنڈر ارتھو انکولیکرکی ماں نےکہا کہ ان کا بیٹا چاہتا تھا کہ وہ اپنی نوکری چھوڑ دے، کیونکہ اس میں کافی محنت ہے، مگر وہ جلد بازی میں کوئی قدم نہیں اٹھانا چاہتی۔ ارتھو انکولیکرکی کمائی ٹورنامنٹ پرمنحصر ہے، جو طےنہیں ہے اور وہ پوری طرح سےارتھو پر منحصر نہیں ہونا چاہتیں۔
First published: Feb 08, 2020 08:59 AM IST