ہوم » نیوز » اسپورٹس

IND VS AUS: رویندر جڈیجہ آسٹریلیا دورے سے باہر، رشبھ پنت پر بھی آئی بڑی خبر

رویندر جڈیجہ (Ravindra Jadeja) اور رشبھ پنت(Rishabh Pant) آسٹریلیا کے خلاف کھیلے جارہے تیسرے ٹسٹ میچ کے دوران سڈنی میں بلے بازی کے دوران زخمی ہوگئے تھے۔

  • Share this:
IND VS AUS: رویندر جڈیجہ آسٹریلیا دورے سے باہر، رشبھ پنت پر بھی آئی بڑی خبر
رویندر جڈیجہ آسٹریلیا دورے سے باہر، رشبھ پنت پر بھی آئی بڑی خبر

نئی دہلی: آسٹریلیا دورے پر ٹیم انڈیا کے لئے ایک اور بری خبر ہے، ٹیم کے آل راونڈر رویندر جڈیجہ (Ravindra Jadeja) پورے دورے سے باہر ہوگئے ہیں۔ سڈنی ٹسٹ کے تیسرے دن رویندر جڈیجہ کے بائیں ہاتھ کے انگوٹھے میں چوٹ لگی، جس کے بعد اس میں فریکچر ہوگیا ہے۔ رویندر جڈیجہ اب سڈنی ٹسٹ کی دوسری اننگ میں بھی بلے بازی نہیں کرپائیں گے اور وہ برسبین ٹسٹ میں بھی نہیں کھیلیں گے۔ دوسری طرف رشبھ پنت کو بھی کوہنی میں چوٹ لگ گئی تھی، لیکن خبر ہے کہ وہ دوسری اننگ میں بلے بازی کر پائیں گے۔


واضح رہے کہ رویندر جڈیجہ (Ravindra Jadeja) کو بلے بازی کے دوران مچیل اسٹارک کی گیند پر چوٹ لگی تھی۔ اسٹارک کی شارٹ گیند رویندر جڈیجہ کے انگوٹھے میں لگی اور انہیں دوسری اننگ میں گیند بازی میں پریشانی ہوئی۔ اس کے بعد رویندر جڈیجہ کو اسپتال لے جایا گیا، جہاں سے خبر آئی کہان کی ہڈی ٹوٹ گئی ہے اور وہ سڈنی ٹسٹ ہی نہیں بلکہ برسبین ٹسٹ میں بھی نہیں کھیل پائیں گے۔ دوسری طرف رشبھ پنت کی کوہنی پر بھی چوٹ لگی، لیکن وہ اتنی سنگین نہیں ہے اور دوسری اننگ میں وہ بلے بازی کرتے ہوئے دکھائی دے سکتے ہیں۔


رویندر جڈیجہ کا باہر ہونا بڑا جھٹکا


رویندر جڈیجہ کا آسٹریلیا دورے سے باہر ہونا ٹیم انڈیا کے لئے بڑے جھٹکے کی طرح ہے۔ دراصل، رویندر جڈیجہ گیند اور بلے دونوں سے فارم میں تھے۔ میلبورن ٹسٹ میں رویندر جڈیجہ نے شاندار نصف سنچری لگائی تھی اور سڈنی ٹسٹ کی پہلی اننگ میں رویندر جڈیجہ نے چار وکٹ لئے تھے۔ اس کے علاوہ اپنی فیلڈنگ سے بھی رویندر جڈیجہ کافی تعاون دیتے ہیں۔ رویندر جڈیجہ نے پہلی اننگ میں اسٹیو اسمتھ کو زبردست تھرو پر رن آوٹ کیا تھا۔

چتیشور پجارا نے بھی سڈنی ٹسٹ کا تیسرا دن ختم ہونے کے بعد کہا کہ ٹیم انڈیا کو رویندر جڈیجہ کی کمی محسوس ہونے والی ہے۔ انہوں نے کہا، ’ایمانداری سے کہوں تو رویندر جڈیجہ کے زخمی ہونے کا اثر پڑا ہے۔ ہمارے پاس صرف چار گیند باز ہیں۔ اس سے گیند بازوں پر اضافی دباو پڑتا ہے۔ کسی گیند باز کے کم ہونے سے چیزیں آسان نہیں ہوں گی، خاص طور پر تب وہ گیند باز رویندر جڈیجہ کے جیسا ہو، جنہوں نے پہلی اننگ میں چار وکٹ لئے اور ایک اینڈ سے دباو بنائے رکھا۔

 

 
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jan 09, 2021 07:07 PM IST