உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    IND vs SA: جنوبی افریقہ نے وراٹ اینڈ کمپنی کو توڑا گھمنڈ، ٹسٹ سیریز جیتی، 30 سال کا انتظار جاری

    جنوبی افریقہ نے وراٹ اینڈ کمپنی کو توڑا گھمنڈ، ٹسٹ سیریز جیتی، 30 سال کا انتظار جاری

    جنوبی افریقہ نے وراٹ اینڈ کمپنی کو توڑا گھمنڈ، ٹسٹ سیریز جیتی، 30 سال کا انتظار جاری

    India vs South Africa 3rd Test: جنوبی افریقہ (South Africa) نے ٹسٹ سیریز میں پچھڑنے کے بعد 1-2 سے جیت حاصل کی۔ ٹیم نے جمعہ کو تیسرے ٹسٹ (India vs South Africa) میں ہندوستان کو سات وکٹ سے شکست دی۔ یہ مقابلہ 4 ہی دن میں ختم ہوگیا۔ ہندوستانی نے جنوبی افریقہ کو 212 رنوں کا ہدف دیا تھا۔ کیگن پیٹرسن (Keegan Petersen) نے دوسری انگن میں 82 رن بناکر ٹیم کو جیت دلانے میں اہم کردار ادا کیا۔

    • Share this:
      کیپ ٹاون: جنوبی افریقہ (South Africa) نے ٹسٹ سیریز میں پچھڑنے کے بعد 1-2 سے جیت حاصل کی۔ ٹیم نے جمعہ کو تیسرے ٹسٹ (India vs South Africa) میں ہندوستان کو سات وکٹ سے شکست دی۔ یہ مقابلہ 4 ہی دن میں ختم ہوگیا۔ ہندوستانی نے جنوبی افریقہ کو 212 رنوں کا ہدف دیا تھا۔ کیگن پیٹرسن (Keegan Petersen) نے دوسری انگن میں 82 رن بناکر ٹیم کو جیت دلانے میں اہم کردار ادا کیا۔ ہندوستان نے پہلی اننگ میں 223 جبکہ دوسری اننگ میں 198 رن بنائے تھے۔ جنوبی افریقہ نے پہلی اننگ میں 210 رنوں کا اسکور کھڑا کیا تھا۔ سیریز کا پہلا ٹسٹ ہندوستان نے جیتا تھا، لیکن میزبان ٹیم نے آخری دونوں ٹسٹ جیت کر سیریز پر قبضہ کیا۔ ہندوستانی ٹیم یہاں 30 سال میں کبھی بھی ٹسٹ سیریز نہیں جیت سکی ہے۔ اب دونوں ممالک کے درمیان 19 جنوری سے تین میچوں کی ونڈے سیریز کھیلی جائے گی۔

      میچ کے چوتھے دن جنوبی افریقہ نے دوسری اننگ میں 2 وکٹ پر 101 رنوں سے آگے کھیلنا شروع کیا۔ کیگن پیٹرسن 48 رنوں پر ناٹ آوٹ تھے۔ انہوں نے دن کے دوسرے اوور میں سیریز کی اپنی نصف سنچری مکمل کی۔ انہوں نے پہلی اننگ میں بھی شاندار 72 رن بنائے تھے۔ 59 رن پر پیٹرسن کا کیچ پہلی سلپ پر چتیشور پجارا (Cheteshwar Pujara) نے ٹپکایا۔ اگر یہ کیچ پکڑ لیا جاتا تو میچ دلچسپ ہوسکتا تھا، کیونکہ اس کے بعد بھی جنوبی افریقہ کو 86 رنوں کی ضرورت تھی۔

      تیسرے وکٹ کے لئے نصف سنچری شراکت

      کیگن پیٹرسن اور راسی وان ڈوسین (Rassie van der Dussen) نے تیسرے وکٹ کے لئے 54 رن جوڑے۔ اس سے پہلے پیٹرسن نے دوسرے وکٹ کے لئے ایلگر کے ساتھ بھی نصف سنچری شراکت کی تھی۔ پیٹرسن نے 113 گیندوں پر 82 رن بنائے۔ 10 چوکے لگائے۔ انہیں شاردل ٹھاکر نے بولڈ کیا۔ لنچ تک اسکور تین وکٹ پر 171 رن تھا۔ ڈوسین 41 اور ٹیمبا باووما 32 رن بناکر ناٹ آوٹ رہے۔ دونوں نے ناٹ آوٹ 57 رن جوڑے۔ ٹیم نے ہدف کو 63.3 اوور میں حاصل کرلیا۔ ایلگر نے بھی دوسری اننگ میں 30 رنوں کا تعاون دیا۔

      مسلسل دوسرے میچ میں ہندوستانی گیند باز ناکام

      اس سے قبل جنوبی افریقہ نے دوسرا ٹسٹ بھی 7 وکٹ سے جیتا تھا۔ تب اسے 240 رنوں کا ہدف ملا تھا، لیکن ہندوستانی گیند باز دوسری اننگ میں صرف 3 وکٹ حاصل کرسکے تھے۔ اس بار بھی ہندوستانی گیند باز دوسری اننگ میں صرف تین وکٹ حاصل کرسکے۔ ٹیم کے پاس جسپریت سنگھ بمراہ، محمد شمی اور امیش یادو جیسے تجربے کار گیند باز گیند باز تھے، لیکن وہ جنوبی افریقہ کے نوجوان اور کم تجربہ کار بلے بازوں کے آگے پھسڈی ثابت ہوئے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: