உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Ranji Trophy: کون ہیں کمار کشاگرا؟ تیسرے میچ میں بنائی ڈبل سنچری...میانداد کا ٹوٹا ریکارڈ

    Ranji Trophy: کون ہیں کمار کشاگرا؟ تیسرے میچ میں بنائی ڈبل سنچری...میانداد کا ٹوٹا ریکارڈ  (Photo-bcci/twitter)

    Ranji Trophy: کون ہیں کمار کشاگرا؟ تیسرے میچ میں بنائی ڈبل سنچری...میانداد کا ٹوٹا ریکارڈ (Photo-bcci/twitter)

    Kumar Kushagra Scores 266 runs in Ranji Trophy Preliminary quarter final: جھارکھنڈ کے 17 سالہ نوجوان بلے باز کمار کشاگرا (Kumar Kushagra) نے رنجی ٹرافی کے پری کوارٹر فائنل میں ناگالینڈ (Jharkhand vs Nagaland) کے خلاف شاندار ڈبل سنچری بنا کر ایک بڑی کامیابی درج کی۔

    • Share this:
      نئی دہلی : جھارکھنڈ کے 17 سالہ نوجوان بلے باز کمار کشاگرا  (Kumar Kushagra)  نے رنجی ٹرافی کے پری کوارٹر فائنل میں ناگالینڈ  (Jharkhand vs Nagaland)  کے خلاف شاندار ڈبل سنچری بنا کر ایک بڑی کامیابی درج کی۔ اپنا تیسرا فرسٹ کلاس میچ کھیلتے ہوئے اس ہونہار بلے باز نے 269 گیندوں پر 266 رنز بنائے ، جس میں 37 چوکے اور 2 چھکے شامل تھے۔ کشاگرا فرسٹ کلاس کرکٹ میں 250 یا اس سے زیادہ رنز بنانے والے سب سے کم عمر بلے باز بن گئے ہیں ۔ دائیں ہاتھ کے وکٹ کیپر بلے باز نے پاکستان کے سابق کپتان جاوید میانداد اور ہم وطن ایشان کشن کے ریکارڈ کو بھی پیچھے چھوڑ دیا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : نوبال پر آوٹ ہوگیا ٹیم انڈیا کا یہ بلے باز، کپتان روہت شرما کے دھوکہ کا ہوا شکار!


      کشاگرا نے یہ کارنامہ 17 سال 141 دن کی عمر میں انجام دیا جب کہ پاکستانی لیجنڈ میانداد نے 1975 میں 17 سال 311 دن کی عمر میں یہ کارنامہ انجام دیا تھا ۔ وہیں وکٹ کیپر بلے باز ایشان کشن نے یہ کارنامہ 18 سال 111 دن کی عمر میں انجام دیا تھا ۔ ایشان کشن کے پاس فرسٹ کلاس کرکٹ میں جھارکھنڈ کیلئے سب سے بڑی اننگز کھیلنے کا ریکارڈ ہے۔ ایشان نے 2016 میں دہلی کے خلاف 273 رنز کی اننگز کھیلی تھی ۔ اس کے بعد کشاگرا کا نمبر آتا ہے۔ کشاگرا کے فرسٹ کلاس کرکٹ کیرئیر کی یہ پہلی ڈبل سنچری ہے۔ کشاگرا پہلی مرتبہ سال 2019 میں وینو مانکڑ ٹرافی سے سرخیوں میں آئے تھے۔ انہوں نے اس دوران 7 میچوں میں سب سے زیادہ 535 رنز بنائے تھے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : ہندوستان اور پاکستان کے درمیان ہوسکتی ہے سہ فریقی سیریز، آسٹریلیا نے بنایا یہ بڑا پلان


      ٹائمز آف انڈیا سے بات چیت میں کشاگرا کے والد ششی کانت نے بتایا کہ انہوں نے اپنے بیٹے کو کرکٹر بنانے کیلئے اپنے گھر میں کرکٹ کی کتابوں کی لائبریری بنائی تھی۔ ششی کانت کے مطابق 'میں نے اپنے گھر پر کرکٹ کی کتابوں کی ایک لائبریری بنائی تھی، جس میں بریڈمین سے لے کر اسٹیو وا تک کی کتابیں شامل تھیں۔ میں نیٹ پر جا کر کھلاڑیوں کی تکنیک دیکھتا تھا کہ وہ کیسے کھیلتے ہیں۔ اس کے بعد میں کتاب میں یہی پڑھا کرتا تھا۔ میں اسی تکنیک کے ذریعہ کمار کو پریکٹس کرایا کرتا تھا۔‘‘ کشاگرا کے والد جی ایس ٹی محکمہ میں ضلع کمشنر ہیں۔

       

      وراٹ اور شہباز نے بنائی سنچریاں

      وہیں وراٹ سنگھ اور شہباز ندیم نے منی پور کے خلاف جاری میچ میں بھی سنچریاں بنائیں ۔ جھارکھنڈ کی ٹیم اس وقت کافی مضبوط پوزیشن میں ہے۔ انہوں نے پہلی اننگز میں 800 سے زیادہ رنز بنائے ہیں۔ وراٹ نے 155 گیندوں میں 107 رنز کی اننگز کھیلی جبکہ ندیم 129 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔ سلامی بلے باز کمار سورج 66 رنز بناکر آؤٹ ہوئے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: