உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    IND vs WI: ہندوستان نے ویسٹ انڈیز کو روند کر سیریز پر کیا قبضہ، رشبھ پنت کے بعد چمکے ارش دیپ سنگھ

    ہندوستانی ٹیم نے ہفتہ کے روز ویسٹ انڈیز کے خلاف سیریز کے چوتھے ٹی20 (IND vs WI 4th T20I) میں 59 رنوں سے جیت درج کی۔ اس طرح ہندوستان نے پانچ میچوں کی ٹی20 سیریز میں 1-3 کی ناقابل تسخیر سبقت بھی حاصل کرلی۔

    ہندوستانی ٹیم نے ہفتہ کے روز ویسٹ انڈیز کے خلاف سیریز کے چوتھے ٹی20 (IND vs WI 4th T20I) میں 59 رنوں سے جیت درج کی۔ اس طرح ہندوستان نے پانچ میچوں کی ٹی20 سیریز میں 1-3 کی ناقابل تسخیر سبقت بھی حاصل کرلی۔

    ہندوستانی ٹیم نے ہفتہ کے روز ویسٹ انڈیز کے خلاف سیریز کے چوتھے ٹی20 (IND vs WI 4th T20I) میں 59 رنوں سے جیت درج کی۔ اس طرح ہندوستان نے پانچ میچوں کی ٹی20 سیریز میں 1-3 کی ناقابل تسخیر سبقت بھی حاصل کرلی۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ہندوستانی ٹیم نے ہفتہ کے روز ویسٹ انڈیز کے خلاف سیریز کے چوتھے ٹی20 (IND vs WI 4th T20I) میں 59 رنوں سے جیت درج کی۔ اس طرح ہندوستان نے پانچ میچوں کی ٹی20 سیریز میں 1-3 کی ناقابل تسخیر سبقت بھی حاصل کرلی۔ فلوریڈا میں بارش کے سبب تاخیر سے شروع ہوئے اس مقابلے میں ٹیم انڈیا نے مقررہ 20 اوور میں 5 وکٹ گنواکر 191 رن بنائے۔ ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے ویسٹ انڈیز ٹیم کے بلے باز کچھ خاص نہیں کرپائے اور 19.1 اوور میں 132 رنوں پر اس کی اننگ سمٹ گئی۔ سیریز کا پانچواں اور آخری مقابلہ 7 اگست، اتوار کو اسی میدان پر کھیلا جانا ہے۔

      وکٹ کیپر بلے باز رشبھ پنت نے ہندوستان کے لئے سب سے زیادہ رن بنائے اور 44 رنوں کا تعاون دیا۔ انہوں نے 31 گیندوں کی اپنی اننگ میں 6 چوکے لگائے۔ کپتان روہت شرما نے 16 گیندوں پر 2 اور 3 چھکے لگاتے ہوئے 33 رنوں کی شاندار اننگ کھیلی۔ سنجو سیمسن 30 رن بناکر ناٹ آوٹ لوٹے، جنہوں نے 23 گیندوں پر 2 چوکے اور ایک چھکا لگایا۔

      اس کے بعد ویسٹ انڈیز کے بلے بازوں کو ہندوستانی نوجوان گیند بازوں نے خوب پریشان کیا۔ نوجوان تیز گیند باز اویش خان نے 4 اوور میں محض 17 رن دے کر 2 وکٹ حاصل کئے۔ اویش خان کو ’پلیئر آف دی میچ‘ منتخب کیا گیا۔ ارش دیپ سنگھ نے بھی کمال کی کارکردگی پیش کی اور اس نوجوان تیز گیند باز نے 3 وکٹ اپنے نام کئے۔ اکشر پٹیل نے آل راونڈ کارکردگی پیش کی۔ انہوں نے 8 گیندوں میں 2 چھے اور ایک چوکے کی مدد سے ناٹ آوٹ 20 رن بنانے کے علاوہ 2 وکٹ حاصل کئے۔ حالانکہ وہ مہنگے ثابت ہوئے اور انہوں نے 48 رن لٹائے۔ اسپنر روی بشنوئی کو بھی 2 وکٹ حاصل کئے۔

      ہدف کا تعاقب کرنے اتری ویسٹ انڈیز کی ٹیم کبھی بھی لے حاصل نہیں کر سکی۔ اویش خان نے شروعاتی اوورون میں برینڈن کنگ (13) اور ڈیوون تھامس (1) کو آوٹ کیا۔ کپتان نکولس پورن اور روومین پاویل نے اس کے بعد تیزی سے رن بنائے، لیکن بڑی اننگ نہیں کھیل سکے۔ 8 گیندوں میں 3 چھکے کی مدد سے 24 رن بنانے والے پورن رن آوٹ ہوئے تو وہی 16 گیندوں پر 24 رن بنانے والے پاویل اکشر پٹیل کا دوسرا شکار بنے۔ کائل مایرس 14 رن بناکر اکشر پٹیل کا شکار بنے۔

      سوریہ کمار اننگ کے چھٹے اوور میں الزاری جوسف (29 رن پر 2 وکٹ) کی گیند پر چھکا لگانے کے بعد ایل بی ڈبلیو آوٹ ہوگئے۔ انہوں نے 14 گیندوں کی اننگ میں ایک چوکا اور دو چھکے لگائے۔ وکٹ کیپر رشبھ پنت نے کریز پر پیر رکھتے ہی چوکا لگایا، جس سے پاور پلے کے بعد ہندوستان کا اسکور 2 وکٹ پر 65 رن ہوگیا۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      روہت شرما نے سب سے زیادہ چھکا لگانے کے معاملے میں شاہد آفریدی کو پیچھے چھوڑا

      دیپک ہڈا (19 گیندوں میں 21 رن) اور رشبھ پنت نے اس کے بعد سمجھداری سے دوڑ کرکے رن چرانے کے ساتھ بیچ بیچ میں چوکا لگانا جاری رکھا۔ ٹیم نے 11ویں اوور میں میکائے کی گیند پر رشبھ پنت کے چوکے کے ساتھ رنوں کی سنچری مکمل کی۔ جوسف نے 12ویں اوور میں ہڈا کو اپنا دوسرا شکار بناکر رشبھ پنت کے ساتھ تیسرے وکٹ کے لئے ان کی 47 رنوں کی شراکت کو توڑا۔
      سیمسن نے اسی اوور میں چوکا لگاکر اور پھر 15ویں اوور میں میکائے کے خلاف چھکا لگاکر رن کی رفتار کو تیز کیا۔ میکائے کے اس اوور میں رشبھ پنت نے بھی چوکا لگایا، لیکن آخری گیند پر آوٹ ہوگئے۔ ہندوستان نے 16ویں اوور میں 150 رن پورے کئے۔ لیکن رشبھ پنت کے پویلین جانے کے بعد رن رفتار پر کچھ وقت کے لئے روک لگی۔ سیمسن اور ٹیم کے ‘فنیشر‘ دنیش کارتک (9 گیندوں میں چھ رن) کی رفتار تیز کرنے میں ناکام رہے۔ میکائے نے 19ویں اوور میں کارتک کو بولڈ کیا تو اسی اوور میں اکشر پٹیل نے دو چھکے لگائے۔ انہوں نے اننگ کی آخری گیند پر چوکا لگاکر ٹیم کے اسکور کو 190 کے پار پہنچایا۔ ہندوستانی بلے بازوں نے میکائے کے 4 اوور سے 66 رن بٹورے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: