ہوم » نیوز » اسپورٹس

متحدہ عرب امارات سے بڑی خبر، فکسنگ کے الزامات میں دو کرکٹر معطل

عامر حیات اور اشفاق احمد دونوں کی پیدائش پاکستان کے لاہور میں ہوئی ہے، لیکن دونوں کھلاڑیوں نے کرکٹ متحدہ عرب امارات کی طرف سے کھیلا ہے۔

  • Share this:
متحدہ عرب امارات سے بڑی خبر، فکسنگ کے الزامات میں دو کرکٹر معطل
ابو ظہبی سے بڑی خبر، فکسنگ کے الزامات میں دو کرکٹر معطل

دبئی: ایک طرف جہاں انڈین پریمیئر لیگ (آئی پی ایل) کا 13 واں سیزن آئی پی ایل میں منعقد ہونے والا ہے، وہیں اسی ملک سے بے حد ہی سنسنی خیز سامنے آرہی ہے۔ ابو ظہبی کے دو کھلاڑیوں کو ایمریٹس کرکٹ بورڈ نے آئی سی سی بدعنوانی مخالف قانون کی خلاف ورزی کرنے کے الزام میں معطل کردیا ہے۔ بورڈ نے یہ کارروائی عامر حیات اور اشفاق احمد پر کی ہے۔ ان دونوں کھلاڑیوں کو الزامات کا جواب دینے کے لئے دو ہفتے کا وقت دیا گیا ہے۔


کون ہیں عامر حیات اور اشفاق احمد


عامر حیات پاکستان کے لاہور میں پیدا ہوئےہیں، لیکن کرکٹ متحدہ عرب امارات کی طرف سے کھیلے۔ عامر حیات نے ابو ظہبی کے لئے 9 ونڈے اور 4 ٹی -20 میچوں میں شرکت کی۔ جس میں عامر حیات نے 11 ونڈے اور ٹی -20 کرکٹ حاصل کئے۔ اشفاق احمد کی بات کریں تو اس کھلاڑی کی پیدائش بھی پاکستان کے لاہور میں ہوئی ہے اور اس نے بھی متحدہ عرب امارات کے لئے 16 ونڈے اور 12 ٹی -20 میچ کھیلے ہیں۔ ونڈے میں اس بلے باز نے 21.50 کی اوسط سے 344 رن بنائے۔ ٹی -20 میں اس کے بلے سے 238 رن نکلے۔ اشفاق احمد کے نام انٹرنیشنل کرکٹ میں کل 5 نصف سنچری ہیں۔


عامر حیات اور اشفاق احمد دونوں کی پیدائش پاکستان کے لاہور میں ہوئی ہے، لیکن دونوں کھلاڑیوں نے کرکٹ متحدہ عرب امارات کی طرف سے کھیلا ہے۔
عامر حیات اور اشفاق احمد دونوں کی پیدائش پاکستان کے لاہور میں ہوئی ہے، لیکن دونوں کھلاڑیوں نے کرکٹ متحدہ عرب امارات کی طرف سے کھیلا ہے۔


اشفاق احمد اور عامر حیات پر کیا ہیں الزامات 

ان دونوں کھلاڑیوں کو آئی سی سی کے اینٹی کرپشن کے 5 ضوابط کی خلاف ورزی کا الزام پایا گیا ہے۔ ان کے اوپر پیسہ یا تحفہ لے کر میچ کے نتیجے کو متاثر کرنے کا سنگین الزام لگا ہے۔ مطلب دونوں پر فکسنگ کا سنسنی خیز الزام لگا ہے۔ جانچ میں یہ دونوں کھلاڑی اپنے پیسے اور تحفے کی اطلاع نہیں دے پائے۔ ابو ظہبی کے کھلاڑیوں کا میچ فکسنگ میں قصور وار پایا جانا کوئی نئی بات نہیں ہے۔ گزشتہ سال ابو ظہبی کے تین کھلاڑیوں کو فکسنگ کا قصور وار پایا گیا تھا اور انہیں معطل کردیا گیا تھا۔ محمد نوید، شیمان، انور اور قادر احمد کو آئی سی سی نے بدعنوانی کی سرگرمیوں میں ملوث پائے جانےپر معطل کردیا تھا۔

 

 
Published by: Nisar Ahmad
First published: Sep 13, 2020 05:15 PM IST