உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان کے ورلڈ چیمپئن کھلاڑی نے کہا : ہار جیت اوپر والے کے ہاتھ میں ، آپ کو کوئی نہیں ہراسکتا

    پاکستان کے ورلڈ چیمپئن کھلاڑی نے کہا : ہار جیت اوپر والے کے ہاتھ میں (AP)

    پاکستان کے ورلڈ چیمپئن کھلاڑی نے کہا : ہار جیت اوپر والے کے ہاتھ میں (AP)

    T20 world cup 2021: رمیز راجا نے کہا کہ پاکستانی ٹیم کو کوئی نہیں ہرا سکتا ۔ ہار اور جیت اوپر والے کے ہاتھ میں ہے ۔ ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ میں پاکستان نے اب تک شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : رمیز راجا نے کہا کہ پاکستانی ٹیم کو کوئی نہیں ہرا سکتا ۔ ہار اور جیت اوپر والے کے ہاتھ میں ہے ۔ ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ میں پاکستان نے اب تک شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے ۔ ٹیم نے سپر 12 میں کھیلے سبھی پانچ میچ جیتے ہیں ۔ دیگر کوئی ٹیم ایسا نہیں کرسکی ہے ۔ کپتان بابر اعظم نے اب تک پانچ میں سے چار میچ میں نصف سنچری بنائی ہے ۔ ٹیم سیمی فائنل میں گیارہ نومبر کو آسٹریلیا سے کھیلے گی ۔ پاکستان کی ٹیم 2009 میں ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ کا خطاب جیت چکی ہے ۔ دوسری اور آسٹریلیا کو ابھی بھی پہلے ٹی ٹوینٹی خطاب کا انتظار ہے ۔

      پی سی بی کے چیئرمین اور 1992 ورلڈ پ چیمپئن ٹیم میں شامل رمیز راجا نے ایک ویڈیو پیغام میں کہا کہ ٹیم نے ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ میں اب تک شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے ۔ پہلے ٹیم پر اچھا کھیل نہیں دکھانے کا ٹیگ لگا ہوا تھا ۔ کہا جاتا تھا کہ ٹیم ایک میچ جیت لیتی ہے اور دو میچ ہار جاتی ہے ، لیکن اس مرتبہ ایسا نہیں ہوا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 1992 ورلڈ کپ کی طرح اس مرتبہ بھی ٹیم کی لے بنی ہوئی ہے ۔ بابر نے اب تک ٹیم کو اچھے سے لیڈ کیا ہے ۔ ورلڈ کپ میں کھیلنے کا اپنا دباو ہوتا ہے ۔ بابر تو کپتانی بھی کررہے ہیں ۔


      رمیز راجا نے مزید کہا کہ خواتین کی پی ایس ایل میرے ذہن میں ہے ۔ امید کرتے ہیں کہ ہم ایشیا میں خاتون ٹی ٹوینٹی فرنچائزی لیگ لانچ کرنے والے پہلے کرکٹ بورڈ بن سکتے ہیں ۔ یہ اپنی طرح کا پہلا ٹورنامنٹ ہے ۔ اس وقت آسٹریلیا خواتین کی بگ بیش لیگ منعقد کرتا ہے جبکہ انگلینڈ نے مردوں کے ساتھ ہی خواتین کیلئے شروعاتی دی ہنڈریڈ ٹورنامنٹ منعقد کیا ۔

      جانکاری کے مطابق بی سی سی آئی خاتون آئی پی ایل شروع کرنے کا منصوبہ بنا رہا ہے ۔ اس میں چار سے پانچ ٹیموں کو موقع مل سکتا ہے ۔ اس سے پہلے بورڈ کی جانب سے 2018 میں خاتون ٹی ٹوینٹی چیلنج کی شروعات کی گئی تھی ۔ پہلے سیزن میں صرف ایک مقابلہ ہوا ۔ 2019 میں تین ٹیموں کے درمیان چار مقابلے ہوئے ۔ 2020 میں ہندوستان کے علاوہ جنوبی افریقہ ، انگلینڈ ، بنگلہ دیش ، سری لنکا ، ویسٹ انڈیز اور تھائی لینڈ کی کھلاڑی بھی اتری تھیں ۔

      خیال رہے کہ آئی پی ایل 2022 سے آٹھ کی جگہ 10 ٹیمیں کھیلیں گی ۔ لکھنو اور حیدر آباد دو نئی ٹیمیں لیگ سے جڑی ہیں ۔ اب 60 کی جگہ 74 میچ کھیلے جائیں گے ۔ اس کے بعد سے ہی امید لگائی جارہی ہے کہ خاتون آئی پی ایل بھی بورڈ جلد ہی شروع کرسکتا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: