உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان کرکٹ بورڈ کے لئے بڑی خوشخبری! 24 سال بعد پاکستان کا دورہ کرے گی آسٹریلیائی ٹیم

    پاکستان کے لئے بڑی خوشخبری! 24 سال بعد پاکستان کا دورہ کرے گی آسٹریلیائی ٹیم

    پاکستان کے لئے بڑی خوشخبری! 24 سال بعد پاکستان کا دورہ کرے گی آسٹریلیائی ٹیم

    آسٹریلیا نے گزشتہ بار 1998 میں پاکستان کا دورہ (Australia tour of Pakistan) کیا تھا۔ وہ آئندہ سال مارچ میں شروع ہونے والے دورے پر تین ٹسٹ میچ کھیلے گا۔ عالمی ٹسٹ چمپئن شپ کے تحت کھیلے جانے والے ان تینوں میچوں کا انعقاد کراچی (تین سے سات مارچ)، راولپنڈی (12 سے 16 مارچ) اور لاہور (21 مارچ سے 25 مارچ) میں کیا جائے گا۔

    • Share this:
      نئی دہلی: آسٹریلیائی ٹیم آئندہ سال مارچ میں پاکستان کا دورہ (Australia tour of Pakistan) کرنے کو تیار ہوگئی ہے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ (PCB) نے پیر کو اس کی تصدیق کردی۔ یہ سال 1998 کے بعد آسٹریلیا کا پہلا پاکستان دورہ ہوگا۔ اس دورے پر دونوں ٹیموں کے درمیان تین ٹسٹ، تین ونڈے اور واحد ٹی-20 بین الاقوامی میچ کھیلا جائے گا۔ سیکورٹی اسباب سے حال ہی میں نیوزی لینڈ اور انگلینڈ نے پاکستان کا دورہ عین وقت پر منسوخ کردیا تھا۔ اب آسٹریلیا نے مکمل سیریز (محدود اووروں کے ساتھ ٹسٹ) کھیلنے پر رضامندی کا اظہار کردیا ہے۔

      آسٹریلیا نے گزشتہ بار 1998 میں پاکستان کا دورہ کیا تھا۔ وہ آئندہ سال مارچ میں شروع ہونے والے دورے پر تین ٹسٹ میچ کھیلے گا۔ عالمی ٹسٹ چمپئن شپ کے تحت کھیلے جانے والے ان تینوں میچوں کا انعقاد کراچی (تین سے سات مارچ)، راولپنڈی (12 سے 16 مارچ) اور لاہور (21 مارچ سے 25 مارچ) میں کیا جائے گا۔ پاکستان کرکٹ بورڈ نے جمعہ کو اس دورے کی جانکاری دیتے ہوئے کہا کہ محدود اووروں کے چار میچ 29 مارچ سے پانچ اپریل کے درمیان کھیلے جائیں گے۔

      آسٹریلیائی ٹیم آئندہ سال مارچ میں پاکستان کا دورہ کرنے کو تیار ہوگئی ہے۔ یہ سال 1998 کے بعد آسٹریلیا کا پہلا پاکستان دورہ ہوگا۔
      آسٹریلیائی ٹیم آئندہ سال مارچ میں پاکستان کا دورہ کرنے کو تیار ہوگئی ہے۔ یہ سال 1998 کے بعد آسٹریلیا کا پہلا پاکستان دورہ ہوگا۔


      اس سال ستمبر میں نیوزی لینڈ کی ٹیم پاکستان پہنچنے کے بعد سیکورٹی خطرے کے سبب ایک بھی کھیلے بغیر ہی گھر واپس لوٹ گئی تھی۔ اس کے فوراً بعد، انگلینڈ نے بھی اعلان کیا کہ وہ ٹی-20 عالمی کپ سے قبل اس ملک کا دورہ نہیں کریں گے۔ آسٹریلیا کا پاکستان میں آنا حال ہی میں پی سی بی کے سربراہ بنے رمیز راجہ کے لئے ایک بڑی جیت ہے، جنہوں نے انگلینڈ اور نیوزی لینڈ کے ہٹنے کے بعد آسٹریلیائی ٹیم کے دورے کی امید نہیں کی تھی۔

      رمیز راجہ نے ایک بیان میں کہا، ’مجھے خوشی ہے کہ ہم تین ٹسٹ میچوں کی سیریز کھیلیں گے۔ بہت بڑی خوشی کی بات ہے‘۔ انہوں نے کہا، ’آسٹریلیا شاندار کارکردگی پیش کرنے والی ٹیموں میں سے ایک ہے اور 24 سال کے وقفے کے بعد پہلی بار ہمیشہ ملک میں کھیلنا ناظرین کے لئے ایک خاص لمحہ ہوگا‘۔ کرکٹ آسٹریلیا کے چیف ایگزیکٹیو نک ہاکلے نے کہا کہ وہ اپنی ٹیم کا تحفظ یقینی بنانے کے لئے پی سی بی کے ساتھ کام کرنا جاری رکھیں گے۔

       رمیز راجہ نے ایک بیان میں کہا، ’مجھے خوشی ہے کہ ہم تین ٹسٹ میچوں کی سیریز کھیلیں گے۔ بہت بڑی خوشی کی بات ہے‘۔

      رمیز راجہ نے ایک بیان میں کہا، ’مجھے خوشی ہے کہ ہم تین ٹسٹ میچوں کی سیریز کھیلیں گے۔ بہت بڑی خوشی کی بات ہے‘۔


      انہوں نے کہا، ’ہم دورے کا منصوبہ بنانے کے لئے پی سی بی کا شکریہ ادا کرتے ہیں اور ضروری آپریٹنگ، رسد (لاجسٹک)، سیکورٹی اور کووڈ-19 پروٹوکول کو آخری شکل دینے کے لئے آنے والے مہینوں میں کام کرنا جاری رکھیں گے‘۔ آسٹریلیا نے 99-1998 میں پاکستان کے اپنے گزشتہ دورے پر مارک ٹیلر کی کپتانی میں ٹسٹ سیریز میں 0-1 سے جیت درج کی تھی۔ اس کے بعد سال 2002 میں آسٹریلیا نے دورے سے ٹھیک پہلے پاکستان میں ہوئے خودکش حملے کے سبب سفر کرنے سے انکار کردیا تھا، جس کے بعد اس سیریز کو کولمبو اور ابوظہبی میں کھیلا گیا تھا۔ سال 2009 میں لاہور میں سری لنکائی ٹیم کی بس پر ہوئے دہشت گردانہ حملے نے پاکستان میں سالوں سے چل رہے بین الاقوامی کرکٹ کو ختم کردیا تھا۔ پاکستان نے اس کے بعد آسٹریلیا کے چار دوروں کی میزبانی سری لنکا، انگلینڈ اور متحدہ عرب امارات میں کی تھی۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: