உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    وراٹ کوہلی ورلڈ کپ کے بعد لے سکتے ہیں T20 فارمیٹ سے سنیاس، پاکستانی سابق کرکٹر کی پیشن گوئی!

    شعیب اختر نے کہا، "کوہلی ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے بعد ٹی ٹوئنٹی فارمیٹ سے ریٹائرمنٹ لے سکتے ہیں۔ وہ دوسرے فارمیٹس میں اپنی عمر بڑھانے کے لیے ایسا کر سکتے ہیں۔ اگر میں ان کی جگہ ہوتا تو میں ایسا ہی کرتا۔

    شعیب اختر نے کہا، "کوہلی ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے بعد ٹی ٹوئنٹی فارمیٹ سے ریٹائرمنٹ لے سکتے ہیں۔ وہ دوسرے فارمیٹس میں اپنی عمر بڑھانے کے لیے ایسا کر سکتے ہیں۔ اگر میں ان کی جگہ ہوتا تو میں ایسا ہی کرتا۔

    شعیب اختر نے کہا، "کوہلی ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے بعد ٹی ٹوئنٹی فارمیٹ سے ریٹائرمنٹ لے سکتے ہیں۔ وہ دوسرے فارمیٹس میں اپنی عمر بڑھانے کے لیے ایسا کر سکتے ہیں۔ اگر میں ان کی جگہ ہوتا تو میں ایسا ہی کرتا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      پاکستان کے سابق کرکٹر شعیب اختر نے پیش گوئی کی ہے کہ وراٹ کوہلی ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ 2022 کے بعد کھیل کے مختصر ترین فارمیٹ سے ریٹائرمنٹ پر غور کر سکتے ہیں۔ وراٹ کوہلی نے حال ہی میں ختم ہونے والے 2022 ایشیا کپ T20 ٹورنامنٹ میں اپنی کھوئی ہوئی فارم کو حاصل کر لیا ہے۔ دائیں ہاتھ کے بلے باز ٹورنامنٹ کے دوسرے سب سے زیادہ رنز بنانے والے بلے باز رہے ہیں۔ انہوں نے 5 میچ کھیلے اور دو مواقع پر ناٹ آؤٹ رہے۔ انہوں نے کل 276 رنز بنائے جو 92.00 کی اوسط سے آئے۔ انہوں نے دو نصف سنچریاں (ہانگ کانگ اور پاکستان کے خلاف) بنائیں۔ اس ٹورنامنٹ میں وراٹ نے اپنی پہلی T20 انٹرنیشنل سنچری بھی بنائی۔ یہ ویٹ کی یہ 71ویں بین الاقوامی سنچری تھی جو نومبر 2019 کے بعد آئی۔ سابق بھارتی کپتان اس میچ میں 61 گیندوں پر 122 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

      وراٹ کوہلی آسٹریلیا میں ہونے والے ٹی 20 ورلڈ کپ 2022 میں ٹیم انڈیا کا حصہ ہیں لیکن پاکستان کے سابق تیز گیندباز شعیب اختر نے وراٹ کوہلی سے متعلق ایک چونکا دینے والی پیشین گوئی کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ بھارت کا یہ مایہ ناز بلے باز ریٹائرمنٹ پر غور کر سکتا ہے۔

      عمر میں خود سے 10 سال چھوٹی صفا بیگ سے کرکٹر عرفان پٹھان کو پہلے نظر میں ہو گیا تھا پیار۔۔

      23اکتوبر کو ہندستان۔پاکستان کا مقابلہ، آفریدی نے بجائی ٹیم انڈیا کیلئے خطرے کی گھنٹی

      انڈیا ڈاٹ کام کے لائیو سیشن میں شعیب اختر نے کہا، "کوہلی ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے بعد ٹی ٹوئنٹی فارمیٹ سے ریٹائرمنٹ لے سکتے ہیں۔ وہ دوسرے فارمیٹس میں اپنی عمر بڑھانے کے لیے ایسا کر سکتے ہیں۔ اگر میں ان کی جگہ ہوتا تو میں ایسا ہی کرتا۔

      شعیب اختر سے پہلے شاہد آفریدی نے بھی ویرات کوہلی کو ریٹائرمنٹ کا مشورہ دیا تھا۔ انہوں نے شاندار کیریئر کے لیے کوہلی کی تعریف کی تھی۔ ان کا ماننا ہے کہ کوہلی جب بھی ریٹائرمنٹ کا فیصلہ کریں، انہیں اپنی شاندار فارم میں ایسا کرنا چاہیے۔ انہیں ٹیم سے سنیاس تب ہی لینا چاہئے جب انہیں ٹیم سے باہر کیا جا رہا ہو۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: