ہوم » نیوز » اسپورٹس

نیوزی لینڈ سے آئی بڑی خبر ، وراٹ کوہلی نے کی ریشبھ پنت کی چھٹی! کے ایل راہل کو لے کر کہی یہ بڑی بات

آسٹریلیا کے خلاف حالیہ ون ڈے سیریز میں پنت کے زخمی ہونے کے بعد راہل نے وكٹ كيپنگ کی ذمہ داری سنبھالی اور وکٹ کے پیچھے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ۔

  • UNI
  • Last Updated: Jan 23, 2020 11:38 PM IST
  • Share this:
نیوزی لینڈ سے آئی بڑی خبر ، وراٹ کوہلی نے کی ریشبھ پنت کی چھٹی! کے ایل راہل کو لے کر کہی یہ بڑی بات
وراٹ کوہلی کی فائل فوٹو ۔

وکٹ کیپر بلے باز ریشبھ پنت اب ٹیم انڈیا میں اپنا مقام محفوظ نہیں مان سکتے ہیں ، کیونکہ کپتان وراٹ کوہلی نے پارٹ ٹائم وکٹ کیپر لوکیش راہل کی حمایت کرکے ان کے لئے خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے۔ پنت کو حال کی ان کی مسلسل خراب کارکردگی کے باوجود چیف سلیکٹر ایم ایس كے پرساد ، کپتان وراٹ اور نائب کپتان روہت شرما کی حمایت مل رہی تھی ، لیکن نیوزی لینڈ کے خلاف جمعہ کو ہونے والے پہلے ٹی 20 میچ کی شام وراٹ نے پریس کانفرنس میں کھلے طور پر راہل کی حمایت کر کے پنت کے سامنے مشکلیں کھڑی کر دیں۔


آسٹریلیا کے خلاف حالیہ ون ڈے سیریز میں پنت کے زخمی ہونے کے بعد راہل نے وكٹ كيپنگ کی ذمہ داری سنبھالی اور وکٹ کے پیچھے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ۔ راہل بلے سے پہلے ہی کمال کا مظاہرہ کر رہے ہیں ، جبکہ پنت کا بلا زیادہ تر وقت خاموش ہی رہا ہے ۔ وراٹ نے کہا کہ ون ڈے سیریز کی طرح ٹی 20 سیریز میں بھی راہل وکٹ کیپر کے کردار میں ہوں گے۔ اگر ایسا ہے تو پھر پنت کو حتمی الیون سے باہر بیٹھنا پڑ سکتا ہے ۔


وراٹ نے کہا کہ آسٹریلیا کے خلاف ون ڈے سیریز میں جس طرح کی وكٹ كيپنگ راہل نے کی تھی ، اسے دیکھتے ہوئے انہیں نیوزی لینڈ کے خلاف ٹی 20 سیریز میں وکٹ کیپر کے طور پر موقع دیا جا سکتا ہے۔ راہل ٹاپ آرڈر کے بلے باز ہیں اور انہیں وکٹ کیپر کے طور پر اتارنے سے ہندستان ایک اضافی بلے باز اتار سکتا ہے ۔ راہل کے پاس اس کے علاوہ کسی بھی آرڈر پر بلے بازی کرنے کی صلاحیت ہے ۔ کپتان کے اس بیان سے سمجھا جا سکتا ہے کہ کپتان کا پنت کی بلے بازی پر سے اعتماد ڈگمگا گیا ہے۔


کپتان نے کہا کہ راہل نیوزی لینڈ کے خلاف ٹی 20 سیریز میں روہت شرما کے ساتھ اننگز کا آغاز کریں گے ، کیونکہ شیکھر دھون چوٹ کی وجہ سے اس سیریز اور اس کے بعد ون ڈے سیریز سے باہر ہو گئے ہیں ۔ شیکھر کی جگہ سنجو سیمسن کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے ، جو جارحانہ بلے باز ہونے کے ساتھ ساتھ اچھے وکٹ کیپر بھی ہیں ۔ یعنی پنت کے سامنے اب ڈبل چیلنج ہو گیا ہے ۔ وراٹ نے کہا کہ راہل کو وکٹ کیپر کے طور پر کھلانے سے ایک فائدہ ہے کہ ہم الیون میں ایک اضافی بلے باز شامل کر سکتے ہیں ۔ شیکھر کے زخمی ہونے سے ہمارے کچھ پلان بدلے گئے ہیں ۔ لہذا راہل مڈل آرڈر کی جگہ اوپننگ میں اتریں گے ۔ اگر وہ بیٹ کے ساتھ ساتھ کیپنگ بھی اچھی کرتے ہیں ، تو انہیں کیپر کی ذمہ داری دی جا سکتی ہے۔ یہ اچھی بات ہے کہ وہ کسی بھی طرح کے کردار کو قبول کرتے ہیں ، جو بھی ٹیم کی ضرورت ہو۔
First published: Jan 23, 2020 11:38 PM IST