உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان کو ملا نیا اسٹار، 22 سال کی عمر میں کیا وہ کارنامہ، جو سچن-کوہلی کبھی نہیں کرسکے

    Pakistan vs Sri Lanka: پاکستان نے میزبان سری لنکا کو پہلے ٹسٹ میچ میں زبردست شکست دی ہے۔ پاکستان نے میچ کے پانچویں دن 342 رنوں کا ہدف حاصل کرکے جیت درج کی۔ میچ میں ہیرو عبداللہ شفیق (Abdullah Shafique) رہے۔ عبداللہ شفیق نے چوتھی اننگ میں 8 گھنٹے 44 منٹ تک بلے بازی کی اور جیت دلاکر ہی پویلین لوٹے۔

    Pakistan vs Sri Lanka: پاکستان نے میزبان سری لنکا کو پہلے ٹسٹ میچ میں زبردست شکست دی ہے۔ پاکستان نے میچ کے پانچویں دن 342 رنوں کا ہدف حاصل کرکے جیت درج کی۔ میچ میں ہیرو عبداللہ شفیق (Abdullah Shafique) رہے۔ عبداللہ شفیق نے چوتھی اننگ میں 8 گھنٹے 44 منٹ تک بلے بازی کی اور جیت دلاکر ہی پویلین لوٹے۔

    Pakistan vs Sri Lanka: پاکستان نے میزبان سری لنکا کو پہلے ٹسٹ میچ میں زبردست شکست دی ہے۔ پاکستان نے میچ کے پانچویں دن 342 رنوں کا ہدف حاصل کرکے جیت درج کی۔ میچ میں ہیرو عبداللہ شفیق (Abdullah Shafique) رہے۔ عبداللہ شفیق نے چوتھی اننگ میں 8 گھنٹے 44 منٹ تک بلے بازی کی اور جیت دلاکر ہی پویلین لوٹے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: پاکستان کرکٹ کو عبداللہ شفیق کے طور پر نیا اسٹار مل گیا ہے۔ 22 سال کے عبداللہ شفیق نے سری لنکا کے خلاف پاکستان کو تاریخی جیت دلانے میں سب سے اہم کردار نبھایا۔ انہوں نے بدھ کو وہ کارنامہ انجام دیا، جو سچن تندولکر، راہل دراوڑ، وراٹ کوہلی سے لے کر روہت شرما جیسے عظیم کھلاڑی بھی نہیں کرسکے۔

      پاکستانی سلامی بلے باز عبداللہ شفیق نے سری لنکا کے خلاف پہلے ٹسٹ کی چوتھی اننگ میں 160 رنوں کی ناٹ آوٹ اننگ کھیلی۔ اس دوران انہوں نے ریکارڈ 408 گیندوں کا سامنا کیا۔

       عبداللہ شفیق نے 160 رنوں کی اننگ میں 408 گیندوں کا سامنا کیا۔
      عبداللہ شفیق نے 160 رنوں کی اننگ میں 408 گیندوں کا سامنا کیا۔


      میزبان سری لنکا نے گالے میں کھیلے گئے ٹسٹ میچ میں پاکستان کو جیتنے کے لئے 342 رنوں کا ہدف دیا تھا۔ ٹوٹتی پچ پر یہ اسکور بنانا ناممکن کو ممکن کرنے جیسا چیلنج تھا، لیکن پاکستان نے شکست نہیں مانی۔ اس نے 127.2 اوور میں 6 وکٹ گنواکر 344 رن بنالئے۔ اس ناممکن کو ممکن کیا پاکستانی سلامی بلے باز عبداللہ شفیق نےم جو اپنے کیریئر کا صرف چھٹا ٹسٹ میچ ہی کھیل رہے تھے۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      پاکستانی کرکٹ ٹیم کے سامنے تھا ریکارڈ ہدف، عبداللہ شفیق ایسے جمے کی ٹیم کو جیت دلا دی

      22 سال کے عبداللہ شفیق (Abdullah Shafique) نے 160 رنوں کی اننگ میں 408 گیندوں کا سامنا کیا۔ یہ 145 سال کی ٹسٹ تاریخ میں صرف پانچواں موقع ہے، جب کسی بلے باز نے چوتھی اننگ میں 400 سے زیادہ گیندیں کھیلی ہیں۔ ان سے پہلے صرف انگلینڈ کے مائک آتھرٹن اور ہربرٹ سٹولف، ہندوستان کے سنیل گواسکر اور پاکستان کے بابر اعظم نے ہی چوتھی اننگ میں اتنی گیندیں کھیلی تھیں۔

       میزبان سری لنکا نے گالے میں کھیلے گئے ٹسٹ میچ میں پاکستان کو جیتنے کے لئے 342 رنوں کا ہدف دیا تھا۔

      میزبان سری لنکا نے گالے میں کھیلے گئے ٹسٹ میچ میں پاکستان کو جیتنے کے لئے 342 رنوں کا ہدف دیا تھا۔


      ریکارڈ ہدف کا تعاقب کرنے اترے پاکستان کے پاس وقت خوب مناسب تھا، جب ضرورت تھی کہ کوئی بلے باز پورے صبر اورمحتاط طریقے سے کریز پر کھڑا رہے۔ نوجوان بلے باز عبداللہ شفیق نے یہ ذمہ داری اٹھائی۔ عبداللہ شفیق کے صبر کا اندازہ اسی بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ انہوں نے 408 گیندوں کی اپنی اننگ میں صرف 7 چوکے اور ایک چھکا لگایا۔ عبداللہ شفیق اننگ میں 8 گھنٹے 44 منٹ تک کریز پر ڈٹے رہے۔ انہوں نے پاکستان کی پہلی اننگ میں 47 گیندوں پر 13 رن بنائے تھے۔ عبداللہ شفیق نے 6 ٹسٹ میچوں میں 80.00 کی اوسط اور 2 سنچری کی مدد سے 720 رن بنائے ہیں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: