உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    IND vs SA: روسو۔ ڈی کاک نے ہندوستانی گیند بازوں کو دھویا، ساوتھ افریقہ نے جیتا آخری ٹی 20 میچ

    IND vs SA: روسو۔ ڈی کاک نے ہندوستانی گیند بازوں کو دھویا، ساوتھ افریقہ نے جیتا آخری ٹی 20 میچ (AP)

    IND vs SA: روسو۔ ڈی کاک نے ہندوستانی گیند بازوں کو دھویا، ساوتھ افریقہ نے جیتا آخری ٹی 20 میچ (AP)

    IND vs SA T20I: طوفانی بلے باز ریلے روسو کی دھماکہ خیز سنچری کی بدولت جنوبی افریقہ نے تیسرے ٹی ٹوینٹی میچ میں ہندوستان کو آسانی سے شکست دے دی۔ یہ روسو کے کیریئر کی پہلی سنچری تھی ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Kolkata | Mumbai | Chennai
    • Share this:
      اندور : طوفانی بلے باز ریلے روسو کی دھماکہ خیز سنچری کی بدولت جنوبی افریقہ نے تیسرے ٹی ٹوینٹی میچ میں ہندوستان کو آسانی سے شکست دے دی۔ یہ روسو کے کیریئر کی پہلی سنچری تھی اور وہ بھی اپنے صرف 20ویں میچ میں۔ تاہم پہلے دو میچ جیت کر ہندوستان نے سیریز 2-1 سے جیت لی۔ حالانکہ پہلی مرتبہ ٹیم انڈیا نے کلین سویپ کرنے کا بڑا موقع گنوا دیا۔ منگل کو اندور میں ہندوستان کے خلاف تیسرے اور آخری ٹی ٹوینٹی انٹرنیشنل میچ میں افریقہ نے 3 وکٹوں پر 227 رنز کا بڑا اسکور بنایا۔ اس جیت کے بعد افریقی ٹیم 6 اکتوبر سے ہونے والی ون ڈے سیریز کے لئے یہاں سے ذہنی سبقت لے کر جائے گی ۔

      ریلے نے 48 گیندوں پر 8 چھکوں اور 7 چوکوں کی مدد سے ناٹ آوٹ 100 رنز کی اننگز کھیلی اور کوئنٹن ڈی کاک (68) کے ساتھ دوسری وکٹ کے لئے 90 اور ٹرسٹن اسٹبس (23) کے ساتھ تیسری وکٹ کیلئے 87 رنز کی اہم شراکت داری بھی کی۔ آخر میں ڈیوڈ ملر نے صرف 5 گیندوں پر ناٹ آوٹ 19 رنز بنائے۔ جنوبی افریقہ کے بلے بازوں نے آخری 8 اوورز میں 108 رنز بنائے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: جسپریت بمراہ کے بعد ایک اور گیند باز ہوا زخمی، ٹی 20 ورلڈ کپ سے پہلے بڑھی ٹینشن


      دنیش کارتک (46) کے علاوہ ہندوستان کی طرف سے کوئی بھی بلے باز جم کر نہیں کھیل سکا اور وقفے وقفے سے ایک کے بعد ایک وکٹیں گرتی چلی گئیں ۔ کپتان روہت، سوریہ کمار یادو، شریس ائیر بری طرح ناکام رہے۔ برتھ ڈے بوائے ریشبھ پنت نے بھی کچھ اچھے ہاتھ دکھائے، لیکن ان کی اننگز زیادہ دیر نہیں چل سکی اور وہ 27 کے ذاتی اسکور پر آوٹ ہو گئے۔ ایک موقع پر ایسا لگ رہا تھا کہ ہندوستانی بلے باز پورے 20 اوورز نہیں کھیل پائیں گے، لیکن بعد کے بلے بازوں یا یوں کہیں کہ گیند بازوں ہرشل پٹیل، دیپک چاہر اور امیش یادو نے اچھے ہاتھ دکھا کر میچ کو آخری اوور تک پہنچادیا اور شرمندگی سے بچا لیا۔ دیپک چاہر نے 17 گیندوں پر 31 رنز کی تیز اور اہم اننگز کھیلی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: محمد سمیع کو آسٹریلیا جانے سے پہلے دینا ہوگا ایک اور ٹیسٹ، جانئے کب ٹیم سے جڑپائیں گے؟


      اس سے پہلے ہندوستانی کپتان روہت شرما نے ٹاس جیت کر گیند بازی کا فیصلہ کیا۔ ڈی کاک شروع سے ہی لے میں نظر آئے۔ انہوں نے محمد سراج اور دیپک چاہر پر چھکے لگائے۔ باوما نے سیریز کی تیسری اننگز میں سراج کی گیند پر پہلا رن بنایا۔ تاہم ان کی جدوجہد جاری رہی اور تین رنز بنانے کے بعد وہ امیش یادو کی پہلی ہی گیند پر روہت کو کیچ تھما بیٹھے ۔

      ریلے روسو نے اپنی اننگز کا آغاز امیش یادو پر لگاتار دو چوکوں سے کیا اور پھر اشون اور سراج پر بھی چھکے لگائے۔ پاور پلے میں جنوبی افریقہ نے ایک وکٹ پر 48 رنز بنائے۔ ڈی کاک اور روسو نے نویں اوور میں اشون پر چھ چھکے لگائے۔ ڈی کاک نے اپنی نصف سنچری 33 گیندوں میں امیش یادو کی گیند پر چھکا لگا کر پوری کی۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: