உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    شرط جیتنے کے چکر میں برہنہ ہوکر کرکٹ میدان پر دوڑا شخص، جانئے پورا معاملہ

    چلچلاتی گرمی کے درمیان اس میچ میں اچانک ایک شخص میدان میں برہنہ ہو کر بھاگا۔ پھر سیکورٹی کا نظام بھی اتنا سخت نہیں تھا اور وہ شخص پچ تک پہنچ گیا۔

    چلچلاتی گرمی کے درمیان اس میچ میں اچانک ایک شخص میدان میں برہنہ ہو کر بھاگا۔ پھر سیکورٹی کا نظام بھی اتنا سخت نہیں تھا اور وہ شخص پچ تک پہنچ گیا۔

    چلچلاتی گرمی کے درمیان اس میچ میں اچانک ایک شخص میدان میں برہنہ ہو کر بھاگا۔ پھر سیکورٹی کا نظام بھی اتنا سخت نہیں تھا اور وہ شخص پچ تک پہنچ گیا۔

    • Share this:
      شرط جیتنے کے چکر میں کئی بار لوگ حد سے گزر جاتے ہیں اور بعض اوقات ناممکن کام بھی کر ڈالتے ہیں۔ شرط پوری ہو جائے تو کون سی بڑی بات ہے۔ بعض اوقات شرط لگا کر پیسے کماتے ہیں اور اس کے لیے لوگ بے شرمی کی حدیں پار کر چکے ہیں۔ ایسا ہی ایک واقعہ 4 اگست (4 August History) سے متعلق ہے۔ سال 1975 تھا اور گراؤنڈ لندن کا تاریخی لارڈز تھا۔ اس وقت انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان اس گراؤنڈ پر سیریز کا دوسرا ٹیسٹ میچ کھیلا جا رہا تھا۔ چلچلاتی گرمی کے درمیان اس میچ میں اچانک ایک شخص میدان میں برہنہ ہو کر بھاگا۔ پھر سیکورٹی کا نظام بھی اتنا سخت نہیں تھا اور وہ شخص پچ تک پہنچ گیا۔

      اس شخص کا نام مائیکل اینجلو تھا۔ وہ ایک جہاز پر باورچی کے طور پر کام کرتا تھا۔ لارڈز گراؤنڈ میں انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان ٹیسٹ میچ دیکھنے آیا تھا۔ اس سے شرط لگائی گئی کہ اگر وہ میچ کے دوران برہنہ ہو کر میدان میں جائے اور اسٹمپ کے اوپر سے چھلانگ لگائے تو وہ 10 یورو کما سکتا ہے۔ اسے پیسہ بہت لگا اور اسی کے چلتے اس نے پیسہ کمانے کا کی ٹھان لی۔




      مائیکل اینجلو دوڑتا ہوا آیا اور اسٹمپ پر چھلانگ لگا دی۔ پھر بھاگتے ہوئے وہ ٹیلے کے اسٹینڈ کی طرف چلا گیا۔ اسے وہاں گرفتار کیا گیا اور بعد میں مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کیا گیا۔ مجسٹریٹ نے اسے صرف 10 یورو کا ہی جرمانہ لگایا جو اس نے شرط پوری کرکے کمائے تھے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: