اپنا ضلع منتخب کریں۔

    2 میچ میں ہی ٹیم انڈیا کی بڑی کمزوری سامنے آئی، ونڈے ورلڈ کپ کیلئے خطرے کی گھنٹی بجائی

    ون ڈے ورلڈ کپ 2023 میں ہندوستان میں ہونا ہے اور اس میں ایک سال سے بھی کم وقت باقی ہے۔ یہ سچ ہے کہ ہندوستانی ٹیم اب بھی تجربہ کر رہی ہے اور ہر سیریز میں بینچ کی طاقت کو جانچنے کی کوشش کر رہی ہے۔

    ون ڈے ورلڈ کپ 2023 میں ہندوستان میں ہونا ہے اور اس میں ایک سال سے بھی کم وقت باقی ہے۔ یہ سچ ہے کہ ہندوستانی ٹیم اب بھی تجربہ کر رہی ہے اور ہر سیریز میں بینچ کی طاقت کو جانچنے کی کوشش کر رہی ہے۔

    ون ڈے ورلڈ کپ 2023 میں ہندوستان میں ہونا ہے اور اس میں ایک سال سے بھی کم وقت باقی ہے۔ یہ سچ ہے کہ ہندوستانی ٹیم اب بھی تجربہ کر رہی ہے اور ہر سیریز میں بینچ کی طاقت کو جانچنے کی کوشش کر رہی ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Mumbai
    • Share this:
      نئی دہلی. ٹیم انڈیا کے لیے سال کا اختتام زیادہ اچھا ہوتا نہیں نظر آرہا رہا ہے۔ ٹی 20 ورلڈ کپ کے سیمی فائنل میں انگلینڈ کے ہاتھوں شکست کے بعد ہندوستانی ٹیم کو نیوزی لینڈ میں ون ڈے سیریز ہارنا پڑی۔ اس کے بعد بنگلہ دیش میں بھی یہی صورت حال ہوئی۔ ون ڈے ورلڈ کپ 2023 میں ہندوستان میں ہونا ہے اور اس میں ایک سال سے بھی کم وقت باقی ہے۔ یہ سچ ہے کہ ہندوستانی ٹیم اب بھی تجربہ کر رہی ہے اور ہر سیریز میں بینچ کی طاقت کو آزمانے کی کوشش کر رہی ہے۔ لیکن، ایسا کرنے کے دوران جس طرح سے ہندوستانی ٹیم بنگلہ دیش کے خلاف دونوں ون ڈے ہاری، اسے دیکھ کر کسی کو غصہ آئے گا۔ کیونکہ دونوں میچوں میں ٹاس ہارنے کے باوجود ناتجربہ کار باؤلنگ اٹیک نے ہندوستان کو جیت کے دہانے پر کھڑا کر دیا تھا۔

      بنگلہ دیش کے خلاف پہلے ون ڈے میں 186 رنز کا بچاؤ کرتے ہوئے ٹیم انڈیا نے بنگلہ دیش کے 9 وکٹ 136 رنز پر گرا دیے تھے۔ لیکن اس کے بعد مہدی حسن معراج نے مستفیض الرحمان کے ساتھ 10ویں وکٹ کے لیے ناٹ آؤٹ 51 رنز کی شراکت داری کرکے میزبان ملک کو 1 وکٹ سے جیت دلادی تھی۔ دوسرے ون ڈے میں بھی ہندوستانی گیند بازوں نے بنگلہ دیش کی اننگز کو پہلے 19 اوورز میں ہی سستے میں سمیٹنے کی بنیاد طے کردی تھی۔ میزبان ملک کی 69 رنز کے اسکور پر 6 وکٹیں گر گئیں۔ لیکن ایک بار پھر مہدی حسن نمبر 8 پر آئے اور 83 گیندوں میں سنچری بنا کر بنگلہ دیش کو 271 رنز تک لے گئے۔

       

      گجرات کی 15ویں اسمبلی میں 105 نئے چہرے، 14 خواتین اور 1 مسلم MLA۔ 77 موجودہ ایم ایل اے

      غلطی سے سرحد پار کر گیا BSF جوان، پاکستانی رینجرس نے پکڑا: رپورٹ


      بنگلہ دیش سے ملی دو ہار کھولی نے ٹیم انڈیا کی پول
      ان دونوں میچوں میں ناکامی نے ٹیم انڈیا کے لیے خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے۔ یہ الگ بات ہے کہ ہندوستان اس سیریز میں اپنے دو اہم گیند بازوں جسپریت بمراہ اور رویندر جڈیجہ کے بغیر میدان میں اترا ہے۔ لیکن یہ شکست اس بات کی طرف اشارہ کر رہی ہے کہ اب بیدار ہونے کا وقت آ گیا ہے۔ کیونکہ اگلے سال ون ڈے ورلڈ کپ ہونا ہے۔ ان دونوں میچوں میں ہندوستان کی شکست کی سب سے بڑی وجہ درمیانی اوورز میں بولنگ تھی۔ ٹیم انڈیا نے دوسرے ون ڈے میں بنگلہ دیش کی 6 وکٹیں 19 اوور میں 69 رنز کے اسکور پر گرا دئے تھے۔ لیکن اگلے 31 اوورز میں ہندوستانی گیند باز بنگلہ دیش کی صرف ایک وکٹ حاصل کرنے میں کامیاب رہے اور 186 رنز لٹا دئے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: