உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستانی فینس کی پٹائی کا معاملہ: استنک زئی کا شعیب اختر کو جواب، بات کو ملک پر مت لے جانا

    پاکستانی فینس کی پٹائی کا معاملہ: استنک زئی کا شعیب اختر کو جواب، بات کو ملک پر مت لے جانا (AP)

    پاکستانی فینس کی پٹائی کا معاملہ: استنک زئی کا شعیب اختر کو جواب، بات کو ملک پر مت لے جانا (AP)

    Pakistan vs Afghanistan, Asia Cup 2022: افغانستان اور پاکستان کے درمیان کھیلے گئے ایشیا کپ کے میچ کے بعد ان دونوں ٹیموں کے فینس کے درمیان مارپیٹ کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ اس کا ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہا ہے۔ اس پر پاکستان کے سابق کرکٹر شعیب اختر نے افغان فینس کو کھری کھوٹی سنائی

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, Indiaafghanistanafghanistan
    • Share this:
      نئی دہلی : افغانستان اور پاکستان کے درمیان کھیلے گئے ایشیا کپ کے میچ کے بعد ان دونوں ٹیموں کے فینس کے درمیان مارپیٹ کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ اس کا ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہا ہے۔ اس پر پاکستان کے سابق کرکٹر شعیب اختر نے افغان فینس کو کھری کھوٹی سنائی ۔ انہوں نے خود ایک ویڈیو جاری کرکے برے وقت میں افغانستان کی مدد کرنے کا واسطہ دیا۔ اس پر افغانستان ٹی ٹوینٹی لیگ (@APLT20official) کے فاونڈر شفیق استنکزئی نے شعیب اختر کو منہ توڑ جواب دیا ہے۔

       

      یہ بھی پڑھئے: شعیب اختر نے کہا : اسلئے اللہ نے ایک پٹھان کو دوسرے سے چھکا مرواکر ذلیل کیا، جانئے معاملہ


      شعیب اختر نے جو ویڈیو شیئر کیا ہے ، اس میں دیکھا جا سکتا ہے کہ کچھ لوگ پاکستان کرکٹ ٹیم کی جرسی پہنے لوگوں کی پٹائی کر رہے ہیں۔ پاکستان کے یہ فینس اپنی جان بچانے کیلئے بھاگ رہے ہیں اور دوسری فریق کے لوگ ان پر کرسیاں پھینک رہے ہیں۔ یہ ویڈیو افغانستان اور پاکستان کے میچ کے بعد کا بتایا جا رہا ہے۔ شعیب اختر نے اس پر افغان فینس کو کھیل کے جذبے کا احترام کرنے کا مشورہ دیا ہے ۔


      یہ بھی پڑھئے: پاکستان سے شکست کے بعد پھوٹ پھوٹ کر روتا ہوا نظر آیا افغانستان کا یہ کھلاڑی، ویڈیو وائرل


      ویڈیو شیئر کرتے ہوئے شعیب اختر نے لکھا: افغان فینس کیا کر رہے ہیں؟ یہ ایسی حرکت ہے جو وہ (افغان ٹیم کے فینس) پہلے بھی کئی بار کر چکے ہیں۔ انہیں سمجھنا چاہئے کہ یہ ایک کھیل ہے اور اس کو کھیل جذبہ کے ساتھ ہی کھیلنا چاہئے۔ @ShafiqStanikzai آپ کے لوگوں اور آپ کے کھلاڑیوں کے پاس سیکھنے کیلئے ابھی بہت کچھ ہے، اگر وہ کھیل میں آگے بڑھنا چاہتے ہیں ۔

      اس پر افغانستان ٹی ٹوینٹی لیگ کے فاونڈر شفیق استنکزئی نے بھی شعیب اختر کو جواب دیا ہے۔ انہوں نے لکھا کہ آپ لوگوں کے جذبات پر قابو نہیں رکھ سکتے، ماضی میں بھی عالمی کرکٹ میں کئی مرتبہ ایسے واقعات ہو چکے ہیں۔ آپ کبیر خان، انضمام الحق ، راشد لطیف سے پوچھیں کہ ہم نے ان کے ساتھ کیسا سلوک کیا۔ میں آپ کو ایک مشورہ دینا چاہتا ہوں کہ اگلی مرتبہ بات کو ملک پر مت لانا ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: