ہوم » نیوز » اسپورٹس

والد کی موت سے بری طرح سے ٹوٹ گئے ہیں ہاردک پانڈیا، بیحد ہی جذباتی ویڈیو شیئر کرکے بتایا درد

گزشتہ دنوں ٹیم انڈیا کے اسٹار آل راؤنڈر ہاردک پانڈیا (Hardik Pandya Father Passed Away) اور کنال پانڈیا کے والد ہمانشو پانڈیا (Himanshu Pandya) نے دنیا کو الوداع کہہ دیا تھا۔ والد کی موت سے پانڈیا بھائی بری طرح سے ٹوٹ گئے ہیں۔

  • Share this:
والد کی موت سے بری طرح سے ٹوٹ گئے ہیں ہاردک پانڈیا، بیحد ہی جذباتی ویڈیو شیئر کرکے بتایا درد
والد کی موت سے پانڈیا بھائی بری طرح سے ٹوٹ گئے ہیں۔

گزشتہ دنوں ٹیم انڈیا کے اسٹار آل راؤنڈر ہاردک پانڈیا  (Hardik Pandya Father Passed Away)  اور کنال پانڈیا کے والد ہمانشو پانڈیا (Himanshu Pandya) نے دنیا کو الوداع کہہ دیا تھا۔ والد کی موت سے پانڈیا بھائی بری طرح سے ٹوٹ گئے ہیں۔ ہاردک پانڈیا نے سنیچر کو والد کے ساتھ گزارے ہر ایک لمحے کا بیحد ہی جذباتی کردینے والا ویڈیو پوسٹ شیئر کیا ہے۔ ہمانشو پانڈیا  (Himanshu Pandya) نے ودوڈرا میں  آخرہ سانس لی تھی۔ انہیں دل کا دورہ پڑا تھا۔ والد کی موت کے بعد کنال پانڈیا بڑودا ٹیم کے بایو ببل سے باہر نکل گئے تھے۔ وہ سید مشتاق علی ٹرافی میں بڑودا کی قیادت کر رہے تھے۔


ہاردک پانڈیا (Hardik Pandya) اور کنال پانڈیا کو کرکٹر بنانے میں ان کے والد کا بہت بڑا ہاتھ رہا۔ انہوں نے بیٹوں کو کرکٹر بنانے کیلئے شہر کا بدل ڈالا  تھا۔ انہوں نے اپنا بزنس تک بند کر دیا اور دوسرے شہر میں بس گئے تاکہ بچوں کو بہتر کرکٹ کی سہولیت مہیا کرائی جا سکے۔




 




View this post on Instagram





 

A post shared by Hardik Himanshu Pandya (@hardikpandya93)





ہمانشو   (Himanshu Pandya) سورت میں کار فائننس کا چھوٹا سا بزنس چلاتے تھے جسے انہوں نے بند کر دیا اور پھر وڈودرا شفٹ ہو گئے۔ اس وقت ہاردک پانڈیا Hardik Pandya  پانچ سال کے تھے۔ وہاں پر انہوں نے اپنے بچوں کو کرکٹ کی بہتر سہولیت دی اور انہوں نے کرن مورے اکیڈمی میں دونوں کا داخلہ کروایا۔ اقتصادی طور پر کمزور پانڈیا کنبہ کرائے کے گھر میں رہتا تھا۔

اس کے باوجود دونوں اسٹار کرکٹرس کے والد نے انہیں کسی چیز کی کمی محسوس ہونے نہیں دی۔ ایک انٹرویو میں ہمانشو پانڈیا  (Himanshu Pandya) نے کہا تھا کہ جب بھی وہ ہاردک اور کنال کے بارے میں بات کرتے، وہ اپنے آنسوؤں کو روک نہیں پاتے ہیں۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jan 23, 2021 12:05 PM IST