ہوم » نیوز » اسپورٹس

IND vs NZ : پہلے دن ہندوستانی بلے باز رہے فلاپ ، آدھی ٹیم پویلین لوٹی ، اجنکیا رہانے نے سنبھالا مورچہ

کائل جیمیسن کی خطرناک گیندبازی کی بدولت ہندستان پہلے ٹیسٹ میچ کے پہلے دن کا کھیل ختم ہونے تک پانچ وکٹ کے نقصان پر 122 رن ہی بنا سکا ۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 21, 2020 08:30 PM IST
  • Share this:
IND vs NZ  : پہلے دن ہندوستانی بلے باز رہے فلاپ ، آدھی ٹیم پویلین لوٹی ، اجنکیا رہانے نے سنبھالا مورچہ
ریشبھ پنت (37 گیندوں میں 110 رن) اور اجنکیا رہانے (122 گیندوں پر 38 رن ) کریز پر موجود ہیں ۔

نیوزی لینڈ کے تیز گیند باز کائل جیمیسن (تین وکٹ پر 38 رن) کی خطرناک گیندبازی کی بدولت ہندستان پہلے ٹیسٹ میچ کے پہلے دن کا کھیل ختم ہونے تک پانچ وکٹ کے نقصان پر 122 رن ہی بنا سکا ۔ بارش کی وجہ سے پہلے دن صرف 55 اووروں کا ہی کھیل ہوسکا ۔ ٹاس ہارنے کے بعد بلے بازی کے لئے میدان میں اتری ٹیم انڈیا کی شروعات ناقص رہی اور سلامی بلے باز پرتھوی شا (16) ٹم ساوتھی کا شکار بن گئے ۔ اس کے بعد مینک اگروال (34) بھی خراب شاٹ کھیلتے ہوئے ٹرینٹ بولٹ کی گیند پر جیمیسن کو کیچ دے بیٹھے اور اس طرح ٹیم انڈیا کی افتتاحی جوڑی محض 35 رن کے اسکور پر ہی پویلین واپس لوٹ گئی۔


اس کے بعد چتیشور پجارا نے ہندوستانی کپتان وراٹ کوہلی کے ساتھ اننگز کو سنبھالنے کی کوشش کی ، لیکن وراٹ کوہلی کو جیمیسن نے راس ٹیلر کے ہاتھوں کیچ آؤٹ کرا کر ٹیم انڈیا کو جھنجھوڑ دیا ۔ وراٹ محض دو رن ہی بنا پائے۔ نیل ویگنر کی جگہ ٹیم میں شامل کئے گئے جیمیسن نے تین وکٹ لئے اور ہندستانی بلے بازی کو کمزور کردیا ۔ انہوں نے وراٹ کے بیش قیمتی وکٹ سمیت پجارا اور ہنوما وہاری کا بھی وکٹ لے لیا۔


پجارا نے 42 گیندوں میں ایک چوکے کی مدد سے 11 رن بنائے جبکہ ہنوما وہاری صرف سات رن بناکر آؤٹ ہوگئے۔ ٹیم میں وکٹ کیپر کے طور پر اور نیوزی لینڈ کے دورے پر اپنا پہلا میچ کھیلتے ہوئے ریشبھ پنت (37 گیندوں میں 110 رن) اور اجنکیا رہانے (122 گیندوں پر 38 رن ) کریز پر موجود ہیں ۔


نیوزی لینڈ کی جانب سے جیمیسن نے 14 اووروں میں 38 رن دے کر تین وکٹ لئے جبکہ ساؤتھی نے 14 اووروں میں 27 رن دے کر ایک وکٹ حاصل کیا ہے ۔ چوٹ کے بعد واپسی کر رہے بولٹ نے 14 اووروں میں 44 دے کر ایک وکٹ لیا ہے۔
First published: Feb 21, 2020 08:30 PM IST