உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Asia Cup: ہندوستانی ٹیم نے 8ویں بار جیتا ایشیا کپ، 5ویں بار فائنل میں سری لنکا کو ہرایا

    ہندوستانی انڈر-19 ٹیم (Under-19 Indian Team) نے 8ویں بار ایشیا کپ کا خطاب جیت لیا ہے۔ جمعہ کو کھیلے گئے فائنل میں ٹیم نے سری لنکا کو ڈکورتھ لوئس ضابطہ سے 9 وکٹ سے شکست دی۔

    ہندوستانی انڈر-19 ٹیم (Under-19 Indian Team) نے 8ویں بار ایشیا کپ کا خطاب جیت لیا ہے۔ جمعہ کو کھیلے گئے فائنل میں ٹیم نے سری لنکا کو ڈکورتھ لوئس ضابطہ سے 9 وکٹ سے شکست دی۔

    ہندوستانی انڈر-19 ٹیم (Under-19 Indian Team) نے 8ویں بار ایشیا کپ کا خطاب جیت لیا ہے۔ جمعہ کو کھیلے گئے فائنل میں ٹیم نے سری لنکا کو ڈکورتھ لوئس ضابطہ سے 9 وکٹ سے شکست دی۔

    • Share this:
      دبئی: ہندوستانی انڈر-19 ٹیم (Under-19 Indian Team) نے 8ویں بار ایشیا کپ کا خطاب جیت لیا ہے۔ جمعہ کو کھیلے گئے فائنل میں ٹیم نے سری لنکا کو ڈکورتھ لوئس ضابطہ سے 9 وکٹ سے شکست دی۔ سری لنکا نے پہلے کھیلتے ہوئے 9 وکٹ پر 106 رن بنائے، لیکن ڈکورتھ لوئس ضابطے کے حساب سے ہندوستانی ٹیم کو 102 رنوں کا ہدف ملا۔ ہندوستان نے ہدف کو 21.3 اوور میں ایک وکٹ پر حاصل کرلیا۔ میچ میں بائیں ہاتھ کے اسپنر وکی اوستوال (Vicky Ostwal) نے شاندار گیندبازی کی۔ انہوں نے 8 اوور میں صرف 11 رن دیئے اور تین وکٹ بھی حاصل کئے۔ آف اسپنر کوشل تانبے نے بھی دو وکٹ حاصل کئے۔ اس سے پہلے ٹیم نے سیمی فائنل میں بنگلہ دیش کو شکست دی۔ وہیں سری لنکا کی ٹیم پاکستان کو شکست دے کر خطابی دور میں پہنچی تھی۔ بارش کے سبب میچ کو 38-38 اوور کر دیا گیا تھا۔

      ہدف کا تعاقب کرنے اتری ہندوستانی انڈر-19 کی شروعات اچھی نہیں رہی تھی۔ سلامی بلے باز ہرنور سنگھ صرف پانچ رن بناکر پویلین لوٹ گئے۔ ٹیم نے 8 رن پر پہلا وکٹ گنوایا۔ اس کے بعد انگکرش رگھو ونشی (ناٹ آوٹ 56) اور شیخ رشید (ناٹ آوٹ 31) نے ٹیم کو کوئی اور جھٹکا نہیں لگنے دیا۔ انگرکش نے 67 گیندوں کا سامنا کیا اور سات چوکے لگائے۔ وہیں رشید نے 49 گیندوں پر دو چوکے لگائے۔ ٹیم نے مسلسل تیسری بار ٹورنامنٹ کے خطاب پر قبضہ کرلیا۔

      6 کھلاڑی دہائی کے اعدادوشمار تک نہیں پہنچ سکے

      میچ میں سری لنکا نے ٹاس جیت کر بلے بازی کا فیصلہ کیا، لیکن ٹیم کی شروعات بے حد خراب رہی۔ ٹیم نے 47 رنوں پر اپنے پانچ وکٹ گنوا دیئے تھے۔ سری لنکا کا اسکور جب 33 اوور میں سات وکٹ پر 74 رن تھا۔ اس کے بعد بارش آگئی۔ اس وجہ سے کھیل گھنٹوں تک رکا رہا۔ اس کے بعد جب دوبارہ میچ شروع ہوا تو اسے 38-38 اوور کا کردیا گیا۔ سری لنکا کی طرف سے 6 کھلاڑی دہائی کے اعدادوشمار تک نہیں پہنچ سکے۔ 10ویں نمبر کے بلے باز یاسرو روڈگرو نے سب سے زیادہ ناٹ آوٹ 19 رن بنائے۔

      یہ ٹورنامنٹ کا 9واں سیزن ہے۔ ہندوستانی انڈر-19ٹیم آٹھویں بار فائنل میں پہنچی اور ہر بار خطاب جیتنے میں کامیاب رہی۔ اس سے قبل سات فائنل کی بات کریں تو ٹیم نے چار بار سری لنکا کو ہی فائنل میں شکست دی ہے۔ یعنی فائنل میں ٹیم نے پانچویں بار سری لنکا کو شکست دی۔ ایک بار پاکستان کو اور ایک بار بنگلہ دیش کو شکست دی ہے۔ سال 2012 میں میچ ٹائی ہونے کے بعد ہندوستان اور پاکستان (India vs Pakistan) دونوں کو مشترکہ فاتح قرار دیا گیا تھا۔

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: