உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    3 میچوں میں کوئی وکٹ نہیں، چوتھے میں لگایا ’چوکا‘، جانئے اویش خان نے کیسے کی واپسی

    India vs South Africa: ٹیم انڈیا نے راج کوٹ میں ہوئے چوتھے ٹی20 میں جنوبی افریقہ کو 82 رنوں سے شکست دی۔ اس جیت کے ساتھ ہی ہندوستان نے  5  ٹی20 میچوں کی سیریز 2-2 سے برابر کردی۔ ہندوستان کی جیت میں اویش خان کا اہم رول رہا۔ ابتدائی تین میچوں میں وکٹ کے لئے ترسنے والے اویش خان نے 4 وکٹ حاصل کرکے زبردست واپسی کی۔

    India vs South Africa: ٹیم انڈیا نے راج کوٹ میں ہوئے چوتھے ٹی20 میں جنوبی افریقہ کو 82 رنوں سے شکست دی۔ اس جیت کے ساتھ ہی ہندوستان نے  5  ٹی20 میچوں کی سیریز 2-2 سے برابر کردی۔ ہندوستان کی جیت میں اویش خان کا اہم رول رہا۔ ابتدائی تین میچوں میں وکٹ کے لئے ترسنے والے اویش خان نے 4 وکٹ حاصل کرکے زبردست واپسی کی۔

    India vs South Africa: ٹیم انڈیا نے راج کوٹ میں ہوئے چوتھے ٹی20 میں جنوبی افریقہ کو 82 رنوں سے شکست دی۔ اس جیت کے ساتھ ہی ہندوستان نے  5  ٹی20 میچوں کی سیریز 2-2 سے برابر کردی۔ ہندوستان کی جیت میں اویش خان کا اہم رول رہا۔ ابتدائی تین میچوں میں وکٹ کے لئے ترسنے والے اویش خان نے 4 وکٹ حاصل کرکے زبردست واپسی کی۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ٹیم انڈیا نے راج کوٹ میں ہوئے چوتھے ٹی20 میں جنوبی افریقہ کو 82 رنوں سے شکست دی۔ اس جیت کے ساتھ ہی ہندوستان نے  5  ٹی20 میچوں کی سیریز 2-2 سے برابر کردی۔ ہندوستان کی جیت میں تین کھلاڑیوں دنیش کارتک، ہاردک پانڈیا اور گیند باز اویش خان کا اہم رول رہا۔ دنیش کارتک نے مشکل گھڑی میں شاندار بلے بازی کرتے ہوئے ٹی20 میں اپنی پہلی نصف سنچری لگائی۔ ہاردک پانڈیا نے بھی 31 گیندوں میں 46 رنوں کی اننگ کھیلی۔ ان دونوں بلے بازوں کی بدولت ہندوستان چوتھے  ٹی20 میں جنوبی افریقہ کو 170 رنوں کا ہدف دیا۔ اس کے بعد اویش خان نے 4 وکٹ حاصل کرکے بلے بازوں کی محنت کو صحیح انجام تک پہنچایا۔ ہاردک پانڈیا اور دنیش کارتک کی بات پھر کبھی۔ آج تیز گیند باز اویش خان کے کم بیک کی کہانی پر بات کرتے ہیں۔

      اویش خان پر چوتھے ٹی20 سے پہلے کافی دباو تھا، کیونکہ سیریز کے پہلے تین مقابلوں میں انہیں کوئی وکٹ نہیں ملا تھا۔ بار بار ایسی خبریں بھی آرہی تھیں کہ اویش خان کی جگہ ارش دیپ سنگھ کو موقع دیا جاسکتا ہے، لیکن چیف کوچ راہل دراوڑ نے اویش خان پر بھروسہ جتایا اور چوتھے  ٹی20 میں بھی اس گیند باز کو آخری الیون میں شامل کیا۔ اویش خان بھی اس بھروسے پر کھرے اترے اور تین میچوں کی کسر چوتھے ٹی20 میں 4 وکٹ حاصل کرکے نکال دی۔ اویش خان نے 4 اوور میں محض 18 رن دے کر 4 وکٹ حاصل کئے۔ اس میں سے تین وکٹ تو انہوں نے ایک ہی اوور میں لئے۔ یہ ٹی20 میں ان کی سب سے بہترین کارکردگی ہے۔

      کوچ راہل دراوڑ نے پلیئنگ-XI میں کوئی تبدیلی نہیں کی

      سیریز کے پہلے 2 مقابلے گنوانے کے بعد ہندوستانی چیف کوچ راہل دراوڑ کے لئے پلیئنگ -XI میں تبدیلی کرنا آسان متبادل تھا، لیکن انہوں نے چاروں میچ میں پلیئنگ -XI میں کوئی تبدیلی نہیں کی۔ یہی وجہ ہے کہ شروعاتی کچھ مقابلوں میں وکٹ کے لئے ترس رہے اویش خان نے شاندار کم بیک کیا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: