ہوم » نیوز » اسپورٹس

IND VS ENG: آئی سی سی سے سخت سزا سے بچ سکتا ہے موٹیرا، آخری ٹسٹ میں بلے بازی کے لئے بنے گی اچھی پچ

India vs England: احمدآباد میں کھیلا گیا تیسرا ٹسٹ محض 2 دن میں ہی ختم ہوگیا تھا، جس کے بعد موٹیرا پر آئی سی سی کے ذریعہ سخت کارروائی کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا تھا۔

  • Share this:
IND VS ENG: آئی سی سی سے سخت سزا سے بچ سکتا ہے موٹیرا، آخری ٹسٹ میں بلے بازی کے لئے بنے گی اچھی پچ
آئی سی سی سے سخت سزا سے بچ سکتا ہے موٹیرا، آخری ٹسٹ میں بلے بازی کے لئے بنے گی اچھی پچ

نئی دہلی: ڈے نائٹ ٹسٹ کے دو دن کے اندر ختم ہونے کے بعد موٹیرا کی پچ (Motera Pitch Controversy) کو بھلے ہی تنقید کا سامنا کرنا پڑا ہو، لیکن اسے کھیلوں کی تنظیم بین الاقوامی کرکٹ کونسل (آئی سی سی) سے سخت سزا ملنے کا امکان نہیں ہے کیونکہ آخری ٹسٹ کی پچ کو بلے بازی کے موافق ہونے کا امکان ہے۔ ہندوستان چار ٹسٹ کی سیریز میں 1-2 سے آگے چل رہا ہےاور آئی سی سی ٹسٹ چمپئن شپ کے فائنل کوالیفائی کرنے کے لئے اسے لارڈس میں 22-18 جون تک ہونے والے آخری ٹسٹ کو صرف ڈرا کرانا ہوگا۔ ایک اور اسپن کے موافق پچ کا امکان کم ہے کیونکہ گھریلو ٹیم پچ سے متعلق کوئی خطرہ نہیں اٹھانا چاہتی ہے۔


معاملے کی جانکاری رکھنے والے ہندوستانی کرکٹ بورڈ (BCCI) کے ایک سینئر افسر نے نام ظاہر نہیں کرنے کی شرط پر پی ٹی آئی کو بتایا، ’اچھی پچ کی امید ہے جو ٹھوس رہے گی اور بہتر رہے گی۔ یہ بلے بازی کے موافق ہوگی اور یہ روایتی لال گیند کا ٹسٹ میچ ہوگا، اس لئے یہاں چار سے 8 مارچ تک ہونے والے مقابلے میں کافی بڑے اسکور کی امید کی جاسکتی ہے۔


انگلینڈ نے درج نہیں کرائی پچ کے خلاف شکایت


بی سی سی آئی کے اعلیٰ افسران کے ساتھ ٹیم انتظامیہ بھی سمجھتا ہے کہ دھول سے بھری ایک اور پچ نئے مقام کے لئے اچھی نہیں ہوگی، جس کے انڈین پریمیئر لیگ اور آئی سی سی ٹی-20 عالمی کپ کے دوران کئی اہم میچوں کی میزبانی کرنے کا امکان ہے۔ بی سی سی آئی افسر نے کہا، ’اگر ایک ہی مقام پر دو میچ ہوتے ہیں تو آپ ایک نتیجے کو الگ نہیں کرسکتے۔ آخری ٹسٹ ہونے دیجئے اور اس کے بعد ہی میچ ریفری جواگل شری ناتھ کی رپورٹ کی بنیاد پر آئی سی سی اپنی کارروائی کو لے کر فیصلہ کرے گا۔ ساتھ ہی اب تک انگلینڈ کی ٹیم نے بھی کوئی باضابطہ شکایت درج نہیں کرائی ہے‘۔

اگر ایک ہی مقام پر ایک اچھی اور ایک خراب پچ ہوتی ہے تو آئی سی سی کے کارروائی کرنے کا امکان نہیں ہے۔ ہندوستان سیریز کو 1-3 سے اپنے نام کرکے خوش ہوگا، لیکن ٹیم کو نتیجہ دینے والی اسپن کے موافق پچ کی ضرورت نہیں ہے کیونکہ اس کے لئے ڈرا ہی کافی ہے۔ ساتھ ہی ہندوستانی ٹیم انتظامیہ ایسی پیچ نہیں چاہتی ہے، جس پر بے حد اہم میچ میں کھیلتے ہوئے اسے نقصان اٹھانا پڑے۔ انہوں نے کہا، ’گلابی گیند کا ٹسٹ اچھا رہا کیونکہ یہ گیند سے زیادہ جڑا ہوا معاملہ تھا۔ گیند پچ پر گرکر تیزی سے آرہی تھی جبکہ پچ میں کوئی پریشانی نہیں تھی، جیسا انگلینڈ کے کئی سابق عظیم کھلاڑی کہہ رہے ہیں۔ وہ سیدھی گینددوں کا سامنا کرنے میں ناکام رہے، لیکن اس طرح کی پچیں اپنے اوپر بھی بھاری پڑ سکتی ہیں اور بی سی سی آئی کو اس کی اچھی طرح جانکاری ہے۔

 

 
Published by: Nisar Ahmad
First published: Feb 27, 2021 09:57 PM IST