உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہندوستان کے واٹر اسپورٹس ایتھلیٹس کو پیرالمپک گیمز میں بہترین کارکردگی کا یقین

    ہندوستان کے واٹر اسپورٹس ایتھلیٹس کو پیرالمپک گیمز میں بہترین کارکردگی کا یقین

    ہندوستان کے واٹر اسپورٹس ایتھلیٹس کو پیرالمپک گیمز میں بہترین کارکردگی کا یقین

    سیوش جادھو Suyash Jadhav کے لیے یہ ان کی دوسری پیرالمپک گیمز ہیں جبکہ نرنجن مکنڈن Niranjan Mukundan اور پراچی یادو Prachi Yadav پہلی بار ٹوکیو میں سب سے بڑے اسٹیج پر اپنا کمان بنا رہے ہیں۔

    • Share this:
      نئی دہلی : ہندوستان کے تین رکنی واٹر اسپورٹس وفد میں دو مرد تیراک اور ایک خاتون کینو سپرنٹ ایتھلیٹ شامل ہیں۔ ان میں سے سبھی پراعتماد ہیں کہ وہ ٹوکیو ( Tokyo ) میں پیرالمپک گیمز (Paralympic Games) میں اپنی بہترین پرفارمنس میں کامیاب ہوں گے۔ سیوش جادھو (Suyash Jadhav) کے لیے یہ ان کا دوسرا پیرالمپک گیمز ہیں جبکہ نرنجن مکنڈن (Niranjan Mukundan) اور پراچی یادو (Prachi Yadav )پہلی بار ٹوکیو میں سب سے بڑے اسٹیج پر اپنا کمان سنبھال رہے ہیں۔ تینوں ٹارگٹ اولمپک پوڈیم اسکیم (TOPS) کا حصہ ہیں۔

      جکارتہ میں 2018 ایشین پیرا گیمز میں مردوں کی 50 میٹر بٹر فلائی ایس 7 (32.71 سیکنڈ) میں سویش جادھو کی جیت نے انہیں ٹوکیو پیرالمپکس میں داخلے کی یقین دہانی کرائی۔ در حقیقت مردوں کی 200 میٹر انڈیوجول میڈلی SM7 (2: 51.39) میں اس کا کانسی کا تمغہ بھی اسے ٹوکیو پیرالمپکس میں ایونٹ میں ایک مقام حاصل ہوا۔

      اب مہاراشٹر کے ڈائریکٹوریٹ اسپورٹس اینڈ یوتھ افیئرز میں پونے میں تیراکی کرنے والے سویش اپنے کوچ تپن پنیگراہی کی نگرانی میں بالے واڑی اسٹیڈیم میں تربیت حاصل کر رہے ہیں۔ انھیں حکومت ہند کی جانب سے فارن ایکسپوزر کے حوالے سے مدد کی گئی ہے، جس میں اس نے پانچ سے زائد بین الاقوامی مقابلوں میں شرکت کی ہے اور ساتھ ہی قومی کوچنگ کیمپوں میں بھی شرکت کی ہے جس میں اسپورٹس سائنس سپورٹ کے ساتھ اسپورٹس کٹ بھی شامل ہے۔ 11 سال کی عمر میں الیکٹرک کرنٹ لگنے کے بعد سیوش کے ہاتھ کاٹنا پڑے تھے۔

      جبکہ سویاش کا 200 میٹر کا انڈیوجول میڈلے SM7 ایونٹ 27 اگست کو ہوگا وہ 3 ستمبر کو مردوں کے 50 میٹر بٹر فلائی S7 ایونٹس میں نیرجن مکنڈن کے ساتھ دوبارہ ایکشن میں ہوں گے۔ جب اس نے جرمنی کے ہائیڈل برگ میں 50 میٹر فری سٹائل گولڈ جیتا۔

      اس ماہ کے شروع میں بین الاقوامی پیرالمپک کمیٹی نے 26 سالہ بینکر نرنجن کو کھیلوں میں دو طرفہ مقام الاٹ کیا تھا۔ اس کے پاس 60 سے زائد بین الاقوامی تمغے ہیں اور وہ واحد پیرا تیراک ہے جس نے 50 تمغوں کا ہندسہ عبور کیا۔ نرنجن کو حکومت کی طرف سے غیر ملکی نمائش کے دوروں کے ساتھ ساتھ کھیلوں کے سائنس کے تعاون سے قومی کوچنگ کیمپوں میں شرکت کے سلسلے میں مدد ملی ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: