உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    IND vs PAK: ایک میچ کا ہیرو، دوسرے میں ثابت ہوا زیرو، پاکستان کے ہاتھوں ہندوستان کی ہار کی یہ ہیں 5 وجوہات

    IND vs PAK: ایک میچ کا ہیرو، دوسرے میں ثابت ہوا زیرو، پاکستان کے ہاتھوں ہندوستان کی ہار کی یہ ہیں 5 وجوہات  (AP)

    IND vs PAK: ایک میچ کا ہیرو، دوسرے میں ثابت ہوا زیرو، پاکستان کے ہاتھوں ہندوستان کی ہار کی یہ ہیں 5 وجوہات (AP)

    India vs Pakistan: پاکستان نے سپر 4 میں ایشیا کپ کے گروپ مرحلے میں ہندوستان کے ہاتھوں شکست کا حساب برابر کرلیا ہے۔ پاکستان نے 182 رنز کا ہدف 5 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کر لیا۔ پاکستان کی جیت میں محمد رضوان کی نصف سنچری نے اہم کردار ادا کیا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Mumbai | Chennai | Kolkata
    • Share this:
      نئی دہلی : پاکستان نے سپر 4 میں ایشیا کپ کے گروپ مرحلے میں ہندوستان کے ہاتھوں شکست کا حساب برابر کرلیا ہے۔ پاکستان نے 182 رنز کا ہدف 5 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کر لیا۔ پاکستان کی جیت میں محمد رضوان کی نصف سنچری نے اہم کردار ادا کیا۔ ان کے علاوہ محمد نواز نے بھی 42 رنز کی طوفانی اننگز کھیلی۔ ہاردک پانڈیا ہندوسان اس میچ میں پوری طرح سے فلاپ رہے ۔ اس میچ میں ان کی بلے بازی اور گیند بازی دونوں نہیں چلی ۔ ان کے علاوہ بھی ٹیم انڈیا کی شکست میں کئی ویلن تھے۔

      پانڈیا ایک میچ میں چمکے، دوسرے میں فلاپ

      ہاردک پانڈیا نے پاکستان کے خلاف ایشیا کپ کے پہلے میچ میں ہندوستان کو جیت دلانے میں اہم کردار ادا کیا تھا ۔ انہوں نے 33 ناٹ آؤٹ کے ساتھ 3 وکٹیں بھی حاصل کیں۔ لیکن وہ سپر 4 میچ میں اس کارکردگی کو دہرانے میں ناکام رہے۔ بلے بازی میں وہ کھاتہ بھی نہیں کھول سکے اور گیند بازی میں کافی رنز دئے۔ پانڈیا نے 4 اوور میں 44 رنز دئے اور صرف ایک وکٹ حاصل کی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : ایک نے چھوڑا، دوسرے نے پکڑا، روہت شرما کا کیچ پکڑنے کیلئے بھڑے دو کھلاڑی


      ہندوستانی مڈل آرڈر کا فلاپ شو

      روہت شرما اور کے ایل راہل کی اوپننگ جوڑی نے ہندوستان کو اچھی شروعات دلائی۔ دونوں نے پہلی وکٹ کے لئے 30 گیندوں میں 54 رنز بنائے ، لیکن مڈل آرڈر بلے بازوں نے اس آغاز پر پانی پھیر دیا ۔ خاص طور پر گزشتہ میچ میں طوفانی اننگز کھیلنے والے سوریہ کمار یادو اس کا فائدہ نہیں اٹھا سکے۔ انہوں نے 13 رنز بنائے۔ اس کا خمیازہ ہندوستان کو بھگتنا پڑا۔

      پنت کا پاور نہیں دکھا

      اس میچ میں ریشبھ پنت کو دنیش کارتک پر ترجیح دی گئی، لیکن وہ اس موقع کا فائدہ نہیں اٹھا سکے اور بڑی اننگز کھیلنے میں ناکام رہے۔ پنت صرف 14 رن بنا کر آؤٹ ہو گئے۔ وہ جس طرح سے آوٹ ہوئے ، اس کو لے کر کپتان روہت شرما کافی ناراض نظر آئے۔ جب پنت ڈریسنگ روم میں واپس آئے تو روہت نے جم کر ان کی کلاس لگائی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: پاکستان نے آٹھ دن میں ہندوستان سے لیا ہار کا بدلہ، رضوان اور نواز چمکے


      ارشدیپ سنگھ اثردار نظر نہیں آئے

      دبئی کی وہ وکٹ جس پر پاکستانی پیسرز نے شاندار گیند بازی کی۔ اس پر ارشدیپ سنگھ جدوجہد کرتے نظر آئے۔ وہ نئی گیند کے ساتھ اثردار نظر نہیں آئے اور درمیانی اوور میں بھی مہنگے ثابت ہوئے۔ انہوں نے آصف علی کا ایک کیچ بھی ڈراپ کیا، جو ہندوستان پر بھاری پڑ گیا ۔

      یجویندر چہل بھی نہیں چمکے

      یجویندر چہل ٹی ٹوینٹی میں ہندوستان کے سب سے زیادہ وکٹ لینے والے گیندبازوں میں سے ایک ہیں۔ لیکن وہ پاکستان کے خلاف کوئی چھاپ نہیں چھوڑ سکے۔ انہوں نے 4 اوورز میں 43 رنز دئے اور صرف ایک وکٹ لے سکے۔ ان کی گیندوں پر پاکستانی بلے بازوں نے 6 چوکوں کے ساتھ 1 چھکا لگایا۔ وہ درمیانی اوور میں وکٹ لینے میں ناکام رہے۔ اسی وجہ سے بابر کے جلد آوٹ ہونے کے بعد بھی ہندوستان پاکستان پر دباؤ نہیں ڈال سکا ۔

      اس کے علاوہ بھونیشور کمار ہندوستانی اننگز کا 19 واں اوور پھینکنے کیلئے آئے اور انہوں نے اس اوور میں 2 وائیڈ گیندیں پھینکیں ۔ یہی نہیں بھونیشور کے اس اوور میں پاکستانی بلے بازوں نے 1 چھکا اور 2 چوکے لگا کر میچ کو اپنی مٹھی میں کر لیا۔ آخری اوور میں پاکستان کو 6 گیندوں پر 7 رنز درکار تھے، جو اس نے آسانی سے حاصل کر لئے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: