உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سابق کرکٹر نے اجنکیا رہانے کو کپتان بنانے پر اٹھائے سوال، کہا- سلیکشن میں بھی شک تھا

    اجنکیا رہانے کو کپتان بنانے پر سابق کرکٹر نے اٹھائے سوال

    اجنکیا رہانے کو کپتان بنانے پر سابق کرکٹر نے اٹھائے سوال

    اجنکیا رہانے (Ajinkya Rahane) کانپور میں نیوزی لینڈ کے خلاف پہلے ٹسٹ میچ میں ٹیم کی قیادت کرنے کے لئے تیار ہیں۔ اس کے بعد وراٹ کوہلی (Virat Kohli) لائن اپ میں لوٹیں گے اور ممبئی کے وانکھیڑے اسٹیڈیم میں دوسرے ٹسٹ میں ٹیم کی قیادت کریں گے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ہندوستان کے سابق ٹسٹ سلامی بلے باز آکاش چوپڑا (Aakash Chopra) نے نیوزی لینڈ کے خلاف پہلے ٹسٹ (India vs New Zealand) کے لئے اجنکیا رہانے (Ajinkya Rahane) کو کپتانی دینے کے فیصلے پر نشانہ سادھا ہے۔ اجنکیا رہانے کانپور میں نیوزی لینڈ کے خلاف پہلے ٹسٹ میچ میں ٹیم کی قیادت کرنے کے لئے تیار ہیں۔ اس کے بعد وراٹ کوہلی (Virat Kohli) لائن اپ میں لوٹیں گے اور ممبئی کے وانکھیڑے اسٹیڈیم میں دوسرے ٹسٹ میں ٹیم کی قیادت کریں گے۔

      ٹیم انڈیا میں ہوگی کئی تبدیلی

      نومنتخب ٹی-20 انٹرنیشنل کپتان روہت شرما (Rohit Sharma) نیوزی لینڈ کے خلاف ٹسٹ سیریز میں آرام کو لے کر تنازعہ میں تھے۔ ایسے میں روہت شرما اور وراٹ کوہلی کی غیر موجودگی میں اجنکیا رہانے کو قیادت کی ذمہ داری سونپی گئی۔ اجنکیا رہانے گزشتہ کچھ برسوں سے ٹسٹ ٹیم کے نائب کپتان رہے ہیں اور اس سال کی شروعات میں انہوں نے آسٹریلیا میں مشہور بارڈر- گواسکر ٹرافی میں تین میچوں کے لئے ٹیم کی قیادت کی تھی۔ ہندوستان نے اس ٹرافی کو شاندار انداز میں جیتا تھا۔

       سابق ہندوستانی کرکٹر آکاش چوپڑا حالانکہ اجنکیا رہانے کو کپتانی دینے کے فیصلے سے فکر مند ہیں، کیونکہ ٹیم میں ان کے سلیکشن کو لے کر شک تھا۔

      سابق ہندوستانی کرکٹر آکاش چوپڑا حالانکہ اجنکیا رہانے کو کپتانی دینے کے فیصلے سے فکر مند ہیں، کیونکہ ٹیم میں ان کے سلیکشن کو لے کر شک تھا۔


      سابق ہندوستانی کرکٹر آکاش چوپڑا حالانکہ اجنکیا رہانے کو کپتانی دینے کے فیصلے سے فکر مند ہیں، کیونکہ ٹیم میں ان کے سلیکشن کو لے کر شک تھا۔ اپنے یوٹیوب چینل پر آکاش چوپڑا نے کہا، ’آپ نے اجنکیا رہانے کو کپتان کے طور پر منتخب کیا ہے، لیکن سچائی یہ بھی ہے کہ انگلینڈ کے خلاف آخری ٹسٹ میں ان کے منتخب کئے جانے پر سوال بنا ہوا تھا۔ حالانکہ وہ انگلینڈ اور ہندوستان کے درمیان وہ آخری ٹسٹ نہیں ہوپایا تھا‘۔ انہوں نے کہا، ’میں اجنکیا رہانے کو کافی زیادہ پسند کرتا ہوں، لیکن سچ یہ ہے کہ ان کے اوسط میں گراوٹ ہی دیکھی گئی ہے۔ یقینی طور پر بیچ میں کچھ اچھی اننگ ہوئی، لیکن گزشتہ دو سالوں میں اوسط میں 20 پوائنٹ کی گراوٹ آئی ہے۔ اجنکیا رہانے کا اوسط اتنا نیچے کبھی نہیں گیا‘۔

      سابق ہندوستانی کرکٹر آکاش چوپڑا حالانکہ اجنکیا رہانے کو کپتانی دینے کے فیصلے سے فکر مند ہیں، کیونکہ ٹیم میں ان کے سلیکشن کو لے کر خدشہ تھا۔
      سابق ہندوستانی کرکٹر آکاش چوپڑا حالانکہ اجنکیا رہانے کو کپتانی دینے کے فیصلے سے فکر مند ہیں، کیونکہ ٹیم میں ان کے سلیکشن کو لے کر خدشہ تھا۔


      ’لارڈس کی نصف سنچری نے رہانے کو باہر ہونے سے بچایا‘

      آکاش چوپڑا نے کہا کہ لارڈس میں نصف سنچری نے اجنکیا رہانے کو باہر ہونے سے بچا لیا اور دعویٰ کیا کہ نیوزی لینڈ سیریز ان کے کیریئر کے لئے اہم ہے۔ انہوں نے کہا، ’اگر انہوں نے لارڈس میں نصف سنچری نہیں بنائی ہوتی (پجارا کے ساتھ دوسری اننگ میں شراکت) تو یہ ایک اور بحث کا موضوع ہوتا۔ اگر آپ کو اجّو کے لئے بھی ایک متبادل تلاش کرنا ہوتا، اگر روہت شرما نائب کپتان ہوں گے اور اجنکیا رہانے کو نوٹس دیا جاسکتا ہے، لیکن اس وقت انہیں کپتان بنایا گیا ہے‘۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      حسن علی نے سیمی فائنل کی شکست کا ذمہ دار ٹھہرانے پر خاموشی توڑی، کہا- مجھ سے زیادہ مایوس کوئی نہیں ہوگا


      گزشتہ کافی وقت سے خاموش ہے اجنکیا رہانے کا بلّا

      دراصل، گزشتہ سال اپنی کپتانی میں ہندوستان کو آسٹریلیا کے خلاف تاریخی سیریز جتانے والے اجنکیا رہانے کا اس کے بعد سے ہی بلا خاموش ہے۔ انگلینڈ کے خلاف 4 ٹسٹ اور عالمی ٹسٹ چمپئن شپ میں اجنکیا رہانے بڑی اننگ نہیں کھیل پائے تھے۔ اس کے بعد سے ہی پلیئنگ الیون میں ان کی جگہ پر سوال کھڑے ہو رہے ہیں۔ گزشتہ سال میلبورن ٹسٹ کے بعد سے اجنکیا رہانے نے 11 ٹسٹ کھیلے ہیں اور محض 19 کی اوسط سے 372 رن بنا پائے ہیں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: