உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بڑی خبر : آئی پی ایل 2022 سے پہلے پنجاب کنگس سے الگ ہو سکتے ہیں کے ایل راہل

    بڑی خبر : آئی پی ایل 2022 سے پہلے پنجاب کنگس سے الگ ہو سکتے ہیں کے ایل راہل (AFP)

    بڑی خبر : آئی پی ایل 2022 سے پہلے پنجاب کنگس سے الگ ہو سکتے ہیں کے ایل راہل (AFP)

    آئی پی ایل 2021 سیزن میں اب تک سب سے زیادہ رن بنانے والے لوکیش راہل اگلے سال پنجاب کنگز سے الگ ہو سکتے ہیں۔ ان کی نیلامی میں شامل ہونے کا امکان ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      دبئی : آئی پی ایل 2021 سیزن میں اب تک سب سے زیادہ رن بنانے والے لوکیش راہل اگلے سال پنجاب کنگز سے الگ ہو سکتے ہیں۔ ان کی نیلامی میں شامل ہونے کا امکان ہے۔ خیال کیا جاتا ہے کہ کچھ فرنچائزیز نے رابطہ کیا ہے ، جنہوں نے انہیں اپنے ساتھ جڑنے میں دلچسپی ظاہر کی ہے ۔ ہندوستان کرکٹ کنٹرول بورڈ (بی سی سی آئی) نے اب تک اگلے سیزن کے لیے ریٹینشن پالیسی کا اعلان نہیں کیا ہے ۔ یہ تب ہے جب اگلے سیزن میں ایک میگا نیلامی ہونی ہے ۔ ابھی تک ریٹینشن پالیسی اور فرنچائز کے لیے دستیاب رائٹ ٹو میچ ( آر ٹی ایم) کارڈوں کی تعداد کے بارے میں کچھ واضح نہیں ہے ۔

      واضح رہے کہ ایک فرنچائزی کو اپنے موجودہ کھلاڑیوں کو نیلامی کے لئے دستیاب کرائے جانے پر رائٹ ٹو میچ کارڈ استعمال کرنے کا حق ہے۔ یہ خیال کیا جاتا ہے کہ پردے کے پیچھے بات چیت ہو رہی ہے تاکہ پنجاب کنگز راہل کی رخصتی آسانی سے ہو۔ کے ایل راہل ،جو اس وقت آئی سی سی ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ کے لیے ہندوستانی ٹیم کے بائیو ببل میں ہیں ، جبکہ پنجاب کنگز کے ایک عہدیدار نے اس معاملے پر بات کرنے سے صاف انکار کیا ہے ۔

      نیا نام بھی پنجاب کی قسمت نہیں بدل سکا

      ادھر کنگز الیون پنجاب نے اپنا نام تبدیل کرکے پنجاب کنگز رکھا لیکن اس نئے نام نے بھی پنجاب کی قسمت نہیں بدلی اور پنجاب مسلسل دوسرے سال 12 پوائنٹس کے ساتھ ٹیبل میں چھٹے نمبر پر رہا۔ ایک نئے نام سے سیزن کا آغاز کرتے ہوئے پنجاب کنگز نے اپنی مہم کا آغاز جیت کے ساتھ کیا تھا ، لیکن اپنے اگلے سات میچوں میں سے پانچ میں اسے شکست ہوئی۔ متحدہ عرب امارات میں ایک جیت حاصل کرنے کے لیے ان کی جدوجہد جاری رہی اور وہ پوائنٹس ٹیبل کے درمیان میں ایک پیچیدہ صورتحال میں پھنس گئے۔ انہوں نے اپنے آخری تین میچ جیتے لیکن خراب رن ریٹ کی وجہ سے پلے آف کی ریس سے باہر ہو گئے۔

      ان کی بلے بازی میں مسائل برقرار رہے، جو کہ لوکیش راہل اور مینک اگروال کی سلامی جوڑی کے آؤٹ ہونے کے بعد ناکام دکھائی دے رہے تھی۔ لیکن مثبت پہلو پربات کریں توان کے انکیپڈ ہندوستانی گیندباز ارشدیپ سنگھ، روی بشنوئی اور ہرپریت براڑ ہر موقع پر کھرے اترے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: