உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عمران خان کا یوم پیدائش: پلے بوائے کی شبیہ، صدرکی سفارش پر ریٹائرمنٹ سے لوٹ کر ٹیم کو بنایا عالمی چمپئن

    عمران خان کی کپتانی میں پاکستنا کی ٹیم 1992 میں عالمی چمپئن بنی۔ (AP)

    عمران خان کی کپتانی میں پاکستنا کی ٹیم 1992 میں عالمی چمپئن بنی۔ (AP)

    Happy Birthday Imran Khan: عمران خان کی خوش قسمتی کی بحث پاکستان کے علاوہ انگلینڈ میں بھی خوب ہوئی۔ جلد ہی ان کی شبیہ پلے بوائے کی بن گئی۔ لیجنڈ آل راونڈر نے اپنی کپتانی میں سال 1992 میں پاکستان کو عالمی چمپئن بنایا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      نئی دہلی: پاکستان کے عظیم آل راونڈر عمران خان (Imran Khan Birthday) آج (5 اکتوبر) اپنا 70واں یوم پیدائش منا رہی ہیں۔ 5 اکتوبر 1952 کو لاہور میں پیدا ہوئے عمران خان نے اپنے ملک میں نوجوان نسل کو تیز گیند بازی کے لئے ترغیب دی۔ عمران خان اپنے کھیل کے علاوہ ذاتی زندگی کے لئے بھی سرخیوں میں رہے۔ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کے بعد عمران خان نے سیاست کا رخ کیا۔ وہ سال 2018 میں پہلی بار پاکستان کے وزیر اعظم بنے۔

      انگلینڈ کے خلاف سال 1971 میں ٹسٹ کرکٹ میں ڈیبیو کرنے والے عمران خان نے اپنے کیریئر میں 88 ٹسٹ میچ کھیلے اور 37.69 کی اوسط سے 3807 رن بنائے۔ اس دوران اپنی تز گیند بازی سے انہوں نے کل 362 شکار بھی کئے۔ دائیں ہاتھ کے تیز گیند باز عمران خان نے 175 ونڈے میں 33.41 کی اوسط سے 3709 رن بنائے۔ ونڈے میں عمران خان کے نام 182 وکٹ درج ہیں۔

       عمران خان کی کپتانی میں پاکستان کی ٹیم 1987 عالمی کپ میں 8 سال بعد سیمی فائنل میں پہنچی تھی۔

      عمران خان کی کپتانی میں پاکستان کی ٹیم 1987 عالمی کپ میں 8 سال بعد سیمی فائنل میں پہنچی تھی۔


      صدر جمہوریہ کے کہنے پر ریٹائرمنٹ سے کی واپسی

      عمران خان کی کپتانی میں پاکستان کی ٹیم 1987 عالمی کپ میں 8 سال بعد سیمی فائنل میں پہنچی تھی۔ حالانکہ سیمی فائنل میں آسٹریلیا نے پاکستان کو 18 رنوں سے ہراکر فائنل انٹری کی۔ ہار سے عمران خان اتنے مایوس ہوئے کہ انہوں نے انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا۔ اس کے بعد اسپنر عبدالقادر کو پاکستانی ٹیم کا کپتان بنایا گیا۔ عبدالقادر کی قیادت میں پاکستان کو انگلینڈ کے خلاف سیریز میں 5 میں سے 4 میچ میں ہار جھیلنی پڑی۔ پاکستانی ٹیم کی خراب کارکردگی کو دیکھتے ہوئے اس وقت کے صدر ضیاء الحق نے انہیں ریٹائر منٹ واپس لینے کی گزارش کی۔ اس کے بعد عمران نے واپسی کی۔

      عمران خان سال 2018 میں پہلی بار پاکستان کے وزیر اعظم بنے۔
      عمران خان سال 2018 میں پہلی بار پاکستان کے وزیر اعظم بنے۔


      عمران خان نے 1992 میں پاکستان کو بنایا عالمی چمپئن

      عمران خان کی کپتانی میں پاکستانی ٹیم نے سال 1992 میں عالمی کپ اپنے نام کیا۔ عمران خان نے تب عالمی کپ میں دوسری بار پاکستان کی قیادت کی تھی۔ آئی سی سی کے اس مشہور ٹورنا منٹ میں پاکستان نے 10 میں سے کل 6 میچ جیتے۔ فائنل میں پاکستان نے انگلینڈ کو ہراکر پہلی بار عالمی کپ اپنے نام کیا۔

      پلے بوائے سے لے کر عظیم آل راونڈر بننے تک

      عمران خان کی شبیہ جلد ہی پلے بوائے کی بن گئی۔ ان کے اڑتے بال، گڈلُک اور ایتھلیٹک ٹیلنٹ کی چوطرفہ بحث ہونے لگی۔ ایسے میں وہ صرف پاکستان ہی نہیں بلکہ سات سمندر پار انگلینڈ میں بھی مشہور ہوگئے۔ عمران خان نے تین شادیاں کی ہیں۔ ان کی پہلی شادی برطانوی ارب پتی کی بیٹی جیمیما گولڈ اسمتھ سے 1995 میں ہوئی تھی، لیکن سال 2004 میں یہ شادی ٹوٹ گئی۔ عمران خان نے دوسری شادی 2015 میں صحافی ریحام خان سے کی، جو ایک سال بھی نہیں چلی۔ ان کی موجودہ اہلیہ کا نام بشریٰ بی بی ہے۔ کرکٹ کے ریٹائرمنٹ کے بعد وہ سیاست میں آئے اور پاکستان کے وزیر اعظم بھی رہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: