உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    FIFA Arab Cup 2021 : قطر میں فیفا عرب کپ 2021 کا آغاز، قطر نے بحرین کو دی شکست

    قطر میں فیفا عرب کپ 2021 کا آغاز ہوگیا ہے ۔ یہ ٹورنامنٹ ایسے وقت میں منعقد ہورہا ہے جبکہ فیفا ورلڈ کپ 2022 کو صرف ایک سال کا ہی وقت باقی رہ گیا ہے ۔

    قطر میں فیفا عرب کپ 2021 کا آغاز ہوگیا ہے ۔ یہ ٹورنامنٹ ایسے وقت میں منعقد ہورہا ہے جبکہ فیفا ورلڈ کپ 2022 کو صرف ایک سال کا ہی وقت باقی رہ گیا ہے ۔

    قطر میں فیفا عرب کپ 2021 کا آغاز ہوگیا ہے ۔ یہ ٹورنامنٹ ایسے وقت میں منعقد ہورہا ہے جبکہ فیفا ورلڈ کپ 2022 کو صرف ایک سال کا ہی وقت باقی رہ گیا ہے ۔

    • Share this:
      دوحہ : قطر میں فیفا عرب کپ 2021 کا آغاز ہوگیا ہے ۔ یہ ٹورنامنٹ ایسے وقت میں منعقد ہورہا ہے جبکہ فیفا ورلڈ کپ 2022 کو صرف ایک سال کا ہی وقت باقی رہ گیا ہے ۔ فیفا عرب کپ کے ایک میچ میں قطر نے بحرین کو ایک صفر سے ہرادیا جبکہ ایک دوسرے میچ میں تیونیسا نے موریطانیہ کو پانچ ایک سے شکست دی ۔ وہیں ایک دیگر مقابلہ میں عراق اور عمان کے درمیان میچ ایک ایک سے ڈرا پر ختم ہوا ۔

      البیت اسٹیڈیم میں شاندار افتتاحی تقریب کے بعد بحرین کی ٹیم نے شاندار شروعات کی ، مگر قطر نے فرسٹ ہاف کے آخر تک اچھی واپسی کرلی ۔ قطر نے کنٹرول کھیل کا مظاہرہ کیا ۔ قطر نے اپنا پہلا گول 68 ویں منٹ میں کیا ہے اور یہی گول اس کی جیت کا سبب بن گیا ۔ بحرین کی ٹیم پورے میچ میں ایک بھی گول نہیں کرسکی ۔

      وہیں احمد بن علی اسٹیڈیم میں کھیلے گئے ٹورنامنٹ کے ایک دوسرے میچ میں تیونیسیا نے موریطانیہ کو پانچ ایک سے شکست دیدی ۔ سیف الدین نے سب سے زیادہ دو گول داغے جبکہ یوسف مسکنی نے بھی اپنا ہنر دکھاتے ہوئے ایک گول اپنے نام کیا ۔ موریطانیہ کی جانب سے مولے بیسیم نے ٹیم کا واحد گول کیا ۔ وہیں الجنوب اسٹیڈیم میں عراق اور عمان کے درمیان کھیلا گیا میچ ایک ایک سے ڈرا رہا ۔

      خیال رہے کہ فیفا عرب کپ 2021 میں کل سولہ ٹیمیں شرکت کررہی ہیں ، جن کو چار گروپس میں تقسیم کیا گیا ہے ۔ گروپ اے میں قطر ، عراق ، عمان ، بحرین جبکہ گروپ بی میں تیونیسیا ، متحدہ عرب امارات ، شام ، موریطانیہ ہیں ۔ وہیں گروپ سی میں مراقش ، سعودی عربیہ ، جورڈن اور فلسطین کو جگہ ملی ہے ۔ گروپ ڈی میں الجیریا ، مصرف ، لبنان اور سوڈان کی ٹیمیں ہیں ۔

      قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔

      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: