உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ٹیم انڈیا نے انگلینڈ کو 203 رنوں سے دی شکست، اہم ریکارڈ اپنے نام کرنے والے کپتان کوہلی نے جیت کیرالہ سیلاب متاثرین کے نام کیا

    ٹیم انڈیا کے کھلاڑی تیسرے ٹسٹ میں جیت حاصل کرنے کے بعد پویلین جاتے ہوئے۔

    ٹیم انڈیا کے کھلاڑی تیسرے ٹسٹ میں جیت حاصل کرنے کے بعد پویلین جاتے ہوئے۔

    وراٹ کوہلی کی ٹسٹ کپتان کے طور پر یہ 22 ویں جیت ہے۔ انہوں نے ٹسٹ میں جیت کے معاملے میں سورو گانگولی کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔

    • Share this:
      ہندوستان نے انگلینڈ کو ناٹنگھم ٹسٹ میں 203 رنوں سے شکست دے دی ہے۔ اس کے ساتھ ہی پانچ میچوں کی سیریزمیں پہلی جیت حاصل کی۔ یہ ٹیم انڈیا کی انگلینڈ میں اب تک کی 7 ویں جیت ہے۔ ساتھ ہی اب بھی سیریزمیں انگلینڈ 1-2 سے آگے ہے۔ آئندہ میچ میں بھی ہندوستان کو جیتنا ہوگا، تبھی پانچواں ٹسٹ دلچسپ ہوگا۔

      وراٹ کوہلی کی ٹسٹ کپتان کے طورپریہ 22 ویں جیت ہے۔ انہوں نے ٹسٹ میں جیت کے معاملے میں سورو گانگولی (21 جیت) کو پیچھے چھوڑدیا ہے۔ پہلے نمبرپرایم ایس دھونی (27 جیت) کے ساتھ ہیں۔ آخری وکٹ پانچویں دن کے تیسرے اوورمیں گرا۔ اینڈرسن کواشون کی گیند پررہانے نےکیچ لے کرپویلین بھیجا۔ اس طرح سے انگلینڈ ٹیم 521 رنوں کے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے 317 رنوں پر آل آوٹ ہوگئی۔

      انگلینڈ کی طرف سے چوتھی اننگ میں جوس بٹلرنے سب سے زیادہ 106 رن اوربین اسٹوکس نے 62 رن بنائے۔ وہیں ہندوستان کی طرف سے جسپریت بمراہ نے 85 رن دے کر 5 وکٹ لئے۔ وراٹ کوہلی نے میچ میں شاندار بلے بازی کی اورانہوں نے پہلی اننگ میں 97 رن اوردوسری اننگ میں 103 رن بنائے۔  بہترین بلے بازی کے لئے وراٹ کوہلی کو مین آف دی میچ منتخب کیا گیا۔ میچ جیتنے کے بعد وراٹ کوہلی نے اس جیت کوکیرالہ سیلاب متاثرین کے لئے وقف کیا۔

      ہندوستانی ٹیم چوتھے دن ہی میچ اپنے نام کرلیتی، لیکن جوس بٹلر (106) اور بین اسٹوکس (62) کے درمیان پانچویں وکٹ کے لئے ہوئی 169 رنوں کی شراکت کے بعد عادل رشید (ناٹ آوٹ 30) اوراسٹورٹ براڈ (20) کے درمیان نویں وکٹ کے لئے ہوئی 50 رن کی اہم شراکت کے سبب وہ اس سے محروم رہ گئی۔
      ٹیم انڈیا نے پہلی اننگ میں 329 رن بنائے تھے، وراٹ کوہلی 97 اور اجنکیا رہانے نے 81 رنوں کا اہم تعاون دیا تھا۔ جواب میں انگلینڈ کی پوری ٹیم محض 161 رنوں پر سمٹ گئی تھی۔ اس کے بعد دوسری اننگ میں وراٹ کوہلی کی سنچری اورہاردک پانڈیا کی نصف سنچری کی بدولت 7 وکٹ کے نقصان پر 352 رن بناکر ہندوستانی ٹیم نے اپنی اننگ ڈکلیئر کردی۔ جس کے بعد انگلینڈ کوبڑا ہدف ملا تھا۔ 521 رنوں کے ہمالیائی ہدف کا تعاقب کرنے اتری انگلینڈ کی طرف سے جوس بٹلرنے سنچری اوربین اسٹوکس نے نصف سنچری لگائی، لیکن پوری ٹیم 317رنوں پرسمٹ گئی اورٹیم انڈیا کو 203 رنوں سے جیت مل گئی۔
      First published: