உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بابر اعظم نے ایشیا کپ کی غلطی کا کیا اعتراف، کہا- 2 سال سے پیش کر رہے ہیں بہترین کارکردگی

    Pakistan vs England T20i Series: بابر اعظم ایشیا کپ میں اچھی کارکردگی نہیں پیش کرسکے ہیں۔ (AFP)

    Pakistan vs England T20i Series: بابر اعظم ایشیا کپ میں اچھی کارکردگی نہیں پیش کرسکے ہیں۔ (AFP)

    پاکستان کرکٹ بورڈ نے بابر اعظم سے صحافیوں کی بات چیت کا ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر پوسٹ کیا ہے۔ اس میں ایک صحافی نے پوچھا، ٹاپ آرڈر کے اسٹرائیک ریٹ پر بات ہوتی ہے۔ اس پر پاکستانی کپتان بابر اعظم نے بہترین جواب دیا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      نئی دہلی: بابر اعظم (Babar Azam) کی کارکردگی گزشتہ دنوں ٹی20 ایشیا کپ میں کچھ خاص نہیں رہی تھی۔ وہ 6 میچ میں اترے اور کسی میں بھی نصف سنچری نہیں لگا سکے۔ وہ وکٹ کیپر بلے باز محمد رضوان کے ساتھ اوپننگ کرنے اترتے ہیں۔ دونوں کے اسٹرائیک ریٹ پر سوال اٹھتے رہے ہیں۔ پاکستان اور انگلینڈ (PAK vs ENG) کے درمیان 7 میچوں کی ٹی20 سیریز آج سے شروع ہو رہی ہے۔ انگلش ٹیم 17 سال بعد دورے پر آئی ہے۔ سیریز کو لے جب بابر اعظم سے پوچھا گیا کہ آپ اور محمد رضوان کے کم اسٹرائیک ریٹ پر مسلسل سوال اٹھتے رہے ہیں۔ اس پر انہوں نے کہا کہ ایشیا کپ میں ہماری کارکردگی تھوڑی ضرور نیچے آئی، لیکن گزشتہ دو سال سے ہم بطور سلامی بلے باز اچھی کارکردگی پیش کر رہے ہیں۔

      پاکستان کرکٹ بورڈ نے بابر اعظم سے صحافیوں کی بات چیت کا ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر پوسٹ کیا ہے۔ اس میں ایک صحافی نے پوچھا، ٹاپ آرڈر کے اسٹرائیک ریٹ پر بات ہوتی ہے۔ اس پر بابر اعظم نے کہا کہ گزشتہ دو سال سے ہماری اوپننگ اچھی رہی ہے۔ ہم الگ الگ صورتحال کو دیکھ کر کھیلتے ہیں۔ ٹیم کو بھی اس کا فائدہ ملا۔ اچھی شروعات کے بعد مڈل آرڈر اسے آگے لے جاتا ہے۔ میرا اسٹرائیک ریٹ کے آس پاس رہتا ہے۔ کبھی کبھی یہ نیچے بھی آتا ہے۔ میں اس بارے میں زیادہ نہیں سوچتا۔



      مڈل آرڈر نے پیش کی اچھی کارکردگی

      پاکستانی کپتان بابر اعظم نے کہا کہ خوشی ہے کہ ایشیا کپ میں ہمارے مڈل آرڈر نے اچھی کارکردگی پیش کی۔ سبھی کی کوشش یہی ہوتی ہے کہ 100 فیصد دیں۔ حالانکہ میری کارکردگی اچھی نہیں رہی۔ پاورپلے اور میچ میں زیادہ ڈاٹ بال کھیلنے کے سوال پر کپتان بابر اعظم نے کہا کہ صورتحال کے حساب سے ہم کھیلتے ہیں۔ اسی طرح سے ہم نے 200 رن سے زیادہ کا ہدف بھی حاصل کیا۔ ٹاپ آرڈر کے بلے باز جتنا زیادہ میچ کو نزدیک لے جاتے ہیں، اس کا فائدہ ٹیم کو ملتا ہے۔ ٹی20 ایشیا کپ میں زیادہ ڈاٹ بال ضرور رہیں، لیکن اس کے سبب ہم میچ نہیں ہارے۔

      انگلینڈ کے خلاف ٹی20 سیریز کی وجہ سے بابر اعظم نے کہا کہ یہ اہم سیریز ہے۔ سبھی کھلاڑی خوش ہیں۔ عالمی کپ سے پہلے 7 میچوں سے ہمیں تیاری کا موقع ملے گا۔ سبھی 100 فیصدی دینے کو تیار ہیں۔ شاہین شاہ آفریدی کو لے کر انہوں نے کہا کہ وہ ٹیم کے اہم کھلاڑیوں میں سے ایک ہیں۔ وہ اگلے ماہ گیند بازی شروع کریں گے۔ امید ہے کہ وہ ٹی20 عالمی کپ سے پہلے پوری طرح فٹ ہوجائیں گے۔ واضح رہے کہ عالمی کپ کے مقابلے 16 اکتوبر سے آسٹریلیا میں ہونا ہے۔ پاکستان کو پہلے میچ میں 23 اکتوبر کو ہندوستان سے مدمقابل ہونا ہے۔

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: