ہوم » نیوز » اسپورٹس

آرمی افسر بننےکا خواب دیکھ رہے تھے بھونیشورکمار، ریکھا نے بدل دی زندگی، سچن کو بھی کردیا حیران

تیزگیند باز بھونیشور کمار نے ٹیم انڈیا کے لئے 21 ٹسٹ، 114 ونڈے اور 43 ٹی -20 میچ کھیلے ہیں۔

  • Share this:
آرمی افسر بننےکا خواب دیکھ رہے تھے بھونیشورکمار، ریکھا نے بدل دی زندگی، سچن کو بھی کردیا حیران
آرمی افسر بننےکا خواب دیکھ رہے تھے بھونیشورکمار

نہ تیور طوفانی، نہ منہ پر گالی، لیکن جب گیند پھینکتا ہے، تو ہر مداح تالی بجاتا ہے۔ یہ تیز گیند باز بے حد خاص ہے، الگ ہی مٹی سے بنا ہوا۔ تن اور من سے بالکل خاموش، لیکن ہاتھ سے گیند نہیں، طوفان نکلتا ہے۔ ایک ایسا طوفان جو عظیم بلے بازوں کو بھی خاموش رکھتا ہے۔ ہم بات کررہے ہیں ٹیم انڈیا کےتیزگیند باز بھونیشورکمار (Bhuvneshwar Kumar) کی، جن کی سوئنگ کے آگے ڈیوڈ وارنر، کرس گیل جیسے طوفانی بلے باز بھی خاموش نظر آتے ہیں۔ 25 دسمبر 2012 میں ڈیبیو کرنے والے بھونیشور کمار ہندوستان کے لئے 21 ٹسٹ، 114 ونڈے اور 43 ٹی -20 میچ کھیل چکے ہیں۔ ان دنوں ٹیم انڈیا کی تیز گیند بازی کے خوب چرچے ہیں۔ لوگ زیادہ بمراہ اور محمد شمی کی بات کرتے ہیں، لیکن اگر آپ کسی بھی مخالف بلے باز سے پوچھیں گے تو یہ پائیں گےکہ ان کے پاوں بھونیشور کے سامنےکانپتے ہیں۔ ویسے غضب کی بات یہ ہےکہ بھونیشور کمار کبھی کرکٹر بننا ہی نہیں چاہتے تھے۔ ان کا خواب تو کچھ اور ہی تھا، لیکن ایک لڑکی نے ان کی قسمت کی ریکھا خود اپنے ہاتھ سے بنائی، آئیے آپ کو بتاتے ہیں بھونیشور کمار کی زندگی کے اس ٹرننگ پوائنٹ کے بارے میں، جس نے ان کی زندگی بدل دی۔


بھونیشورکمار کی زندگی کا ٹرننگ پوائنٹ


بھونیشور کمارکی (Bhuvneshwar Kumar) پیدائش 5 فروری، 1990 کو میرٹھ میں ہوا۔ لوگ پیار سے بٹو کہتے تھے۔ بٹوکا خواب تھا کہ وہ آرمی کا افسر بنےگا اور ملک کی خدمت کرےگا۔ حالانکہ اس گیند باز کی قسمت میں کچھ اور ہی لکھا ہوا تھا۔ بھونیشور کمار جب 12 سال کے تھے تو ان کی زندگی میں وہ دن آیا، جس کے بارے میں انہوں نے خود تصور بھی نہیں کیا تھا۔ یہ وہ دن تھا جب سے بھونیشور کمار کی ٹیم انڈیا میں انٹری کی اسکرپٹ لکھی جانی تھی۔


سال 2002 میں بھونیشور کمار (Bhuvneshwar Kumar) کی بڑی بہن ریکھا نے اپنے بھائی کو کرکٹر بنانے کے بارے میں سوچا۔ وہ انہیں سیدھے وکٹوریا پارک کی کرکٹ اکیڈمی لےگئیں۔ ریکھا نے بھونیشور کو کٹ بیگ دلایا اور کھیل سے جڑا ہر سامان بھونیشور کمار کو بڑی بہن سے ہی ملا۔ غضب کی بات ہ ہے کہ ریکھا روزانہ اپنے بھائی کو اکیڈمی تک چھوڑنے اور لینے جاتی تھی۔ یہی نہیں وہ ان کے کوچ سے بھونیشور کی پروگریس کے بارے میں پوچھتی رہتی تھی۔ بھونیشور کے کوچ سنجے رستوگی نے بھی ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ اگر بھونیشور کی بڑی بہن ریکھا انہیں وکٹوریا پارک نہیں لاتی، تو شاید ٹیم انڈیا کو اتنا بہترین سوئنگ گیند باز نہیں مل پاتا۔

سال 2002 میں بھونیشور کمارکی بڑی بہن ریکھا نے اپنے بھائی کو کرکٹر بنانے کےبارے میں سوچا۔
سال 2002 میں بھونیشور کمارکی بڑی بہن ریکھا نے اپنے بھائی کو کرکٹر بنانے کےبارے میں سوچا۔


2007 میں رنجی ٹرافی کھیلے بھونیشورکمار

محض 5 سالوں میں بھونیشورکمار (Bhuvneshwar Kumar) نے اپنے کھیل سے پورے یوپی کو ہلاکر رکھ دیا۔ پورے یوپی میں بھونیشور کمار کی سوئنگ کے چرچے تھے۔ سال 2007 میں بھونیشور کمار کو یوپی کی طرف سے رنجی ٹرافی میں ڈیبیو کرنے کا موقع ملا۔ بنگال کے خلاف انہوں نے پہلی ہی اننگ میں محض 25 رن دے کر تین وکٹ حاصل کئے۔

سچن تندولکرکو کیا صفر پر آوٹ

بھونیشور کمار (Bhuvneshwar Kumar) نے سال 09-2008 کے رنجی سیزن میں اپنے نام کا ہلا پوری دنیا میں مچا دیا۔ دراصل رنجی ٹرافی میں یوپی اور ممبئی کا مقابلہ ہوا اور بھونیشور کمار نے ممبئی کی حالت خراب کی ہوئی تھی۔ ممبئی نے محض 55 رن پر تین وکٹ گنوا دیئے تھے، جس میں سے دو جھٹکے اسے بھونیشور کمار نے دیئے تھے۔ اس کے بعد سچن تندولکر کریز پرآئے اور پھر بھونیشور کمارکےہاتھ سے نلی ایک ان سوئنگ گیند۔ اس گیند نے سچن تندولکر کے بلے کا اندورنی کنارہ لیا اور انہیں شاٹ مڈوکٹ پر فیلڈر نے لپک لیا۔ سچن تندولکر فرسٹ کلاس کرکٹ میں پہلی بار صفر پر آوٹ ہوئے۔ بس یہیں سے بھونیشور کمارکا نام پورے ملک میں چھا گیا۔



ڈیبیو میں بھونیشور کا دھماکہ

سچن تندولکر کا وکٹ لینے کے 4 سال بعد بھونیشورکمار (Bhuvneshwar Kumar) نے ٹیم انڈیا میں جگہ بنالی۔ ان کا ڈیبیو بھی بے حد عام رہا۔ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان ہورہی ٹی-20 سیریز میں بھونیشورکمار نے ڈیبیو کیا اور انہوں نے اپنے بین الاقوامی کیریئر کے پہلے اوور میں ہی ناصرجمشید کو زبردست ان سوئنگر پر بولڈ کردیا۔ اس کے بعد انہوں نے احمد شہزاد اور عمراکمل کے بھی وکٹ لئے۔ ہندوستان یہ میچ 5 وکٹ سے ہارا، لیکن بھونیشور کمار نے اپنے 4 اوور میں محض 9 رن دے کر تین وکٹ حاصل کرلئے۔ بھونیشور کمار نے ونڈے ڈیبیو میں پاکستان کے خلاف ہی کیا۔ بھونیشور کمار نے ونڈے انٹرنیشنل کیریئر کی پہلی ہی گیند پر محمد حفیظ کو ان سوئنگ پر بولڈ کردیا۔ اپنے پہلے ونڈے میں انہوں نے 9 اوور میں محض 27 رن دے کر دو وکٹ لئے۔ اس کے بعد بھونیشور نے کبھی پیچھے مڑکر نہیں دیکھا۔ بھونیشور آج اچھے سوئنگ گیند باز ہی نہیں بلکہ وہ اب غضب کی سلوور گیندیں بھی پھیکنتے ہیں۔ موجودہ دور میں بھونیشور کمار سے اچھی نقل گیند کوئی گیند باز نہیں پھینکتا۔
First published: May 05, 2020 03:38 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading