உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ورلڈکپ کا پہلا میچ: Sunil Gavaskar کی وہ بے مثال اننگ، جس کی برابری دنیا کبھی نہیں کرپائی

    1975 میں آج کے ہی دن تاریخی لارڈز گراؤنڈ میں ون ڈے ورلڈ کپ کا پہلا میچ کھیلا گیا تھا۔ ٹورنامنٹ کے پہلے میچ میں بھارت اور انگلینڈ کی ٹیمیں آمنے سامنے تھیں۔ تب ون ڈے فارمیٹ میں 50 کے بجائے 60 اوورز پھینکے جاتے تھے۔

    1975 میں آج کے ہی دن تاریخی لارڈز گراؤنڈ میں ون ڈے ورلڈ کپ کا پہلا میچ کھیلا گیا تھا۔ ٹورنامنٹ کے پہلے میچ میں بھارت اور انگلینڈ کی ٹیمیں آمنے سامنے تھیں۔ تب ون ڈے فارمیٹ میں 50 کے بجائے 60 اوورز پھینکے جاتے تھے۔

    1975 میں آج کے ہی دن تاریخی لارڈز گراؤنڈ میں ون ڈے ورلڈ کپ کا پہلا میچ کھیلا گیا تھا۔ ٹورنامنٹ کے پہلے میچ میں بھارت اور انگلینڈ کی ٹیمیں آمنے سامنے تھیں۔ تب ون ڈے فارمیٹ میں 50 کے بجائے 60 اوورز پھینکے جاتے تھے۔

    • Share this:
      first match of the ODI World Cup: یوں تو 7 جون کی کرکٹ تاریخ (7 June Cricket History) خاص ہے لیکن ہندوستانی ٹیم اور تجربہ کار سنیل گواسکر (Sunil Gavaskar) شاید ہی اسے یاد کرنا چاہیں گے۔ 1975 میں آج کے ہی دن تاریخی لارڈز گراؤنڈ میں ون ڈے ورلڈ کپ کا پہلا میچ کھیلا گیا تھا۔ ٹورنامنٹ کے پہلے میچ میں بھارت اور انگلینڈ کی ٹیمیں آمنے سامنے تھیں۔ تب ون ڈے فارمیٹ میں 50 کے بجائے 60 اوورز پھینکے جاتے تھے۔ انگلینڈ نے 4 وکٹوں پر 334 رنز بنائے۔ بڑے ہدف کا پیچھا کرتے ہوئے میں ٹیم انڈیا 3 وکٹوں پر 132 رنز ہی بنا سکی تھی۔ اوپنر اور تجربہ کار سنیل گواسکر (veteran Sunil Gavaskar) نے 174 گیندوں کا سامنا کیا اور ناٹ آؤت لوٹے لیکن ان کا ذاتی اسکور صرف 36 رنز تھا۔

      ہندوستانی ٹیمteam Indian کے اس وقت کے منیجر جی ایس رام چندرا نے اس پر بڑا بیان بھی دیا تھا۔ انہوں نے کہا تھا، 'میں نے ایسی خود غرض اننگز such a selfish innings شاید ہی کبھی دیکھی ہو۔ سنیل گواسکر نے مجھ سے تب کہا تھا کہ وکٹ شاٹ کھیلنے کے لیے بہت سست تھا لیکن یہ ایک پاگل پن بھری باتتھی۔ انگلینڈ نے اسی پچ پر 334 رنز کا بڑا اسکور بنایا تھا۔

      ون ڈے ورلڈ کپ first match of the ODI World Cup کا پہلا میچ 1975 میں اس دن یعنی 7 جون کو انگلینڈ اور ہندستان کے درمیان کھیلا گیا تھا۔ انگلینڈ کی کپتانی مائیک ڈینس نے سنبھالی تھی جب کہ ہندوستانی ٹیم کی کمان ایس وینکٹاراگھون کے پاس تھی۔ اس میچ میں انگلینڈ نے مقررہ 60 اوورز میں 4 وکٹوں کے نقصان پر 334 رنز بنائے تھے۔ اوپنر ڈینس ایمس نے سنچری اسکور کی اور 137 رنز کی شاندار اننگز کھیلی۔ انہوں نے 147 گیندوں میں 18 چوکے لگائے۔ ان کے علاوہ کیتھ فلیچر نے 68 رنز کی شراکت کی۔

      Umran Malik بولے، بلے بازوں کی آنکھوں میں ڈر دیکھ کر مزہ آتا ہے، جانئے ایسا کیوں کہا؟

      کیتھ نے 107 گیندوں کی اننگز میں 4 چوکے اور 1 چھکا لگایا۔ کرس اولڈ 51 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ لوٹے۔ انہوں نے 30 گیندوں میں 4 چوکے اور 2 چھکے لگائے۔ ٹیم انڈیا کی جانب سے سید عابد علی نے 58 رنز کے عوض 2 وکٹیں حاصل کیں جبکہ مدن لال اور مہندر امرناتھ نے 1-1 وکٹ حاصل کی۔

      IPL کی تاریخ میں 7ویں بار 700 کا اعداد و شمار پار، Jos Buttler بنے سپر مین

      سنیل گواسکر اور ایکناتھ سولکر نے ہندوستانی اننگز کا آغاز کیا۔ ایکناتھ 8 رنز بنا کر جیف آرنلڈ کا شکار ہوگئے۔ اس کے بعد انشومن گائیکواڑ نے 22 رنز کی شراکت کی۔ انہوں نے 46 گیندوں کا سامنا کیا اور 2 چوکے لگائے۔ گنڈپا وشو ناتھ نے 59 گیندوں پر 5 چوکوں کی مدد سے 37 رنز بنائے۔ آئی پی ایل کے موجودہ چیئرمین برجیش پٹیل بھی اس میچ کا حصہ تھے۔ وہ 57 گیندوں پر 16 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ لوٹے۔

      IPL 2022: عمران ملک کی رفتار کا قہر! باؤنسر سے چاروں کھانے چت ہوا بلے باز: ویڈیو دیکھیں

      ٹیم انڈیا مقررہ 60 اوورز میں 3 وکٹوں پر محض 132 رنز بنا سکی۔ سنیل گواسکر بھی ناٹ آؤت لوٹے لیکن انہوں نے 174 گیندوں کا سامنا کیا اور اپنی اننگز میں صرف ایک چوکا لگایا۔ انگلینڈ کی جانب سے پیٹر لیور، آرنلڈ اور کرس اولڈ کو 1-1 وکٹ ملا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: