உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دیپک پونیا کے کوچ نے کیا ریفری پر حملہ، آئی او سی نے منظوری دے کر کھیل گاوں سے کیا باہر

    دیپک پونیا (Deepak Punia) کے غیر ملکی کوچ موراڈ گیڈریو (Morad Gaidrov)خود ایک پہلوان رہے ہیں اور بیجنگ اولمپک-2008 میں 74 کلو گرام زمرے میں سلور میڈل جیت چکے ہیں۔ ان پر الزام ہے کہ انہوں نے دیپک کے میچ کے بعد ریفری پر حملہ کر دیا۔ اس حادثہ کے بعد ان کی منظوری بھی منسوخ کر دی گئی ہے۔

    دیپک پونیا (Deepak Punia) کے غیر ملکی کوچ موراڈ گیڈریو (Morad Gaidrov)خود ایک پہلوان رہے ہیں اور بیجنگ اولمپک-2008 میں 74 کلو گرام زمرے میں سلور میڈل جیت چکے ہیں۔ ان پر الزام ہے کہ انہوں نے دیپک کے میچ کے بعد ریفری پر حملہ کر دیا۔ اس حادثہ کے بعد ان کی منظوری بھی منسوخ کر دی گئی ہے۔

    دیپک پونیا (Deepak Punia) کے غیر ملکی کوچ موراڈ گیڈریو (Morad Gaidrov)خود ایک پہلوان رہے ہیں اور بیجنگ اولمپک-2008 میں 74 کلو گرام زمرے میں سلور میڈل جیت چکے ہیں۔ ان پر الزام ہے کہ انہوں نے دیپک کے میچ کے بعد ریفری پر حملہ کر دیا۔ اس حادثہ کے بعد ان کی منظوری بھی منسوخ کر دی گئی ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ہندوستانی پہلوان دیپک پونیا (Deepak Punia) ٹوکیو اولمپک (Tokyo Olympics) میں تمغہ جیتنے سے محروم رہ گئے۔ اب ان کے غیر ملکی کوچ موراڈ گیڈریو (Morad Gaidrov) کو لے کر بھی خبر آئی کہ میچ کے بعد انہیں ٹوکیو اولمپک کے بعد انہیں ٹوکیو اولمپک سے باہر کر دیا گیا ہے۔ موراڈ پر جمعرات کو دیپک کے میچ کے بعد ریفری پر حملہ کرنے کا الزام لگا ہے۔ موراڈ گیڈرو روس کے رہنے والے ہیں اور دیپک کے ساتھ بطور کوچ ٹوکیو اولمپک میں موجود تھے۔

      دیپک پونیا کے برانز میڈل میچ کے بعد گیڈریو ریفری کے کمرے میں گئے اور ان پر حملہ کر دیا۔ عالمی کشتی ورلڈ ریسلنگ باڈی (ایف آئی ایل اے) نے فوراً آئی او سی کو اس معاملے کی اطلاع دی اور تادیبی سماعت کے لئے ہندوستانی کشتی ایسوسی ایشن کو بھی بلایا گیا۔ حالانکہ ایسوسی ایشن نے معافی مانگی اور انہیں وارننگ دے کر چھوڑ دیا گیا۔ عالمی کشتی ورلڈ ریسلنگ باڈی نے پوچھا کہ ہندوستانی ایسوسی ایشن نے گیڈریو پر کیا کارروائی کی تو ایسوسی ایشن نے اطلاع دی کہ انہیں ٹرمینیٹ کر دیا گیا ہے۔

      موراڈ گیڈریو (Morad Gaidrov) خود ایک پہلوان رہے ہیں اور بیجنگ اولمپک-2008 میں 74 کلو گرام زمرے میں سلور میڈل جیت چکے ہیں۔ انہوں نے 2004 کے اینتھیس اولمپک کے کوارٹر فائنل میں شکست کے بعد اپنے حریف پر حملہ کردیا تھا۔ اب آئی او سی نے ان کی منظوری بھی منسوخ کر دی ہے اور ٹوکیو میں ہندوستانی ٹیم کو لکھا ہے کہ انہیں فوراً کھیل گاوں چھوڑنے کے لئے کہا جائے۔

      دیپک اچھے ڈرا کا فائدہ اٹھاکر سیمی فائنل تک پہنچے، لیکن امریکہ کے ڈیوڈ مورس ٹیلر سے سیمی فائنل میں ہار گئے۔ انہوں نے اس سے پہلے نائیجیریا کے ایکیریکیمے ایگیومور کو تکنیکی برتری سے اور پھر کوارٹر فائنل میں چین کے جوشین لن کو 3-6 سے شکست دی تھی۔ دیپک اپنے پہلے ہی اولمپک کھیلوں میں حصہ لے رہے تھے اور کانسے کا تمغہ جیتنے کے قریب پہنچے، لیکن 86 کلو گرام کے پلے آف میں سین مرینو کے مائیلس نظم امین کے آخری 10 سیکنڈ میں پٹخنی دینے سے انہیں شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

      سال کے دیپک کا ڈیفنس پورے مقابلے کے دوران شاندار تھا، لیکن سین مرینو کے پہلوان نے مقابلے کے آخری لمحوں میں ہندوستانی پہلوان کا دایاں پیر پکڑ کر انہیں گرا کر 22 فیصلہ کن دو پوائنٹ حاصل کئے۔ اس سے پہلے تک ہندوستانی پہلوان 1-2 سے آگے چل رہا تھا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: