ہوم » نیوز » اسپورٹس

IPL 2020 : کنگس الیون پنجاب نے بنگلورو کو ہرایا ، 8 وکٹوں سے درج کی جیت

پنجاب کی آٹھ میچوں ممیں یہ دوسری فتح ہے اور اس کے چارپوائنٹ ہوگئے ہیں۔ بنگلورو کو آٹھ میچوں میں تیسری شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے لیکن اس کے کھاتے میں دس پوائنٹ ہیں۔

  • UNI
  • Last Updated: Oct 16, 2020 12:21 AM IST
  • Share this:
IPL 2020 : کنگس الیون پنجاب نے بنگلورو کو ہرایا ، 8 وکٹوں سے درج کی جیت
IPL 2020 : کنگس الیون پنجاب نے بنگلورو کو ہرایا ، 8 وکٹوں سے درج کی جیت

کپتان لوکیش راہل (ناٹ آؤٹ 61) اور کرسل گیل رائل (53) کی شاندار نصف سنچری سے آسان جیت کی طرف بڑھ رہی کنگس الیون پنجاب نے آخری اووروں میں لڑکھڑاہٹ دکھائی لیکن آخری گیند پر نکولس پورن کے چھکے سے رائل چیلنجرز بنگلورو کو آٹھ وکٹ سے ہراکر آئی پی ایل ۔ 13 میں جمعرات کو دوسری جیت حاصل کرکے اپنی امیدوں کو برقرار رکھا ۔ پنجاب کی آٹھ میچوں ممیں یہ دوسری فتح ہے اور اس کے چارپوائنٹ ہوگئے ہیں۔ بنگلورو کو آٹھ میچوں میں تیسری شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے لیکن اس کے کھاتے میں دس پوائنٹ ہیں۔


پنجاب کے سات میچوں کے بعد گیل کو شارجہ کے چھوٹے میدان میں اترنے کا فیصلہ کام کرگیا ۔ جبکہ وراٹ کو اپنے زبردست بلے باز اے بی ڈیویلیرس کو دیر سے اتارنا بھاری پڑگیا ۔ میچ میں یہی سب سے بڑا فرق رہا ۔ بنگلورو نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرتے ہوئے بیس اوور میں چھ وکٹ پر 171 رن بنائے ۔ پنجاب نے راہل اور گیل کے نصف سنچری سے بیس اووروں میں دو وکٹ پر 177 رن بنا کر جیت حاصل کرلی ۔


گیل اس آئی پی ایل میں پہلی مرتبہ کھیلنے اترے اور انہوں نے اپنے پہلے ہی میچ میں زبردست نصف سنچری بناڈالا۔ گیل نے پینتالیس گیندوں پر ترپن رن میں ایک چوکا اورپانچ چھکے لگائے۔ کپتان راہل نے کپتانی کی پوری ذمہ داری کے ساتھ کھیلتے ہوئے انچاس گیندوں پر ناٹ آؤٹ اکسٹھ رن میں ایک چوکا اور پانچ چھکے لگائے۔ اوپنر مینک اگروال پچیس گیندوں پر پینتالیس رن میں چارچوکے اورتین چھکے لگائے۔


راہل اور مینک نے پہلے وکٹ کے لئے آٹھ اوور میں اٹھہتر رن بناکر ٹیم کو ٹھوس ابتدا دی جبکہ راہل نے گیل کے ساتھ دوسرے وکٹ کے لئے ترانوے رن کی شراکت داری کی۔ پنجاب سترہ اوور کے اختتام تک آسان جیت کی دہلیز پر پہنچ گیا تھا۔ گیل نے سترہویں اوور میں واشنگٹن سندر پر دو چھکے مارے۔ اس اوور کے اختتام پر پنجاب کا اسکور 161 پر پہنچ گیا تھا اور اسے18 گیندوں پر جیت کے لئے محض گیارہ رنوں کی ضرورت تھی لیکن دونوں بلے بازوں نے حیرت انگیز طور سے اگلے تین اووروں میں کوئی بڑا شاٹ نہیں کھیلا۔

کرس مورس کے اننگ کے اٹھارہویں اوور میں چار رن بنے جبکہ اسرو اودانا کے اننگ کے انیسویں اوور میں پانچ رن بنے۔ پنجاب کو آخری اوور میں جیت کے لئے محض دو رن چاہئے تھے لیکن راہل اور گیل نے میچ کو آخری گیند تک پھنسا دیا۔ یوجندر چہل کی پہلی دو گیندوں پر کوئی رن نہیں بنا جبکہ گیل نے تیسری گیند پر سنگل لے کر اسکور برابر کردیا۔ چوتھی گیند پر راہل کوئی رن نہیں لے پائے جبکہ پانچویں گیند پر گیل رن آؤٹ ہوگئے۔ میچ اب پنجاب کے لئے پھنس چکا تھا لیکن پورن نے چہل کی آخری فول ٹاس گیند کو چھکے کے لئے اٹھاکر پنجاب کو راحت اور جیت دلائی۔

بنگلورو کو ڈیویلیرس کو دیر سے اتارنا آخری میں بھاری پڑ گیا اور ٹیم شارجہ کے چھوٹے میدان میں کم سے کم بیس رن پیچھے رہ گئی۔ بنگلورو کا 171 رن کا اسکور بھی کرس مورس کی وجہ سے ممکن ہوسکا جنہوں نے آخری اوور میں تین چھکے اور ایک چوکا مارا۔ پنجاب کے تیز گیند باز محد شمی نے اٹھارہویں اوورمیں ڈی ویلیئرس اور وراٹ کے وکٹ نکالے لیکن پھر اننگ کے آخر اوور میں چوبیس رن بھی دے ڈالے۔ مورس نے اننگ کے آخری اووور میں شمی کی گیندوں پر ایک چوکا اور تین چھکے لگائے۔ اس اوور میں چوبیس رن پڑے اور بنگلور کا اسکور قابل عزت ہوگیا۔

وراٹ کریز پر کافی دیر تک رہے اور انتالیس گیندوں پرمحض تین چوکوں کی مدد سے اڑتالیس رن ہی بناسکے۔ ڈی ویلیرس ساتویں اوور میں آرون فنچ کے آؤٹ ہونے کے بعد میدان پر اترسکے تھے لیکن انہیں روک کر پہلے واشنگٹن سندر کو اوراس کے بعد شوم دوبے کو اتارا گیا۔ ڈی ویلیئرس سترہویں اوور میں میدان میں اترے لیکن تب تک کافی وقت گذرچکاتھا۔ شمی نے اٹھارہویں اوور میں ڈی ویلئرس کو دیپک ہڈا کے ہاتھوں کیچ کرادیا۔ ڈی ویلئرس پانچ گیندوں میں دو رن ہی بناسکے۔ ڈی ویلئرس کے آؤٹ ہونے کے دو گیند بعد شمی نے وراٹ کو وکٹ کیپر لوکیش راہل کےہاتھوں کیچ کرادیا۔

مورس نے آٹھ گیندوں پر ایک چوکا اور ایک تین چھکے لگاتے ہوئے ناٹ آؤٹ پچیس رن بنائے جس کی بدولت بنگلورو کی ٹیم 171 کے چیلنج سے بھرے اسکور تک پہنچ سکی۔ مورس نے اننگ اوور میں شمی کی گیندوں پر ایک چوکا اور تین چھکے لگائے۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Oct 15, 2020 11:37 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading