اپنا ضلع منتخب کریں۔

    ہندوستانی ٹیم کے ان دو کھلاڑیوں نے پاکستان کی بلے بازی کو کردیا تہس نہس، پہنچایا بڑا نقصان

    ہندوستانی ٹیم کے ان دو کھلاڑیوں نے پاکستان کی بلے بازی کو کردیا تہس نہس، پہنچایا بڑا نقصان

    ہندوستانی ٹیم کے ان دو کھلاڑیوں نے پاکستان کی بلے بازی کو کردیا تہس نہس، پہنچایا بڑا نقصان

    T20 World Cup 2022: میچ میں ہندوستانی تیز گیند باز ابتدائی اوورز میں پاکستانی بلے بازوں پر پوری طرح حاوی رہے۔ یہی وجہ تھی کہ ٹاس ہارنے کے بعد پہلے بلے بازی کرتے ہوئے پاکستان کا آغاز کچھ خاص نہیں رہا اور ٹیم کے دونوں سلامی بلے باز چار اوورز میں 15 رنز کے مجموعی اسکور پر پویلین لوٹ گئے تھے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Mumbai | Kolkata | Chennai
    • Share this:
      نئی دہلی : ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ 2022 کا سب سے زیادہ انتظار کیا جانے والا میچ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان میلبورن کرکٹ گراؤنڈ میں کھیلا گیا ۔ اس میچ میں ہندوستان نے پاکستان کو ہرادیا ۔ میچ میں ہندوستانی تیز گیند باز ابتدائی اوورز میں پاکستانی بلے بازوں پر پوری طرح حاوی رہے۔ یہی وجہ تھی کہ ٹاس ہارنے کے بعد پہلے بلے بازی کرتے ہوئے پاکستان کا آغاز کچھ خاص نہیں رہا اور ٹیم کے دونوں سلامی بلے باز چار اوورز میں 15 رنز کے مجموعی اسکور پر پویلین لوٹ گئے تھے ۔

      ہاردک پانڈیا اور ارشدیپ سنگھ نے ہندوستان کیلئے مخالف ٹیم کے خلاف تین تین کامیابیاں حاصل کیں۔ پاکستانی ٹیم کے بلے باز ان دونوں گیند بازوں کی خطرناک گیند بازی کا سامنا کرنے میں ناکام نظر آئے۔ ارشدیپ نے پاکستان کے خلاف جہاں چار اوورز میں 32 رنز دے کر تین کامیابیاں حاصل کیں تو وہیں پانڈیا نے بھی اپنے چار اوورز کے اسپیل میں 30 رنز دے کر تین وکٹیں حاصل کیں۔

      ارشدیپ نے پاکستان کے کپتان بابر اعظم، محمد رضوان اور آصف علی کو اپنا شکار بنایا۔ دوسری جانب پانڈیا نے شاداب خان، حیدر علی اور محمد نواز کو پویلین کی راہ دکھائی۔ ارشدیپ اور پانڈیا کی خطرناک گیند بازی کا کمال تھا کہ پاکستان بڑا اسکور بنانے میں ناکام رہا اور آٹھ وکٹوں کے نقصان پر 159 رنز تک پہنچ سکا۔

       

      یہ بھی پڑھئے: Ind vs Pak: محمد سمیع کی ایک گیند نے بگاڑ دیا پاکستان کا سارا منصوبہ، ٹوٹ گیا ٹیم کا خواب


       

      یہ بھی پڑھئے: ہندوستان کا کرارا وار، اب پاکستان کیلئے سیمی فائل میں پہنچنے کی راہ ہوگی مشکل!


      ہائی وولٹیج میچ میں ہندوستانی ٹیم کو پہلی کامیابی مخالف ٹیم کے کپتان بابر اعظم کی صورت میں ملی۔ گرین ٹیم کو بابر سے کافی امیدیں وابستہ تھیں، لیکن وہ پہلی ہی گیند پر ایل بی ڈبلیو آوٹ ہو کر پویلین لوٹ گئے۔ اس کے بعد گرین ٹیم کو دوسرا دھچکا محمد رضوان کی صورت میں لگا۔ رضوان ، ارشدیپ کی گیند پر بھونیشور کمار کے ہاتھوں کیچ آوٹ ہوئے ۔

      ارشدیپ کے بعد ہاردک پانڈیا نے گرین آرمی کے مڈل آرڈر کو تباہ کرنے کا بیڑا اٹھایا۔ انہوں نے پہلے شاداب خان (5) اور حیدر علی (2) کو سوریہ کمار یادو کے ہاتھوں کیچ کرا کر پویلین کا راستہ دکھایا۔ اس کے بعد انہوں نے ایشیا کپ میں ہندوستان کی شکست کی وجہ بننے والے محمد نواز کو کارتک کے ہاتھوں کیچ آوٹ کراکر پویلین جانے پر مجبور کر دیا ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: