உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    IND vs WI: ہندوستان نے ویسٹ انڈیز سے 14ویں بار جیتی ونڈے سیریز، یہ رہے جیت کے 5 ہیرو

    ہندوستان نے ویسٹ انڈیز سے 14ویں بار جیتی ونڈے سیریز، یہ رہے جیت کے 5 ہیرو

    ہندوستان نے ویسٹ انڈیز سے 14ویں بار جیتی ونڈے سیریز، یہ رہے جیت کے 5 ہیرو

    India vs West Indies: روہت شرما کی قیادت والی ٹیم انڈیا نے احمد آباد میں کھیلا گیا تیسرا میچ جیت کر پہلی بار ویسٹ انڈیز کو ونڈے سیریز میں کلین سوئپ کیا ہے۔ ہندوستان کی جیت میں شرے یس ایئر کا اہم کردار رہا۔ انہوں نے 80 رنوں کی اننگ کھیلی۔ یہ ان کی 9ویں نصف سنچری ہے۔ ان کے علاوہ بھی جیت میں 4 کھلاڑیوں کا خاص تعاون رہا۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ہندوستان نے ویسٹ انڈیز کو احمد آباد میں کھیلے گئے تیسرے اور آخری ونڈے میں بھی شکست دے کر 0-3 سے جیت حاصل کی۔ یہ پہلا موقع ہے، جب ہندوستان نے ویسٹ انڈیز کو ونڈے سیریز میں کلین سوئپ کیا۔ دونوں ممالک کے درمیان 1983 میں پہلی ونڈے سیریز کھیلی گئی تھی۔ ہندوستان کی جیت میں پانچ کھلاڑیوں کا اہم کردار رہا۔ اس میں شرے یس ایئر (Shreyas Iyer) کا نام سب سے آگے ہیں۔ انہوں نے مشکل وقت پر ٹیم کے لئے 80 رنوں کی اہم اننگ کھیلی۔ ان کی بدولت ہی ہندوستان ویسٹ انڈیز کو 266 رنوں کا ہدف دے پایا۔ اس کے بعد کلدیپ یادو، دیپک چاہر اور پرسدھ کرشنا کی جوڑی نے بہترین گیند بازی سے ٹیم انڈیا کے کلین سوئپ کا راستہ صاف کیا۔ ہندوستان نے ویسٹ انڈیز سے 14ویں بار ونڈے سیریز جیتی ہے۔

      شرے یس ایئر نے ویسٹ انڈیز کے خلاف تیسرے ونڈے میں شاندار 80 رن بنائے۔ وہ اس میچ میں اس وقت بلے بازی کے لئے اترے تھے، جب ہندوستان کے 50 رنوں کے اندر تین وکٹ گر چکے تھے۔ روہت شرما اور وراٹ کوہلی ایک ہی اوور میں پویلین لوٹ گئے تھے۔ ٹیم پر راستے میں آل آوٹ ہونے کا خطرہ منڈرا رہا تھا، لیکن شرے یس ایئر سے سمجھداری سے بلے بازی کی۔ انہیں رشبھ پنت کا بھی اچھا ساتھ ملا۔

      دونوں نے چوتھے وکٹ کے لئے 124 گیندوں میں 110 رن جوڑے اور ٹیم کو 150 رن کے پار پہنچایا۔ اس دوران دونوں بلے بازوں نے اپنی نصف سنچری مکمل کی۔ گزشتہ 8 ونڈے اننگوں میں رشبھ پنت کی یہ چوتھی نصف سنچری اسکور رہی۔ حالانکہ دونوں سنچری سے محروم رہ گئے۔ شرے یس ایئر نے 111 گیندوں میں 80 رن اور رشبھ پنت نے 54 گیندوں میں 56 رن بنائے۔ یہ دونوں کھلاڑی بھلے ہی سنچری سے محروم رہ گئے ہوں، لیکن سنچری شراکت کرکے ٹیم کی جیت کے دو اہم کردار بنے۔

      دیپک چاہر کی آل راونڈر کارکردگی

      ٹیم کی جیت میں دیپک چاہر (Deepak Chahar) کا بھی اہم تعاون رہا۔ انہوں نے نہ صرف گیند سے بلکہ بلے سے بھی اہم رن جوڑے۔ شرے یس ایئر اور رشبھ پنت کے آوٹ ہونے کے بعد دیپک چاہر نے 8ویں نمبر پر آکر 38 گیندوں میں 38 رن بنا ڈالے۔ دیپک چاہر نے ہیڈن والش کے 44 ویں اوور میں مسلسل تین گیندوں میں دو چوکے اور ایک چھکا لگایا۔ آخری کے اوور میں ان کی جارحانہ بلے بازی کی بدولت ہندوستان 265 رنوں کے اسکور تک پہنچا۔ دیپک چاہر نے اپنے گزشتہ دو ونڈے میں بھی نصف سنچری لگائی تھی۔ بعد میں انہوں نے گیندوں سے بھی کمال دکھایا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: