உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    HBD IMRAN KHAN: پاکستان کو پہلی بار عالمی کپ کا خطاب دلایا، چانسلر کے بعد وزیر اعظم بھی بنے

    HBD IMRAN KHAN: پاکستان کو پہلی بار عالمی کپ کا خطاب دلایا، چانسلر کے بعد وزیر اعظم بھی بنے

    HBD IMRAN KHAN: پاکستان کو پہلی بار عالمی کپ کا خطاب دلایا، چانسلر کے بعد وزیر اعظم بھی بنے

    HBD IMRAN KHAN: پاکستان کے موجودہ وزیر اعظم عمران خان (Imran Khan) کا آج 69 واں یوم پیدائش ہے۔ وہ بھلے آج ملک کے وزیر اعظم ہوں، لیکن اس سے پہلے بطور کرکٹر انہوں نے کئی بڑے کارنامے انجام دیئے۔ انہوں نے 1992 میں اپنی کپتانی میں پاکستان کو ونڈے عالمی کپ کا خطاب دلایا تھا۔

    • Share this:
      نئی دہلی: پاکستان کے موجودہ وزیر اعظم عمران خان (Imran Khan) کا آج 69 واں یوم پیدائش ہے۔ وہ بھلے آج ملک کے وزیر اعظم ہوں، لیکن اس سے پہلے بطور کرکٹر انہوں نے کئی بڑے کارنامے انجام دیئے۔ انہوں نے 1992 میں اپنی کپتانی میں پاکستان کو ونڈے عالمی کپ کا خطاب دلایا تھا۔ پاکستان کی ٹیم دوبارہ ونڈے عالمی کپ کا خطاب آج تک نہیں جیت سکی ہے۔ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کے بعد وہ انگلش یونیورسٹی کے وائس چانسلر بنے۔ اپنی سیاسی پارٹی بنائی اور آج وہ پاکستان کے 22 ویں وزیر اعظم ہیں۔

      5 اکتوبر 1952 کو پشتون فیملی میں پیدا ہوئے عمران خان کے والد سول انجینئر تھے۔ انہوں نے پاکستان کے علاوہ انگلینڈ میں بھی پڑھائی کی۔ انہوں نے 16 سال کی عمر میں فرسٹ کلاس کرکٹ کھیلنا شروع کر دیا تھا۔ وہ 1971 سے لے کر 1976 تک پھر 1983 سے لے کر 1988 تک انگلش کاونٹی ٹیم سے بھی کھیلے۔ انہوں نے 1971 میں انگلینڈ کے خلاف ٹسٹ ڈیبیو کیا تھا۔ وہیں اگست 1974 میں انہیں ونڈے ڈیبیو کرنے کا موقع ملا تھا۔

      9 ٹسٹ میں حاصل کئے 62 وکٹ، آج بھی عالمی ریکارڈ قائم

      عمران خان کے لئے سال 1982 بہترین ثابت ہوا۔ انہوں نے 9 ٹسٹ میں 13 کی اوسط سے 62 وکٹ حاصل کئے۔ ایک سال میں 50 سے زیادہ وکٹ لینے والے کسی گیند باز کا یہ آج بھی سب سے اچھا اوسط ہے۔ وہ ٹسٹ میں 300 وکٹ اور تین ہزار بنانے والے چنندہ کرکٹروں کی فہرست میں شامل ہیں۔ انہوں نے 88 ٹسٹ میں 38 کی اوسط سے 3807 رن بنائے۔ 6 سنچری اور 18 نصف سنچری لگائی۔ اس کے علاوہ انہوں نے 23 کی اوسط سے 362 وکٹ بھی حاصل کئے۔ 23 بار 5 وکٹ لینے کا کارنامہ انجام دیا۔ 58 رن دے کر 8 وکٹ ان کا بہترین اسکور رہا۔ انہوں نے 175 ونڈے میں 3709 رن بنائے اور 182 وکٹ بھی لئے۔ عالمی کپ جیتنے کے 6 ماہ بعد انہوں نے کرکٹ سے ریٹائر منٹ لے لیا تھا۔

      ماں کی یاد میں بنوایا کینسر اسپتال

      عمران خان نے 1991 میں اپنی ماں کی یاد میں کینسر اسپتال بنانے کے لئے مہم شروع کی تھی۔ سال 1994 میں انہوں نے لاہور میں پہلا اسپتال بنوا بھی دیا۔ سال 2015 میں پشاور میں انہوں نے دوسرا اسپتال شروع کیا۔ اب یہاں ایک ریسرچ سینٹر بھی ہے۔ عمران خان 2005 سے 2014 تک یونیورسٹی آف بریڈ فارڈ کے چانسلر بھی رہے۔ انہوں نے 1996 میں اپنی سیاسی پارٹی تحریک انصاف بنائی۔ سال 2002 میں انہوں نے قومی اسمبلی کا الیکشن جیتا۔ وہ سال 2018 میں پاکستان کے وزیر اعظم بنے۔

      تین شادی کی، کئی افیئر کی ہوئی قیاس آرائی

      عمران خان کے افیئر کے چرچے پاکستان کی سابق وزیر اعظم بے نظیر بھٹو سے لے کر بالی ووڈ اداکارہ زینت امان تک سے رہے۔ انہوں نے تین شادیاں کی ہیں۔ انہوں نے سال 2018 میں بشریٰ بی بی سے شادی کی۔ اس سے پہلے انہوں نے برطانیہ کی جیمیما گولڈ اسمتھ اور برطانوی شہری ریہام خان سے شادی کی تھی۔ دونوں سے ان کا طلاق ہوچکا ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: