ہوم » نیوز » اسپورٹس

IPL 2020 : جیت کی پٹری پر لوٹی ایم ایس دھونی کی "چنئی ایکسپریس" ، حیدرآباد کو دی مات

سی ایس کے نے شین واٹسن اور امباتی رائیڈو کی بہترین بلے بازی کے دم پر 167 رن بناکر حیدر آباد کو 168 رنوں کو ہدف دیا ۔ اس کے بعد گیند بازوں نے بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور حیدرآباد کو 147 رنوں پر ہی روک دیا ۔

  • Share this:
IPL 2020 : جیت کی پٹری پر لوٹی ایم ایس دھونی کی
جیت کی پٹری پر لوٹی ایم ایس دھونی کی "چنئی ایکسپریس" ، حیدرآباد کو دی مات

اپنی غلطیوں سے سبق لیتے ہوئے چنئی سپرکنگس نے آئی پی ایل کے 29 ویں میچ میں سن رائزرس حیدرآباد کو 20 رنوں سے مات دیدی ۔ لیگ کے اس سیزن میں چنئی کی یہ تیسری جیت ہے ۔ چنئی سپرکنگس نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا ۔ پہلی مرتبہ اس سیزن میں سی ایس کے نے پہلے بلے بازی کی اور شین واٹسن اور امباتی رائیڈو کی بہترین بلے بازی کے دم پر 167 رن بناکر حیدر آباد کو 168 رنوں کو ہدف دیا ۔ اس کے بعد گیند بازوں نے بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور حیدرآباد کو 147 رنوں پر ہی روک دیا ۔ کرن شرما اور ڈریون براوو نے دو دو وکٹ لئے جبکہ سیم کرن ، رویندر جڈیجہ اور شاردل ٹھاکر کو ایک ویک کامیابی ملی ۔ حیدرآباد کی طرف سے کین ولیمسن نے سب سے زیادہ 57 رن بنائے ۔


ہدف کے تعاقب میں اتری حیدرآباد کی شروعات کچھ اچھی نہیں رہی اور چوتھے اوورس میں ہی دو جھٹکے لگ گئے ۔ اوور کی تیسری گیند پر سیم کرن نے اپنی ہی گیند پر حیدرآباد کے کپتان ڈیوڈ وارنر کا کیچ پکڑ لیا ۔ وارنر نے نو رن بنائے ۔ اس کے دو گیندوں کے بعد ہی منیش پانڈے بھی رن آوٹ ہوگئے ۔ 27 رن پر ہی حیدرآباد کے دو وکٹ گر گئے تھے ۔ اس کے بعد جانی بیرسٹو ، پریم گرگ اور وجے شنکر بھی جلد ہی پویلین لوٹ گئے ۔ 117 رن پر وجے شنکر کی شکل میں حیدرآباد کو پانچواں جھٹکا لگ گیا ۔ تاہم ایک طرف سے ولیمسن نے ٹیم کی امید زندہ رکھی ۔ تاہم نصف سنچری بنانے کے بعد ولیمسن کرن شرما کو کیچ تھما بیٹھے ۔ ولیمسن نے 57 رنوں کی اننگز کھیلی ۔


 لیگ کے اس سیزن میں چنئی کی یہ تیسری جیت ہے ۔
لیگ کے اس سیزن میں چنئی کی یہ تیسری جیت ہے ۔


اس سے قبل پہلے بلے بازی کرنے کیلئے اتری چنئی سپرکنگس نے شین واٹسن کی جگہ سیم کرن سے اننگز کا آغاز کروایا ، مگر ٹیم کی شروعات بہتر نہیں رہی ۔ تیسرے اوور میں سندیپ شرما نے پہلی ہی گیند پر فاف ڈوپلیسس کو آوٹ کردیا ۔ اس وقت چنئی کا اسکور 10 رن ہی تھا ۔ حالانکہ اس کے بعد سیم کرن نے خلیل احمد کی گیندوں پر کچھ اچھے شاٹس لگائے ، مگر پانچویں اوورس کی چوتھی گیند پر سندیپ شرما نے انہیں بھی بولڈ کردیا ۔ 35 رن پر دو جھٹکے لگنے کے بعد شین واٹنس اور امباتی رائیڈو نے اننگز کو سنبھالنے کی کوشش کی اور ٹیم کے اسکور کو 100 کے پار پہنچایا ۔ رائیڈو 41 رن بناکر جبکہ واٹسن 42 رن بناکر پویلین لوٹے۔

120 پر چار وکٹ گرنے کے بعد ایم ایس دھونی اور رویندر جڈیجہ نے شراکت داری کی ۔ دونوں نے مل کر کچھ اچھے شاٹس لگائے اور اسکور کو 150 کے پار پہنچادیا ۔ 152 کے مجموعی اسکور پر دھونی بھی پویلین لوٹ گئے ۔ دھونی نے 21 رن بنائے ۔ تاہم ایک جانب جڈیجہ کریز پر ٹکے رہے اور انہوں نے 10 گیندوں میں 25 رن بناکر ٹیم کے اسکور کو 167 رن تک پہنچایا ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Oct 13, 2020 11:59 PM IST