اپنا ضلع منتخب کریں۔

    IND vs Pak: ہندوستان ۔ پاکستان کا میچ خراب کرسکتی ہے بارش، میلبورن سے آیا یہ بڑا اپ ڈیٹ

    IND vs Pak: ہندوستان ۔ پاکستان کا میچ خراب کرسکتی ہے بارش، میلبورن سے آیا یہ بڑا اپ ڈیٹ (AP)

    IND vs Pak: ہندوستان ۔ پاکستان کا میچ خراب کرسکتی ہے بارش، میلبورن سے آیا یہ بڑا اپ ڈیٹ (AP)

    IND vs Pak T20 World Cup: ہندوستان اور پاکستان کے درمیان 23 اکتوبر کو کھیلا جانے والا ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ کے سپر 12 کے سب سے بڑے میچ پر بارش کا خطرہ منڈلا رہا ہے ۔ میلبورن میٹرولاجیکل سینٹر نے بڑا اپ ڈیٹ دیا ہے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Mumbai | Kolkata | Chennai
    • Share this:
      نئی دہلی : ہندوستان اور پاکستان کے درمیان 23 اکتوبر کو کھیلا جانے والا ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ کے سپر 12 کے سب سے بڑے میچ پر بارش کا خطرہ منڈلا رہا ہے ۔ میلبورن میٹرولاجیکل سینٹر نے بڑا اپ ڈیٹ دیا ہے ۔ سینٹر کے پیشگی تخمینہ کے مطابق میچ والے دن بارش ہونے کا 80 سے 90 فیصد امکان ہے ۔ یہ خبر کروڑوں کرکٹ فینس کیلئے کسی جھٹکے سے کم نہیں ہے، جو میچ دیکھنے کا بے صبری سے انتظار کررہے ہیں ۔ یہ میچ میلبورن کرکٹ گراونڈ میں اتوار کو کھیلا جائے گا ۔

      ہندوستان اور پاکستان کی رائیولری کو دیکھتے ہوئے ورلڈ کپ شروع ہونے سے پہلے ہی یہ میچ سرخیوں میں چھایا ہوا ہے ۔ حالانکہ ویک اینڈ کے آخر میں موسم کی پیشین گوئی کے مطابق بارش کھیل خراب کرسکتی ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: ہندوستان اور پاکستان کا میچ بارش کی وجہ سے ہوا رد تو کس کو ملے گا فائدہ، جانئے سب کچھ


      یہ بھی پڑھئے: ہندوستان اور پاکستان دونوں ٹیموں کو ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ شروع ہونے سے پہلا لگا جھٹکا


      آسٹریلیائی سرکار کے محکمہ موسمیات کے مطابق میچ والے دن بارش کا امکان 90 فیصد ہے، اس دن زیادہ سے زیادہ اور کم از کم درجہ حرارت 14 سے 19 ڈگری سیلسیس کے درمیان رہے گا ۔ فی الحال چار سے دس ملی میٹر بارش ہونے کی پیشین گوئی کی ہے ، پورے میچ کے دوران آسمان میں بادل چھائے رہنے کا امکان ہے ۔ دوپہر اور شام میں بارش کا بہت زیادہ (95 فیصد) امکان ہے ۔ میچ مقامی وقت کے مطابق شام سات بجے سے شروع ہونے والا ہے ۔

      محکمہ موسمیات کے مطابق رات کے دوران بارش کا امکان 100 فیصد تک ہے۔ جنوب مشرقی ہوائیں 15 سے 25 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے آرہی ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: