ہوم » نیوز » اسپورٹس

سابق ہندوستانی کرکٹر کے بیٹے اور پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر خالد وزیر کا انتقال

پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر خالد وزیر کا طویل علالت کے بعد انتقال ہوگیا۔ ان کی عمر 84 سال تھی۔ سابق ہندوستانی ٹیسٹ کرکٹر سید وزیر علی کے بیٹے خالد وزیر نے 1954 میں پاکستان کے لئے دو ٹیسٹ کھیلے تھے۔

  • Share this:
سابق ہندوستانی کرکٹر کے بیٹے اور پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر خالد وزیر کا انتقال
پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر خالد وزیر کا طویل علالت کے بعد انتقال ہوگیا۔

اسلام آباد: پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر خالد وزیر کا طویل علالت کے بعد انتقال ہوگیا۔ ان کی عمر 84 سال تھی۔ سابق ہندوستانی ٹیسٹ کرکٹر سید وزیر علی کے بیٹے خالد وزیر نے 1954 میں پاکستان کے لئے دو ٹیسٹ کھیلے تھے۔ انہوں نے اپنا آغاز 1954 میں لارڈز گراؤنڈ میں انگلینڈ کے خلاف کیا تھا۔ وہ 1936 میں جالندھر میں پیدا ہوئے تھے اور چیسٹر میں آخری سانس لی۔

خالد وزیر نے دو میچوں میں صرف 14 رن بنائے تھے۔ انہوں نے 18 فرسٹ کلاس میچ کھیلے جس میں انہوں نے 271 رنز بنائے اور 14 وکٹیں لیں۔ انہیں دو فرسٹ کلاس میچوں کے بعد پاکستان ٹیم میں منتخب کیا گیا تھا لیکن اس دورے کے بعد وہ دوبارہ فرسٹ کلاس میں نہیں کھیلے اور ان کا کیریئر صرف 19 سال کی عمر میں ختم ہوا۔

پاکستان کے 6 کرکٹروں کی رپورٹ نگیٹیو


اسلام آباد: آل راؤنڈر محمد حفیظ ، لیگ اسپنر شاداب خان اور فاسٹ بولر وہاب ریاض سمیت 6 پاکستانی کرکٹرز کی کورونا رپورٹ تین دن میں دوسری بار منفی آنے کے بعد انگلینڈ کے خلاف سیریز کے لئے پاکستان ٹیم میں شمولیت کی انہیں منظوری دے دی گئی ہے۔ ان  کرکٹرز میں فخر زمان ، محمد حسنین اور محمد رضوان بھی شامل ہیں۔ کرکٹرز کی جانچ رپورٹ 26 جون کو منفی آئی اور اس کے بعد 29 جون کو بھی ان کی جانچ کی گئی ، جس کی رپورٹ بھی منفی آئی ہے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) اب ان کھلاڑیوں کو انگلینڈ بھیجے گا جہاں وہ اگست میں انگلینڈ کے خلاف سیریز کے لئے پاکستانی ٹیم میں شامل ہوں گے۔




آل راؤنڈر محمد حفیظ ، لیگ اسپنر شاداب خان اور فاسٹ بولر وہاب ریاض سمیت 6 پاکستانی کرکٹرز کی کورونا رپورٹ تین دن میں دوسری بار منفی آنے کے بعد انگلینڈ کے خلاف سیریز کے لئے پاکستان ٹیم میں شمولیت کی انہیں منظوری دے دی گئی ہے۔
آل راؤنڈر محمد حفیظ ، لیگ اسپنر شاداب خان اور فاسٹ بولر وہاب ریاض سمیت 6 پاکستانی کرکٹرز کی کورونا رپورٹ تین دن میں دوسری بار منفی آنے کے بعد انگلینڈ کے خلاف سیریز کے لئے پاکستان ٹیم میں شمولیت کی انہیں منظوری دے دی گئی ہے۔

محمد حفیظ اور وہاب ریاض نے پی سی بی کے ذریعہ کورونا کی جانچ کے علاوہ آزادانہ طور پر اپنی جانچ کرائی تھیں ،جس کی رپورٹ گذشتہ ہفتے منفی آئی تھی۔ ٹیم میں شمولیت کے لئے پی سی بی کی منظوری کے لئے کورونا وائرس کی دوسری جانچ میں کرکٹرز کی رپورٹ کو منفی آنا لازمی تھا۔ پاکستان کرکٹ ٹیم کے لئے یہ بڑی خوشی کی بات ہے کہ ان چھ کرکٹرز کی منفی رپورٹ آئی ہے۔ پاکستان میں ابتدائی جانچ میں 10 کھلاڑیوں اور ایک عملے کو کورونا وائرس سے متاثر پایا گیا تھا۔
قبل ازیں پاکستان کی 20 رکنی ٹیم اتوار کو انگلینڈ پہنچی۔ ٹیم کو 14 دن تک قرنطین میں رہنا ہے۔ پاکستان کو اگست ستمبر میں انگلینڈ سے تین ٹیسٹ اور تین ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلنا ہیں۔ اسپورٹ عملے کے 11 ممبران کے ساتھ پاکستان کی 20 رکنی ٹیم بھی انگلینڈ پہنچی۔ پاکستانی ٹیم چارٹرڈ طیارے کے ذریعے انگلینڈ پہنچی جس کا اہتمام انگلینڈ اینڈ ویلز کرکٹ بورڈ (ای سی بی) نے کیا تھا۔ پاکستانی ٹیم 14 روز تک نیو روڈ وورسٹرشائر میں قرنطین میں قیام کرے گی اور پھر 13 جولائی کو ڈربی شائر کاؤنٹی گراؤنڈ شفٹ ہوجائے گی۔
اس دورے کے عارضی شیڈول کے مطابق پہلا ٹیسٹ مانچسٹر میں 5 اگست سے کھیلا جائیگا جبکہ تین میچوں کی سیریز کے اگلے دو ٹیسٹ ساؤتھمپٹن ​​میں 13 اور 21 اگست کو کھیلے جائیں گے۔ تین ٹی ٹوئنٹی میچ 29 اور 31 اگست اور 2 ستمبر کو ساؤتھمپٹن ​​میں کھیلے جائیں گے۔ تمام چھ میچ بغیر کسی تماشائی کے خالی اسٹیڈیم میں کھیلے جائیں گے۔
محمد حفیظ ، وہاب ریاض ، فخر زمان ، شاداب خان ، محمد رضوان اور محمد حسنین ٹیسٹ منفی آئے ہیں اور اب ان کو انگلینڈ بھیجنے کا انتظام پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کرے گا۔
انگلینڈ پہنچی ٹیم : عابد علی ، امام الحق ، شان مسعود ، اظہر علی (ٹیسٹ کپتان) ، بابر اعظم (ٹیسٹ نائب کپتان اور ٹی 20 کپتان) ، اسد شفیق ، فواد عالم ، افتخار احمد ، خوشدل شاہ ، سرفراز احمد ، فہیم اشرف ، محمد عباس ، نسیم شاہ ، شاہین شاہ آفریدی ، سہیل خان ، عثمان شنواری ، عماد وسیم ، یاسر شاہ ، موسیٰ خان ، روحیل نذیر۔
ٹیم میں شامل ہونے والے مزید 6 کھلاڑی : محمد حفیظ ، وہاب ریاض ، فخر زمان ، شاداب خان ، محمد رضوان اور محمد حسنین۔

First published: Jul 01, 2020 01:43 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading