உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فیفا ورلڈ کپ 2022: فٹ بال کھلاڑیوں کو ملنے والے کپ اور گفٹ باکس کا اترپردیش کنیکشن!

    Youtube Video

    پوری دنیا میں فٹ بال کھیل شائقین کی تعداد لاکھوں میں نہیں بلکہ کروڑوں میں ہیں۔ فٹ بال کے اس فیفا ورلڈ کپ 2022 میں ہندوستان کے کھلاڑی تو نہیں کھیل رہے ہیں، لیکن، اس کھیل کا کنیکشن اس مرتبہ اترپردیش سے راست طور پر جڑا ہوا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Agra | Delhi
    • Share this:
      فٹ بال کے سب سے بڑے میلے فیفا ورلڈ کپ 2022 کا 20 نومبر کو قطر میں بے حد شاندار اور پرجوش طریقے سے آغاز ہوچکا ہے۔ پوری دنیا میں فٹ بال کھیل شائقین کی تعداد لاکھوں میں نہیں بلکہ کروڑوں میں ہیں۔ فٹ بال کے اس فیفا ورلڈ کپ 2022 میں ہندوستان کے کھلاڑی تو نہیں کھیل رہے ہیں، لیکن، اس کھیل کا کنیکشن اس مرتبہ اترپردیش سے راست طور پر جڑا ہوا ہے۔ دراصل، ورلڈ کپ 2022 میں جو فاتح ٹیم ہوگی اسے دی جانے والی بے حد قیمتی ٹرافی اور اس ٹیم کے ساتھ ساتھ رنراپ رہی ٹیم سمیت دیگر کھلاڑیوں کو دینے کے لیے جو کپ اور اس کے باکس کا ڈیزائن تیار ہوا ہے، اسے آگرہ میں تیار کیا گیا ہے۔

      کہا جاسکتا ہے کہ آگرہ کی دستکاری اور پچی کاری-نقاشی کی دنیا کے کئی ملکوں میں کافی مانگ ہے۔ آگرہ کی خاص طور پر بے حد مشہور دستکاری آرٹ، نقاشی کے لیے ہندوستان سمیت کئی دیگر ممالک میں کافی بات چیت اکثر ہوتی رہتی ہے۔ تاج محل کی خوبصورتی کو چار چاند لگانے میں اس آرٹ کا بے حد اہم رول رہا ہے۔ لہٰذا نقاشی بیرون ممالک سے آنے والے سیاحوں کو ہمیشہ راغب کرتی ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      رشبھ پنت پر سابق کرکٹر کا پھوٹا غصہ، کہا-وہ بوجھ بن رہا ہے، اسے باہر کا راستہ دکھاؤ

      یہ بھی پڑھیں:
      سنجو سیمسن کو کیوں نہیں ٹیم انڈیا میں مل رہا ہے موقع؟ شکھر دھون نے کیا انکشاف

      تاج محل کا نقشہ بنانے کے لیے مشہور ہے یہ خاندان
      اترپردیش کے آگرہ کے رہائشی بے حد مشہور نوجوان بزنس مین عدنان شیخ کا کہنا ہے کہ دستکاری کا کاروباراور خاص طور پر پچی کاری-نقاشی میں اس کے خاندان کی کئی فیملیز نسلوں سے اس کاروبار سے جڑی ہوئی ہے۔ وقت کے ساتھ ساتھ اس آرٹ کو ہم لوگ اور زیادہ نکھارنے کی کوشش کررہے ہیں۔ کئی دہائیوں پرانے اس آرٹ کو آج کے ماڈرن زمانے میں اس کی پرانی خوبصورتی کے ساتھ اس آرٹ کو ملک و بیرون ملک تک لے کر جانے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں۔ شائد اسی کا نتیجہ ہے کہ فیفا ورلڈ کپ 2022 کے لیے خصوصی ٹرافی اور اس کے باکس بنانے کا جو کام انہیں دیا گیا ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: