உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بابر اعظم نے ہار کے بعد دی صفائی تو فینس نے کپتان کی کردی بے عزتی

    بابر اعظم نے ہار کے بعد دی صفائی تو فینس نے کپتان کی کردی بے عزتی

    بابر اعظم نے ہار کے بعد دی صفائی تو فینس نے کپتان کی کردی بے عزتی

    انگلینڈ کے ہاتھوں پاکستانی ٹیم کے سیریز گنوانے کے بعد طرح طرح کے ردعمل سامنے آرہے ہیں۔ اس کے باوجود فینس کا غصہ ختم نہیں ہوا ہے۔ ٹیم کے کپتان بابر اعظم کو سوشل میڈیا پر جم کر ٹرول کیا گیا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      نئی دہلی: پاکستان اور انگلینڈ (Pakistan vs England) کے درمیان 7 میچوں کی ٹی20 سیریز کا اختتام ہوچکا ہے۔ مہمان ٹیم نے سیریز کے آخری مقابلے میں پاکستان کو 67 رنوں کے بڑے فرق سے شکست دی۔ میزبان ٹیم نے سیریز گنوانے کے بعد طرح طرح کے ردعمل ظاہر کئے۔ اس کے باوجود فینس کا غصہ ختم نہیں ہوا ہے۔ ٹیم کے کپتان بابر اعظم (Babar Azam) کو سوشل میڈیا پر جم کر ٹرول کیا گیا۔

      میچ کی بات کریں تو پہلے بلے بازی کرنے اتری مہمان ٹیم نے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ ڈیوڈ ملان اور ہیری بروک کی بہترین اننگوں کی بدولت ٹیم 209 کے ہمالیائی اسکور تک پہنچی۔ ڈیوڈ ملان نے 47 گیندوں میں آٹھ چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے  78 رنوں کی بہترین اننگ کھیلی۔ پہاڑ جیسے ہدف کا پیچھا کرنے اتری بابر اعظم اینڈ کمپنی 142 رن ہی بناسکی۔

      ہار کے بعد کپتان بابر اعظم نے پریس کانفرنس کے دوران ایک بیان دیا۔ اس بیان پر فینس بھڑک گئے اور بابر اعظم کو جم کر ٹرول کیا گیا۔
      ہار کے بعد کپتان بابر اعظم نے پریس کانفرنس کے دوران ایک بیان دیا۔ اس بیان پر فینس بھڑک گئے اور بابر اعظم کو جم کر ٹرول کیا گیا۔


      بابر اعظم نے دی صفائی تو فینس نے اڑایا مذاق

      انگلینڈ کی ٹیم نے ٹی20 سیریز کو 3-4 سے اپنے قبضے میں کیا۔ ہار کے بعد کپتان بابر اعظم نے پریس کانفرنس کے دوران ایک بیان دیا۔ اس بیان پر فینس بھڑک گئے اور بابر اعظم کو جم کر ٹرول کیا گیا۔ پاکستانی کپتان نے اپنے بیان میں کہا تھا، ’کرکٹ کی یہی خوبصورتی ہوتی ہے، کبھی آپ ہارتے ہیں تو کبھی جیتتے ہیں‘۔ بابر اعظم کے اس بیان پر ایک فین نے کپتان سے سوال کیا کہ ساری خوبصورتی ہماری قسمت میں ہی کیوں ہے۔

      انگلینڈ کے خلاف نہیں چلا بابر اعظم اور محمد رضوان کا بلّا

      بابراعظم اپنی کلاسیکل بلے بازی کے لئے جانے جاتے ہیں، لیکن سیریز کے آخری مقابلے میں انگلینڈ کے گیند بازوں کے سامنے ان کا جادو نہیں چلا۔ وہیں، سلامی بلے باز محمد رضوان بھی سستے میں پویلین لوٹ گئے۔ دونوں کھلاڑیوں کے آوٹ ہونے کے بعد دھیرے دھیرے پوری ٹیم بکھر گئی اور مہمانوں نے اس سیریز کو اپنے نام کرلیا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: